உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Delhi News: ای ڈی کی گرفت میں ستیندر جین کو وکیل نہ ملنے پر عام آدمی پارٹی بر ہم، کہی یہ بات

    Delhi News: ای ڈی کی گرفت میں ستیندر جین کو وکیل نہ ملنے پر عام آدمی پارٹی بر ہم، کہی یہ بات

    Delhi News: ای ڈی کی گرفت میں ستیندر جین کو وکیل نہ ملنے پر عام آدمی پارٹی بر ہم، کہی یہ بات

    Delhi News: سنجے سنگھ نے کہا کہ ای ڈی نے ہائی کورٹ کو بتایا ہے کہ ستیندر جین کے خلاف کوئی ایف آئی آر اور شکایت نہیں ہے۔ بی جے پی کی حکومت والی مرکزی حکومت کی ایجنسی ای ڈی ایک ایسا ادارہ بنتا جا رہا ہے، جس کے ذریعے اپوزیشن لیڈروں کی تذلیل کی جا رہی ہے اور انہیں جیل میں ڈالا جا رہا ہے۔

    • Share this:
    نئی دہلی : عام آدمی پارٹی نے ای ڈی اور  بی جے پی اور مرکزی حکومت کے خلاف نشانہ سادھا ہے ۔ دراصل ای ڈی نے ہائی کورٹ کو بتایا ہے کہ ستیندر جین ملزم نہیں ہیں۔ اس کے بعد وزیر اعلی اروند کیجریوال نے کہا کہ مرکزی حکومت نے خود عدالت کو بتایا کہ ستیندر جین "ملزم" نہیں ہیں۔ بتایا جارہا ہے کہ پوچھ تاچھ کے دوران ستیندر جین کو  وکیل کی فراہمی  پر ایجنسی نے مخالفت کی تھی اور دلیل دی تھی کہ ستیندر جن کو گرفتار نہیں کیا گیا ہے اس لیے انہیں  وکیل کی سہولت نہیں مل سکتی۔ اس معاملہ کو لے کر عام آدمی پارٹی نے ای ڈی ، بی جے پی اور مرکزی حکومت کے خلاف حملہ بول دیا ۔

    ممبر آف پارلیمنٹ اور عام آدمی پارٹی کے سینئر لیڈر سنجے سنگھ نے کہا کہ جب کوئی ملزم ہی نہیں تو کرپٹ کیسے ہو گئے؟  سنجے سنگھ نے کہا کہ ای ڈی نے ہائی کورٹ کو بتایا ہے کہ ستیندر جین کے خلاف کوئی ایف آئی آر اور شکایت نہیں ہے۔ بی جے پی کی حکومت والی مرکزی حکومت کی ایجنسی ای ڈی ایک ایسا ادارہ بنتا جا رہا ہے، جس کے ذریعے اپوزیشن لیڈروں کی تذلیل کی جا رہی ہے اور انہیں جیل میں ڈالا جا رہا ہے۔

     

    یہ بھی پڑھئے : مہاراشٹر میں Covid-19 نے پسارے پاوں، لگاتار تیسرے دن نئے مریضوں کی تعداد 1000 سے پار


    انہوں نے کہا کہ مودی حکومت کی ای ڈی وجے مالیا، للت مودی، نتن سندیسارا، یدیورپا، ویاپم گھوٹالے، ایشورپا کے خلاف کارروائی نہیں کرتی ہے۔ کیجریوال حکومت اور ستیندر جین کے ساتھ بی جے پی کا مسئلہ یہ ہے کہ وہ محلہ کلینک کیسے بنا رہے ہیں؟ پورے ملک میں دہلی کے صحت کے نظام کی کیوں بحث ہو رہی ہے؟ انہوں نے کہا کہ نچلی عدالت کا حکم ہے کہ وکیل ان کے پاس رہے گا۔ اس کے خلاف ای ڈی ہائی کورٹ گئی اور کہا کہ اس سے الگ سے پوچھ گچھ کرنی ہے، جب کہ حقیقت میں اس کا مقصد ستیندر جین کو اذیت دینا ہے۔

    سنجے سنگھ نے آج متھرا روڈ اے بی 17 میں اہم پریس کانفرنس سے خطاب کیا۔ انہوں نے کہا کہ کئی دنوں سے بی جے پی کے لوگ، ان کے مرکزی وزیر اور بڑے لیڈر شور مچا رہے تھے کہ ستیندر جین بدعنوان ہیں۔ انہیں صلیب پر چڑھا دو۔ اسے 10 دن کے ریمانڈ پر دیا گیا تھا لیکن کل ہائی کورٹ میں ای ڈی نے کہا کہ ان کے خلاف کوئی ایف آئی آر یا شکایت نہیں ہے۔ لیکن اسمرتی ایرانی ستیندر جین کو ملک کا غدار کہہ رہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کیا ای ڈی بگ باس کا گھر ہے کہ ایک وزیر کو زبردستی اپنی تحویل میں رکھا ہوا ہے کہ چلو بیٹھ کر بات کرتے ہیں۔

     

    یہ بھی پڑھئے : وزیر اعظم مودی نے شمار کرائی سرکار کی حصولیابیاں، پیش کیا 8 سال کا رپورٹ کارڈ


    انہوں نے کہا کہ وزیر اعلی، نائب وزیر اعلی کے گھر پر چھاپہ، ہمارے 34 ایم ایل ایز کے خلاف 140 کیسز، 72 کیسز میں وہ بری ہو چکے ہیں۔ ای ڈی/سی بی آئی نے کئی وزراء پر چھاپے مارے۔  کیجریوال حکومت کی 400 فائلوں کی چھان بین کی، لیکن خود کہا کہ اس سے کچھ نہیں نکلا۔ انہوں نے کہا کہ ان کا درد یہ ہے کہ ستیندر جین محلہ کلینک کیسے بنا رہے ہیں؟  پورے ملک میں صحت کا نظام کس طرح زیر بحث ہے۔

    دوسری طرف وزیر اعلی اروند کیجریوال نے ٹویٹ کیا کہ مرکزی حکومت نے خود عدالت کو بتایا کہ ستیندر جین "ملزم" نہیں ہیں۔ جب کوئی ملزم ہی نہیں تو کرپٹ کیسے ہو گیا؟  منیش سسودیا آج بی جے پی کے ایک بڑے لیڈر کا انکشاف کریں گے۔ ملک کو بتائیں گے کہ اصل کرپشن کیا ہے اور بڑے کرپٹ کیسے ہوتے ہیں۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: