ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

بہار سے جائیں گے اس سال 24 خادم الحجاج، حج کمیٹی کی میٹنگ میں ہوا خادم الحجاج کا انتخاب

بہار میں عازمین حج کا بارہ ہزار چار سو کوٹہ ہے لیکن کوٹہ سے کافی کم محض چار ہزار آٹھ سو ۵۸ عازمین حج اس سال روانہ ہوں گے جس میں گیا امبارکیشن پوائنٹ سے دو ہزار ایک سو چالیس اور کولکتہ امبارکیشن پوائنٹ سے دو ہزار سات سو اٹھارہ عازمین بیت اللہ کے لئے روانہ ہونگے۔

  • Share this:
بہار سے جائیں گے اس سال 24 خادم الحجاج، حج کمیٹی کی میٹنگ میں ہوا خادم الحجاج کا انتخاب
بہار سے جائیں گے اس سال 24 خادم الحجاج

پٹنہ۔  یہاں کے حج بھون میں حج کے موقع پر روحانی ماحول قائم رہتا ہے۔ حج بھون کی شاندار عمارت صوبہ کے عازمین حج کا خیرمقدم کرتی ہے۔ حج بھون میں عازمین کے ٹھہرنے، کھانے پینے اور عبادت کرنے کے ساتھ ساتھ ان کی تربیت کا کافی پختہ انتظام کیاگیا ہے۔ دو دن پہلے عازمین حج کو حج بھون بلایا جاتا ہے جہاں رضاکاروں کی تربیت یافتہ ٹیم ان کا خیرمقدم کرتی ہے۔ سادے لباس میں پولیس کے نوجوان عازمین کی خدمت کرتے دکھائی دیتے ہیں۔ روزانہ حج بھون میں دعاء کی مجلس کا انعقاد ہوتا ہے جس میں بڑے بڑے عالم دین عازمین حج سے خطاب کرتے ہیں۔ ساتھ ہی اس موقع پر تمام مذاہب کے لوگ بھی موجود ہوتے ہیں لیکن اب ایسا منظر دیکھنے کو ملےگا یہ اپنے آپ میں ایک سوال بنتا جا رہا ہے۔


دراصل ریاست کے عازمین پہلے پٹنہ ایئرپورٹ سے بیت اللہ کے لئے روانہ ہوتے تھے پھر بعد میں گیا امبارکیشن پوائنٹ سے جانے لگے. اب وہ کولکتہ سے بھی جا سکتے ہیں۔ گزشتہ سال بھی عازمین حج کا ایک محدود قافلہ کولکتہ سے روانہ ہوا لیکن اس سال سب سے زیادہ عازمین کولکتہ امبارکیشن پوائنٹ سے روانہ ہوں گے۔ وہ اس لئے کیونکہ گیا کے مقابلہ کولکتہ سے جانے پر عازمین حج کو ۲۳ ہزار روپیہ کم دینا پڑ رہا ہے۔ گیا سے ۲۳ ہزار روپیہ زیادہ لگنے کے سبب زیادہ تر لوگوں نے کولکتہ کا انتخاب کیا ہے۔


حج کمیٹی کی میٹنگ میں ہوا خادم الحجاج کا انتخاب


بہار میں عازمین حج کا بارہ ہزار چار سو کوٹہ ہے لیکن کوٹہ سے کافی کم محض چار ہزار آٹھ سو ۵۸ عازمین حج اس سال روانہ ہوں گے جس میں گیا امبارکیشن پوائنٹ سے دو ہزار ایک سو چالیس اور کولکتہ امبارکیشن پوائنٹ سے دو ہزار سات سو اٹھارہ عازمین بیت اللہ کے لئے روانہ ہونگے۔

حج کمیٹی کے مطابق پٹنہ، گیا اور کولکتہ میں عازمین حج کے لئے بہتر انتظام کیا جائے گا۔ حج کمیٹی کا کہنا ہے کہ گیا سے جانے پر حج بھون میں زبردست ماحول رہتا ہے۔ پٹنہ اور گیا میں عازمین کے لئے خاص طور سے انتظام کیاجاتا ہے لیکن پٹنہ سے کم تعداد ہونے کے سبب انتظام تو کیا جائے گا لیکن رونق تھوڑی کم رہے گی۔حج کمیٹی کے چیرمین الیاس حسین عرف سونو بابو نے کہا کہ پٹنہ، گیا اور کولکتہ میں عازمین کی سہولت کا مزید بہتر انتظام کیا جارہا ہے۔ ساتھ ہی 24 خادم الحجاج کو بھیجنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ عازمین کو کسی قسم کی کوئی پریشانی نہیں ہو حج کمیٹی اس پر خاص طور سے غور کر رہی ہے۔
First published: Mar 11, 2020 04:37 PM IST