உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بہار: خصوصی ریاست کے درجہ پر وزیر کے بیان سے گرمائی سیاست، اپوزیشن نے کہا : این ڈی اے سے باہر آئے جے ڈی یو

    بہار: خصوصی ریاست کے درجہ پر وزیر کے بیان سے گرمائی سیاست، اپوزیشن نے سادھا نشانہ

    بہار: خصوصی ریاست کے درجہ پر وزیر کے بیان سے گرمائی سیاست، اپوزیشن نے سادھا نشانہ

    Bihar News: اپوزیشن پارٹیوں نے اس معاملہ پر حکمراں جے ڈی یو اور بی جے پی اتحاد کو آڑے ہاتھوں لیا ہے۔ آر جے ڈی کے ممبر اسمبلی مکیش روشن نے مرکزی اور ریاستی حکومتوں پر طنز کرتے ہوئے کہا کہ یہ دونوں پارٹیاں خصوصی ریاست کے درجہ کے نام پر بہار کے عوام کو مسلسل بے وقوف بناتی آ رہی تھیں ، لیکن بیجندر یادو نے حقیقت بتانے کا کام کیا ہے ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      پٹنہ : بہار کو خصوصی ریاست کا درجہ دینے کے حوالے سے نتیش حکومت میں منصوبہ بندی اور ترقی کے وزیر بیجیندر یادو کے بیان سے سیاست گرما گئی ہے ۔ ریاستی بی جے پی کے ترجمان پریم رنجن پٹیل نے کہا کہ جب نیتی آیوگ نے ​​خصوصی ریاست کے درجہ کا پرویزن ہی ختم کر دیا ہے تو پھر کسی بھی ریاست کو خصوصی درجہ کیسے دیا جائے گا ۔ انہوں نے کہا کہ اگر نیتی آیوگ کسی ریاست کو خصوصی درجہ دینے کا پرویزن کرتا ہے تو بہار پہلی ریاست ہوگی جس کو خصوصی درجہ حاصل ملے گا ۔ وزیر اعظم نریندر مودی کی ترجیحات میں بہار ہے اور وہ بہار کی ترقی کیلئے مسلسل کوشاں ہیں۔

      ادھر اپوزیشن پارٹیوں نے اس معاملہ پر حکمراں جے ڈی یو اور بی جے پی اتحاد کو آڑے ہاتھوں لیا ہے۔ راشٹریہ جنتا دل (آر جے ڈی) کے ممبر اسمبلی مکیش روشن نے مرکزی اور ریاستی حکومتوں پر طنز کرتے ہوئے کہا کہ یہ دونوں پارٹیاں خصوصی ریاست کے درجہ کے نام پر بہار کے عوام کو مسلسل بے وقوف بناتی آ رہی تھیں ، لیکن بیجندر یادو نے حقیقت بتانے کا کام کیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے لیڈر تیجسوی یادو پہلے سے ہی کہتے آرہے ہیں کہ یہ ڈبل انجن کی سرکار نہیں ہے ، بلکہ یہ ٹربل انجن کی سرکار ہے ۔ جب مرکزی حکومت ، وزیر اعلیٰ نتیش کمار کی باتیں نہیں سن رہی ہے تو وہ ان کا ساتھ چھوڑ دیں ۔

      وہیں بہار قانون ساز کونسل کے رکن اور سینئر کانگریس لیڈر پریم چند مشرا نے الزام لگایا کہ جے ڈی یو - بی جے پی حکومت شروع سے ہی خصوصی ریاست کے درجہ کے معاملہ پر صرف سیاست کررہی ہے ، حقیقت میں ان دونوں پارٹیوں کو اس معاملہ سے کچھ لینا دینا ہی نہیں تھا ۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعلی نتیش کمار کا ماننا ہے کہ خصوصی ریاست کے درجہ سے ہی بہار کی ترقی ہوسکتی ہے ، لیکن اب سرکار کا اس فیصلے سے الگ ہونا جس میں اپوزیشن کا بھی ساتھ رہا ہو ، کئی سنجیدہ سوالات کھڑے کرتا ہے ۔

      کانگریس لیڈر نے کہا کہ جے ڈی یو کو این ڈی اے سے الگ ہوجانا چاہئے اور اس معاملہ پر ان سبھی پارٹیوں کا ساتھ لے کر طویل لڑائی لڑنی چاہئے ، جنہوں نے بہار کو خصوصی ریاست کا درجہ دینے کے معاملہ پر نتیش کمار کی حمایت کی تھی ۔

      بتادیں کہ گزشتہ طویل عرصہ سے وزیر اعلیٰ نتیش کمار مرکزی حکومت سے بہار کو خصوصی ریاست کا درجہ دینے کا مطالبہ کرتے رہے ہیں ۔ اس کو لے کر مرکزی حکومت پر دباو بنانے کیلئے وہ دہلی میں بھی ریلی کرچکے ہیں ۔ ان کا کہنا ہے کہ بہار کی پسماندگی کو دیکھتے ہوئے مرکزی حکومت کو بہار کو خصوصی ریاست کا درجہ دینا چاہئے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: