ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

فرقہ وارانہ ہم آہنگی کو نقصان پہنچانے والوں کو برداشت نہیں کیا جائے گا : رابڑی

رابڑی دیوی نے کہا کہ مرکزی وزیر مسٹر سنگھ نے ارریہ لوک سبھا ضمنی انتخابات کے بعد ماحول کو خراب کرنے کے لئے کہا تھا کہ اگر آر جے ڈی کا امیدوار کامیاب ہوا تو ارریہ آئی ایس آئی کا مرکز بن جائے گا

  • UNI
  • Last Updated: Mar 20, 2018 06:47 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
فرقہ وارانہ ہم آہنگی کو نقصان پہنچانے والوں کو برداشت نہیں کیا جائے گا : رابڑی
رابری دیوی ۔ فائل فوٹو

پٹنہ : بہار کی سابق وزیر اعلی رابڑی دیوی نے آج کہا کہ لوک سبھا اور اسمبلی ضمنی انتخابات میں شکست کی وجہ سے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے مرکزی وزیر گری راج سنگھ اور اشونی کمار چوبے ریاست میں فرقہ وارانہ ہم آہنگی کو نقصان پہنچانے میں مصروف ہیں، جس کو کبھی بھی برداشت نہیں کیا جائے گا۔

راشٹریہ جنتا دل (آر جے ڈی)قانون ساز کونسل کی رہنما رابڑی دیوی نے کہا کہ مرکزی وزیر مسٹر سنگھ نے ارریہ لوک سبھا ضمنی انتخابات کے بعد ماحول کو خراب کرنے کے لئے کہا تھا کہ اگر آر جے ڈی کا امیدوار کامیاب ہوا تو ارریہ آئی ایس آئی کا مرکز بن جائے گا۔ ذمہ دار عہدہ پرفائز کسی بھی شخص کے لئے اس طرح کا بیان دینا مناسب نہیں ہے۔

سابق وزیر اعلی نے کہا کہ اسی طرح بی جے پی کے ریاستی صدر نتيانند رائے نے بھی ارریہ میں قابل اعتراض بیان دیا تھا۔ بھاگلپور میں بھی فرقہ وارانہ ہم آہنگی کو نقصان پہنچانے میں مرکزی وزیر مسٹر چوبے کے بیٹے مصروف رہے۔ انہوں نے کہا کہ مرکز اور بہار کی حکومت میں شہ زور لوگ بیٹھے ہیں اور وہ صرف من مانی کرتے ہیں۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ایسے لیڈروں کا ان کی پارٹی بہار میں مخالفت کرے گی۔ بی جے پی فسادات بھڑکانے کا کام کرتی ہے۔

First published: Mar 20, 2018 06:46 PM IST