ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

Lockdown in Delhi:دہلی میں اگلے پیرتک 6دن طویل لاک ڈاؤن کااعلان: کیاکھلارہے گااورکیارہے گابند؟ جانئے یہاں

دہلی میں کورونا مثبت کی شرح 30 فیصد سے بھی بڑھنے کا مطلب یہ ہے کہ دہلی میں ہر تیسرا شخص اس وبا سے متاثر ہوسکتا ہے۔ سی ایم کیجریوال نے ایل جی انیل بائیجل (L-G Anil Baijal) کے ساتھ شدید بحث کے بعد یہ اعلان کیا۔

  • Share this:

دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال (Arvind Kejriwal) نے کورونا وائرس (Coronavirus ) کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے قومی دارالحکومت میں 6 روزہ لاک ڈاؤن کا اعلان کیا ہے کیونکہ دہلی میں کورونا مثبت کی شرح 30 فیصد سے بھی بڑھ گئی ہے۔دہلی میں کورونا مثبت کی شرح 30 فیصد سے بھی بڑھنے کا مطلب یہ ہے کہ دہلی میں ہر تیسرا شخص اس وبا سے متاثر ہوسکتا ہے۔ سی ایم کیجریوال نے ایل جی انیل بائیجل (L-G Anil Baijal) کے ساتھ شدید بحث کے بعد یہ اعلان کیا۔دہلی کے وزیراعلی نے کہا کہ تمام نجی دفاتر کے ملٓازمین آنے والے 6 دن گھر سے کام کریں گے اور سرکاری دفاتر کھلے رہیں گے۔ ضروری خدمات کو پابندیوں سے مستثنیٰ کیا جائے گا۔



دہلی میں 6 دن کے لاک ڈاؤن کے دوران کیا کھلا اور کیا بند ہے؟


    • سی ایم کیجریوال نے کہا کہ 6 روزہ دہلی لاک ڈاؤن کے دوران تمام ریستوران، آڈیٹوریم، ریستوراں، مالز اور جیم بند رہیں گے۔

    • دہلی میٹرو جیسی پبلک ٹرانسپورٹ اور بسیں 50 فیصد کام کریں گی۔

    • تمام اسپاس اور سیلون بند ہوگئے۔

    • سماجی، سیاسی، مذہبی کسی بھی عوامی اجتماع کی اجازت نہیں ہوگی۔

    • شادی کی تقریبات مہمانوں کی گنجائش 50 فیصد کے ساتھ منعقد کی جاسکتی ہیں۔

    • شادی کا دعوت نامہ سافٹ یا ہارڈ کاپی کی تقسیم کے لیے ایک ای پاس جاری کیا جائے گا۔

    • 20 افراد آخری رسومات اور تدفین میں حصہ لے سکتے ہیں۔

    • اسٹیڈیم تماشائیوں کے بغیر قومی اور بین الاقوامی مقابلوں کا اہتمام کرسکتے ہیں۔





دہلی میں اتوار کے روز اپنے روزانہ کووڈ۔19 میں 25,462 تازہ کیسوں میں سب سے بڑی چھلانگ لگائی ہے، جبکہ گذشتہ 24 گھنٹوں میں اس بیماری کی وجہ سے 161 افراد ہلاک ہوگئے۔کورونا مثبت شرح (positivity rate) بھی 29.74 فیصد تک بڑھ گئی۔ اس انفیکشن سے قریب 20,159 افراد صحت یاب ہوئے ہیں۔ قومی دارالحکومت میں کل 74,941 فعال کیس درج کیے گئیے ہیں اور ہلاکتوں کی تعداد 12,121 ہوگئی۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: Apr 19, 2021 01:53 PM IST