ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

بہار میں 78 سیٹوں پر ووٹنگ جاری، حکومت کے 11 وزرا کی قسمت داو پر

بہار اسمبلی الیکشن کے تیسرے اور آخری مرحلے کے تحت 78 اسمبلی حلقوں میں آج ووٹنگ جاری ہے۔ اس دوران سبھی کی نگاہیں ریاست میں حکمراں اتحاد این ڈی اے اور اپوزیشن گٹھ بندھن آر جے ڈی اور کانگریس کے درمیان کانٹے کے مقابلے پر ٹکی ہیں۔

  • Share this:
بہار میں 78 سیٹوں پر ووٹنگ جاری، حکومت کے 11 وزرا کی قسمت داو پر
بہار میں 78 سیٹوں پر ووٹنگ جاری، حکومت کے 11 وزرا کی قسمت داو پر

پٹنہ۔ بہار اسمبلی الیکشن (Bihar Assembly Election) کے تیسرے اور آخری مرحلے کے تحت 78 اسمبلی حلقوں میں آج ووٹنگ جاری ہے۔ اس دوران سبھی کی نگاہیں ریاست میں حکمراں اتحاد این ڈی اے (NDA) اور اپوزیشن گٹھ بندھن آر جے ڈی اور کانگریس (RJD-Congress) کے درمیان کانٹے کے مقابلے پر ٹکی ہیں۔ الیکشن میں این ڈی اے جہاں حکومت مخالف لہر (Anti Incumbancy) کو ٹالنے کے لئے پورا زور لگا رہا ہے، وہیں آر جے ڈی کی زیر قیادت مہا گٹھ بندھن بھی پورے جوش میں ہے۔



ریاست کی 243 رکنی اسمبلی کے لئے الیکشن کے تیسرے اور آخری مرحلے کے تحت 15 اضلاع کے 78 اسمبلی حلقوں میں تقریبا 2.34 کروڑ رائے دہندگان اپنے حق رائے دہی کا استعمال کر سکیں گے اور 1204 امیدواروں کی قسمت کا فیصلہ کریں گے۔ ان امیدواروں میں اسمبلی اسپیکر اور ریاستی کابینہ کے 11 رکن شامل ہیں۔


بہار میں آخری مرحلے کے الیکشن کے ساتھ ہی واحد والمیکی نگر لوک سبھا سیٹ ضمنی الیکشن کے لئے بھی آج ہی ووٹ ڈالے جا رہے ہیں۔ آخری مرحلے کا الیکشن بہار میں متھیلا اور سیمانچل علاقوں میں ہونا ہے جہاں برہمن اور مسلم ووٹرز فیصلہ کن ثابت ہوتے ہیں۔ بہار میں آخری مرحلے کی ووٹنگ میں اسمبلی اسپیکر کے علاوہ 11 وزرا بھی میدان میں ہیں جن کی قسمت کا فیصلہ آج ہی ای وی ایم میں قید ہو گا۔


بہار میں اسمبلی انتخابات کے آخری مرحلے کے لئے وزیر اعظم مودی نے ٹویٹ کر کے لوگوں سے کورونا کی تمام احتیاطی تدابیر برتتے ہوئے ووٹنگ کا نیا ریکارڈ بنانے کی اپیل کی۔
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Nov 07, 2020 07:59 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading