ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

دہلی تشدد: چاند باغ میں پتھراؤ اور فائرنگ کے دوران کس طرح زخمی ہوئے ڈی سی پی ؟آپ بھی دیکھیں ویڈیو

دہلی تشدد سے متعلق ایک اور ویڈیو سامنے آیاہے۔ جس میں بے لگام ہجوم ڈی سی پی پر پتھراؤ کرتے ہوئے نظر آرہا ہے۔

  • Share this:
دہلی  تشدد: چاند باغ میں پتھراؤ اور فائرنگ کے دوران کس طرح زخمی ہوئے ڈی سی پی ؟آپ بھی دیکھیں ویڈیو
دہلی تشدد کے بعد فلیگ مارچ کی فائل فوٹو ۔ پی ٹی آئی ۔

نئی دہلی :دہلی تشدد سے متعلق ایک اور ویڈیو سامنے آیاہے۔ جس میں بے لگام ہجوم ڈی سی پی پر پتھراؤ کرتے ہوئے نظر آرہا ہے۔ اس معاملے میں اب تک 2 ویڈیوز سامنے آچکے ہیں ۔جس کی دہلی پولیس نے بھی توثیق کی ہے ۔ یہ ویڈیوز 24 فروری کی بتائے جارہے ہیں۔ جس میں ہجوم پولیس پر پتھراؤ کررہاہے۔ یہ ویڈیوز دہلی کے علاقے چاند باغ کی بھی بتائے جارہے ہیں۔


ڈی سی پی سڑک پرگرپڑے


دہلی پولیس کے اے سی پی انوج کا کہنا ہے کہ واقعہ 24 تاریخ کا ہے جہاں وزیر آباد روڈ پر اچانک ہجوم آیا۔ ہم کسی طرح نجی ذرائع سےیمنا وہار پہنچے تھے۔ انہوں نے بتایا کہ ڈی سی پی بیہوش ہوکر ڈیوائڈر کے قریب گر گئے۔ کسی کی شناخت پر ، اے سی پی نے کہا کہ ہجوم میں کافی لوگ تھے اس لیے کسی کا چہرہ یاد نہیں ہے۔



کس طرح ہوئی تھی فائرنگ
ذرائع کے مطابق ، ویڈیو 24 فروری کا ہی ہے ، جب چاند باغ کے قریب دو گروپوں میں تصادم ہوا تھا اور ڈی سی پی امت شرما کو اس کی اطلاع ملتے ہی ٹیم کےساتھ یہاں پہنچ گئے ۔ لیکن تب ہی شرپسندوں نے پولیس پر پتھراؤ شروع کردیا۔ بتایا جارہا ہے کہ پولیس انہیں روکنے کی کوشش کررہی تھی ۔تاہم پتھراؤ تیزی سے کیاجارہاتھا اس لیے پولیس کو پیچھے ہٹانا پڑا۔تاہم مسلسل ہورہے پتھراؤ کےدرمیان ہی فائرنگ بھی کی گئی ۔ کرائم برانچ کی ایس آئی ٹی بھی اس ویڈیو کی تفتیش کر رہی ہے ۔ جبکہ موقع پر موجود تمام پولیس اہلکاروں کے بیانات لئے گئے ہیں ، اور یہ دعویٰ کیا گیا ہے کہ اس ہجوم میں موجود شرپسندوں نے پولیس کانسٹیبل رتن لال پر فائرنگ کی تھی۔

دہلی تشدد کا ذمہ دار کون ہے؟

دہلی تشدد کے حوالے سے ابھی بھی بہت سارے سوالات کی تحقیقات کی جارہی ہیں۔ گذشتہ اتوار سے بدھ تک شمال مشرقی دہلی کے کتنےعلاقے جل گئے تھے؟ کیا دہلی میں تشد د کو کسی سازش کے تحت انجام دیاگیا؟ ان سوالات کے جوابات کی چھان بین کی جارہی ہے ، لیکن حقیقت ابھی بھی کچھ اور ہے۔ شمال مشرقی خطے میں تشدد کے بعد صورتحال معمول کی طرف لوٹ رہی ہے۔ بینک ، اسپتال اور دکانیں کھل گئیں۔ لوگ پہلے کی طرح خریداری کر رہے ہیں۔دہلی تشدد کے پیش نظر پولیس اہلکاروں کا فلیگ مارچ۔ فائل فوٹو

پیر کے روز تشدد سے متاثرہ علاقوں میں پولیس فلیک مارچ کررہی ہے ۔ جبکہ دہلی کے لیفٹیننٹ گورنر انل بیجل اور پولیس کمشنر ایس این سریواستو نے بھی متاثرہ علاقوں کا دورہ کیا۔ دونوں نے شیو وہار سمیت کئی علاقوں کا دورہ کیا اور لوگوں سے بات چیت کی۔ سینٹرل بورڈ آف سیکنڈری ایجوکیشن کی جانب سے تشدد متاثرہ علاقوں میں ا متحانات منعقد کروائے جارہے ہیں۔ ابھی پولیس تشدد سے متاثرہ علاقوں میں گشت کررہی ہے۔ بدھ کے روز تشدد سے متاثرہ علاقے میں دہلی پولیس کے جوانوں کے ساتھ سی آئی ایس ایف اور سی آر پی ایف کے اہلکار بھی موجود تھے۔
First published: Mar 05, 2020 01:31 PM IST