ہوم » نیوز » وطن نامہ

Driving Licence Test: اب ڈرائیونگ لائسنس ٹیسٹ نہیں ہوگا آسان ، مرکزی حکومت نے اٹھایا یہ بڑا قدم

ڈرائیونگ لائسنس ٹیسٹ کو مشکل بنانے کیلئے نئے قدم اٹھائے گئے ہیں ، جس میں پاس ہونے کیلئے صحیح انداز کے ساتھ گاڑی کو ریورس کرنا بھی شامل ہے ۔ اسی کے ساتھ تمام آر ٹی اوز کو بھی اہلیت کی فیصد کے بارے میں معلومات دی گئی ہیں اور اب اس پر بھی عمل کیا جارہا ہے ۔

  • Share this:
Driving Licence Test: اب ڈرائیونگ لائسنس ٹیسٹ نہیں ہوگا آسان ، مرکزی حکومت نے اٹھایا یہ بڑا قدم
Driving Licence Test: اب ڈرائیونگ لائسنس ٹیسٹ نہیں ہوگا آسان ، مرکزی حکومت نے اٹھایا یہ بڑا قدم . (Photo: Reuters)

نئی دہلی : اگر آپ اب ڈرائیونگ لائسنس ٹیسٹ دینے والے ہیں تو پہلے ہی یہ جان لیں کہ یہ پہلے سے زیادہ مشکل ہونے والا ہے ۔ حال ہی میں ٹرانسپورٹ کے مرکزی وزیر نتن گڈکری نے لوک سبھا میں یہ جانکاری دی ہے کہ ڈرائیونگ لائسنس ٹیسٹ پہلے سے زیادہ مشکل ہونے والے ہیں اور ڈرائیونگ لائسنس پانے کیلئے ٹیسٹ میں 69 فیصد حاصل کرنا ضروری ہے ۔


ڈرائیونگ لائسنس ٹیسٹ کو مشکل بنانے کیلئے نئے قدم اٹھائے گئے ہیں ، جس میں پاس ہونے کیلئے صحیح انداز کے ساتھ گاڑی کو ریورس کرنا بھی شامل ہے ۔ اسی کے ساتھ تمام آر ٹی اوز کو بھی اہلیت کی فیصد کے بارے میں معلومات دی گئی ہیں اور اب اس پر بھی عمل کیا جارہا ہے ۔


لوک سبھا میں نتن گڈکری نے کہا کہ اگر گاڑی میں ریورس گیئر ہے تو صحیح انداز کے ساتھ محدود جگہ میں خواہ دائیں یا بائیں کرنا ہو، ڈرائیونگ اسکل ٹیسٹ پاس کرنے کب ایک اہلیت ہے ۔ یہ سینٹرل موٹر وہیکل ایکٹ 1989 کے تحت ہے ۔ انہوں نے مزید بتایا کہ سبھی آر ٹی او میں پاس ہونے کا فیصد 69 فیصد ہے ۔ ساتھ ہی یہ بھی بتایا جارہا ہے کہ ڈرائیونگ اسکل ٹیسٹ کا مقصد کوالیفائیڈ اور ٹیلنٹیڈ ڈرائیورس تیار کرنا ہے اور اس کیلئے دہلی میں 50 موٹر ڈرائیونگ ٹریننگ اسکول بھی چلائے جارہے ہیں ۔


نتن گڈکری نے مزید کہا کہ اصل ڈرائیونگ ٹیسٹ اسکل شروع ہونے سے پہلے سبھی آٹومیٹڈ ٹیسٹ ٹریک میں لگی ایل ای ڈی اسکرین پر ایک ڈیمو دکھایا جاتا ہے ۔ نیز ڈرائیونگ ٹریک پر لائیو ڈیمو بھی کیا جاتا ہے ۔

وہیں اگر ڈرائیونگ لائسنس کی تجدید کی بات کریں تو لائسنس کی مدت ختم ہونے سے ایک سال پہلے یا ایک سال بعد پہلے کرایا جاسکتا ہے ۔ سبھی ہی سبھی فارمس ، فیس ، دستاویز کو آن لائن بھی پر کیا جاسکتا ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Mar 26, 2021 10:49 AM IST