ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

Bihar Election 2020: بہار میں نوجوانوں کا دل جیتتے نظر آئے تیجسوی، کیا ڈبو پائیں گے نتیش کی انتخابی کشتی؟

تمام ایگزٹ پول میں تیجسوی یادو کی قیادت والے مہاگٹھ بندھن کو سبقت ملنے کا اندازہ جتایا جا رہا ہے۔ ایگزٹ پول تو انتخابی پنڈتوں کے جائزے اور سروے پر مشتمل ہوتا ہے لیکن بہار الیکشن سے منسلک ایک بات نتائج آنے سے پہلے واضح ہو چکی ہے اور وہ یہ ہے کہ بہار کے نوجوانوں نے اس بار تبدیلی کے لئے نوجوان لیڈر تیجسوی یادو کو ایک موقع دینے کا ذہن بنا لیا ہے۔

  • Share this:
Bihar Election 2020: بہار میں نوجوانوں کا دل جیتتے نظر آئے تیجسوی، کیا ڈبو پائیں گے نتیش کی انتخابی کشتی؟
بہار میں نوجوانوں کا دل جیتتے نظر آئے تیجسوی، کیا ڈبو پائیں گے نتیش کی انتخابی کشتی؟

نئی دہلی/ پٹنہ۔ بہار اسمبلی الیکشن کے نتائج (Bihar Assembly Election 2020) آنے میں اب بس کچھ وقت رہ گیا ہے۔ بہار کی سیاست ہر 15 سال پر بدلتی ہے۔ مشہور جئے پرکاش نارائن آندولن میں دکھائی دینے والا رجحان اس سال کے بہار الیکشن میں پھر سے نظر آ رہا ہے۔ لالو۔ رابڑی کی جوڑی نے 15 برسوں تک ریاست پر حکومت کی۔ پھر نتیش کمار نے 2005 سے 2020 تک اقتدار سنبھالا۔ اب بہار کے نوجوانوں نے ذات پات سے اوپر اٹھ کر تبدیلی کے لئے ووٹ دیا ہے۔ تین دہائیوں سے زیادہ وقت میں پہلی بار نوجوان اس الیکشن میں ذات اور مذہب سے پرے جا کر ایک لیڈر منتخب کرنے کے طور پر ابھرے ہیں۔ 10 نومبر کو یہ طئے ہو جائے گا کہ بہار کے عوام نے ' تبدیلی' کے لئے اس بار کس پر بھروسہ جتایا ہے۔


تمام ایگزٹ پول (Exit Poll of Bihar Election) میں تیجسوی یادو (Tejashwi Yadav) کی قیادت والے مہاگٹھ بندھن (Mahagathbandhan) کو سبقت ملنے کا اندازہ جتایا جا رہا ہے۔ ایگزٹ پول تو انتخابی پنڈتوں کے جائزے اور سروے پر مشتمل ہوتا ہے لیکن بہار الیکشن سے منسلک ایک بات نتائج آنے سے پہلے واضح ہو چکی ہے اور وہ یہ ہے کہ بہار کے نوجوانوں نے اس بار تبدیلی کے لئے نوجوان لیڈر تیجسوی یادو کو ایک موقع دینے کا ذہن بنا لیا ہے۔


مشرقی چمپارن کے موتیہاری میں مہاتما گاندھی سینٹرل یونیورسیٹی میں ایک نوجوان ووٹر کہتے ہیں ' میں ایک راجپوت ہوں۔ 2010 اور 2015 میں میں بی جے پی کے ساتھ تھا لیکن اس بار میں تیجسوی یادو کے حق میں ہوں۔ ہم نتیش کمار کو ہٹانا چاہتے ہیں۔ ہم نوجوان ہیں اور واضح طور پر نوجوانوں کے بارے میں سوچیں گے۔ ہمیں نوکری چاہئے، روزگار چاہئے۔ جب میں نے این ٹی پی سی میں نوکری کے لئے درخواست دی تھی تب سے دو سال ہو گئے ہیں۔ اب تک اس کا کچھ نہ ہوا'۔


آر جے ڈی کے لیڈر اور بہار کے سابق نائب وزیر اعلیٰ تیجسوی یادو اس الیکشن میں ایک نئی شکل میں نظر آئے ہیں۔ 2019 میں ہوئے لوک سبھا الیکشن میں سست پڑے تیجسوی اس بار یہاں سے وہاں دوڑتے نظر آئے۔ انہوں نے ایک دن میں 19-19 انتخابی ریلیاں کیں۔ نوجوانوں کی بھاری بھیڑ نے ان کا خیرمقدم کیا۔ 31 سالہ تیجسوی یادو نے اس دوران ہر ریلی میں 10 لاکھ سرکاری نوکریوں کا اپنا وعدہ دہرایا۔ تیجسوی نے کہا کہ 'وہ جس دن وزیر اعلیٰ بنیں گے، نوکریوں کے اپنے وعدے پر وہ دستخط کریں گے'۔ پارٹی نے دعویٰ کیا ہے کہ بہار حکومت میں پہلے سے ہی 4.5 لاکھ عہدے خالی ہیں اور دیگر 5.5 لاکھ نوکریاں پیدا کرنے کی ضرورت ہے۔

تیجسوی یادو کے اس وعدے نے نوجوانوں کا حوصلہ بڑھایا ہے۔ ان کی امیدیں جگائی ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ ریاست کے تمام نوجوانوں نے تمام بحث ومباحثوں اور ذات پات سے اٹھ کر نوجوان کا ساتھ دینے کا فیصلہ کیا ہے۔
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Nov 09, 2020 04:12 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading