உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ’بچوں میں تیزی سے پھیل رہا کورونا، اس لئے انفیکشن سے بچیں‘، امریکی ڈاکٹر کی وارننگ

    ڈاکٹر فہیم یونس۔ (تصویر: سیاست ڈاٹ کام)

    ڈاکٹر فہیم یونس۔ (تصویر: سیاست ڈاٹ کام)

    ومیکرون ویرینٹ سے ملک میں بڑا خطرہ ہے۔ یہاں (امریکہ) میں ویکسین کی دونوں ڈوز اوربوسٹر ڈوز لینے کے باوجود لوگ کورونا کے نئے ویرینٹ سے متاثر ہورہے ہیں۔ امریکہ میں کورونا کی ویکسین بھی سب سے زیادہ تیزی سے لگائی جارہی ہے لیکن اس کے باوجود ملک میں ہر دوسرا شخص متاثر ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی:ہندوستان میں کورونا (Corona) کے بڑھتے کیسیز کے درمیان امریکہ کے وبائی امراض کے ماہر اور یو ایس یونیورسٹی آف میری لینڈ (US University of Mayland) کے ڈاکٹر فہیم یونس (Dr Faheem Younus) نے کہا ہے کہ کورونا کی تیسری لہر میں بچے زیادہ متاثر ہورہے ہیں۔ ایسا اس لئے نہیں کہ وائرس بچوں کے لئے زیادہ خطرناک ہے۔ ایسا اس لئے ہے کیونکہ مجموعی پھیلاو بہت زیادہ ہے۔ انہوں نے آگے کہا کہ ہر مرتبہ جب آپ کسی طرح کے ویرینٹ سے متاثر ہوتے ہیں، تو آپ کچھ امیونٹی پیدا کرلیتے ہیں۔ یہ آپ کو مستقبل میں وائرس سے لڑنے کا بہترموقع دیتا ہے۔ اس لئے ہوسکے تو انفیکشن سے بچیں۔


      ڈاکٹر فہیم نے آگے کہا کہ ڈیلٹا سے متاثر ہوئے لوگ اب اومیکرون سے متاثر ہورہے ہیں۔ جو لوگ کورونا کے نئے ویرینٹ اومیکرون سے متاثر ہورہے ہیں ان میں مستقبل میں کسی دیگر طرح کے ویرینٹ سے لڑنے کی امیونٹی نہیں ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ اومیکرون ویرینٹ سے ملک میں بڑا خطرہ ہے۔ یہاں (امریکہ) میں ویکسین کی دونوں ڈوز اوربوسٹر ڈوز لینے کے باوجود لوگ کورونا کے نئے ویرینٹ سے متاثر ہورہے ہیں۔ امریکہ میں کورونا کی ویکسین بھی سب سے زیادہ تیزی سے لگائی جارہی ہے لیکن اس کے باوجود ملک میں ہر دوسرا شخص متاثر ہے۔

      ملک میں ٹیکہ اندازی 158 کروڑ سے متجاوز
      بتادیں کہ ملک میں اب تک 158 کروڑ سے زیادہ ویکسین ڈوز دی جاچکی ہے۔ پچھلے 24 گھنٹوں میں 39 لاکھ سے زیادہ نئے لوگو کو ویکسین لگائی گئی۔ وہیں ملک کے 76 فیصد لوگ دوسری ڈوز کے ساتھ ویکسینیٹیڈ ہیں۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: