உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Bihar News: ینگ انڈیا کے بول سیزن 2 کا فائنل مقابلہ اختتام پذیر

    Bihar News: ینگ انڈیا کے بول سیزن 2 کا فائنل مقابلہ اختتام پذیر

    Bihar News: ینگ انڈیا کے بول سیزن 2 کا فائنل مقابلہ اختتام پذیر

    Patna News: ریاستی سطح کے تقریری مقابلے میں وشال کمار یادو کو پہلا، امیتیش پانڈے کو دوسرا اور محمد کمال الدین رضا کو تیسرا انعام ملا ۔ باقی شرکا کو اسناد اور میڈلز سے نوازا گیا۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Bihar | Patna | Bhagalpur | Muzaffarpur
    • Share this:
      پٹنہ : انڈین یوتھ کانگریس کے فلیگ شپ پروگرام "ینگ انڈیا کے بول سیزن-2" کے ریاستی سطح کے تقریری مقابلہ کا فائنل جمعرات کو ریاستی کانگریس ہیڈکوارٹر، صداقت آشرم، پٹنہ میں منعقد ہوا، جس میں ریاست کے مختلف اضلاع سے شرکاء نے شرکت کی۔ ریاستی سطح کے تقریری مقابلے میں وشال کمار یادو کو پہلا، امیتیش پانڈے کو دوسرا اور محمد کمال الدین رضا کو تیسرا انعام ملا ۔ باقی شرکا کو اسناد اور میڈلز سے نوازا گیا۔ نوجوان شرکا نے مہنگائی، بے روزگاری، ملک کی اقتصادی حالت جیسے امور پر کھل کر اپنے خیالات کا اظہار کیا اور مودی حکومت کو تنقید کا بھی نشانہ بنایا ۔

      بہار پردیش یوتھ کانگریس کے انچارج راجیش سنہا سنی، جو اس پروگرام میں مہمان خصوصی کے طور پر موجود تھے، نے جیتنے والوں کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ انڈین یوتھ کانگریس نے ملک کے نوجوانوں کو ایک پلیٹ فارم دیا ہے، جس کے ذریعے وہ اپنے خیالات کا اظہار کریں گے۔ وہ آزادانہ طور پر اپنی باتیں رکھ سکیں گے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: ننہے بیٹے کا ایئرہوسٹس ماں نے فلائٹ میں کیا کچھ ایسے خیرمقدم، دل کو چھو لے گا یہ VIDEO!


      وہیں بہار پردیش یوتھ کانگریس کے صدر گنجن پٹیل نے کہا کہ ینگ انڈیا کے بول پروگرام کے جیتنے والوں میں سے ہی مستقبل میں کانگریس کے ترجمان ہوں گے۔ انہوں نے نوجوان کانگریسیوں سے راہل گاندھی اور کانگریس کے نظریہ کو مضبوط کرنے کی اپیل کی۔

       

      یہ بھی پڑھئے: Twitter نے دیا ایڈٹ بٹن کا آپشن، اب آپ ٹویٹ کرنے کے بعد بھی اس کو کرپائیں گے ایڈٹ


      ینگ انڈیا بول سیزن-2 کے انچارج اور ریاستی ترجمان شمس شاہنواز نے کہا کہ ینگ انڈیا کا بول پروگرام ایک ایسا پلیٹ فارم ہے، جس کے ذریعہ نوجوانوں میں موجودہ چیلنجوں سے لڑنے کی صلاحیت پیدا ہوگی اور وہ ان چیلنجوں کے بارے میں آواز اٹھا کر ان کے درمیان اپنی شناخت بنا سکتے ہیں۔ عوام بات کرتے رہیں گے۔ یہ ملک اور جمہوریت دونوں کے لیے بہت ضروری ہے۔

      پروگرام میں ماہر تعلیم سنتوش کمار اور خوشبو کماری نے ججز کے کردار میں اہم کردار ادا کیا ۔ اس موقع پر راکیش سنگھ، محمد معین الدین فیصل، شیوم کمار، وشال کمار، عبدالمنان، تنویر حسن، ویمل کمار مشرا، اسد رحمان، دھرمیندر کمار، موہت کمار، اختر رضا خان، ششانک رنجن، رجنیس رنجن، ویریندر کشواہا سمیت دیگر موجود تھے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: