ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

لاک ڈاؤن کی وجہ سے ملتوی ہوئی شادی تو لڑکے نے کردی ایسی حرکت، ناراض گاؤں کے لوگ بھڑک اٹھے تو ہوا یہ

لاک ڈاؤن (CoronavirusLockdown) کے چلتے شادی (Marriage) ملتوی ہونے سے پریشان شخص اپنی منگیتر(fiance) سے ملنے اس کے گھر پہنچ گیا۔ پر یہ بات لڑکی کے گھروالوں سمیت پڑوسیوں کو بھی پسند نہیں آئی۔

  • Share this:
لاک ڈاؤن کی وجہ سے ملتوی ہوئی شادی تو لڑکے نے کردی ایسی حرکت، ناراض گاؤں کے لوگ بھڑک اٹھے تو ہوا یہ
لڑکی سے ملنے اس کے گاؤں پہنچا تھا شخص اور پھر ہوا یہ

لاک ڈاؤن (CoronavirusLockdown) کے چلتے شادی (Marriage) ملتوی ہونے سے پریشان شخص اپنی منگیتر(fiance) سے ملنے اس کے گھر پہنچ گیا۔ پر یہ بات لڑکی کے گھروالوں سمیت پڑوسیوں کو بھی پسند نہیں آئی۔ شخص کی اس حرکت سے ناراض گاؤں کے لوگوں نے لڑکی اور لڑکے کے گھر والوں سے بات چیت کی۔ دونوں فریق کی رضامندی سے ان دونوں کی مندر میں لے جاکر کر شادی کرادی گئی۔

لڑکی سے ملنے اس کے گاؤں پہنچا تھا شخص

شادی کی شہنائی و گاجے باجے سے دور دولہا۔دلہن نے سوشل ڈسٹینسگ کی پیروی کرتے ہوئے اہل خانہ کی موجودگی میں سات پھیرے لئے۔ بتایا جارہا ہے کہ مفصل تھانہ علاقے کے سورت پور کے رہنے والے راجیشور رائے کے بیٹے سوربھ پرکاش کی شادی گورا اوپی علاقے کے گیرا باون ٹولا کے رہنے والے سریش رائے کی بیٹی آرتی کے ساتھ ہوئی تھی۔ شادی کیلئے اپریل کا مہورت طے کیا گیا تھا۔ اسی درمیان کورونا کے بڑھتے معاملوں کو دیکھتے ہوئے تاریخ طے نہیں ہوپائی۔ تب لڑکی اور لڑکا آپس میں فون پر بات کرنے لگے۔ مسلسل لاک ڈاؤن کی مدت بڑھتے رہنے سے شادی کی تاریخ طے نہیں ہوپارہی تھی تب شادی کے انتظار میں بیٹھا سوربھ اپنی ہونے والی بیوی آرتی سے ملنے اس کے گاؤں پہنچ گیا۔

گاؤں میں اس کے پینچنے پر لوگوں نے ناراضگی ظاہر کی۔ لوگوں کی ناراضگی مخالفت کرتے ہوئے شخص نے شادی طے نہ ہونے کی بات کہی جس کے بعد ناراض گاؤں والوں نے دونوں فریق کو بلایا۔ دونوں فریق موقع پر پہنچ کر شادی کیلئے اپنی رضامندی دے دی۔ جس کے بعد دونوں کی شادی گورا پولیس کی موجودگی مین مندر میں مکمل کرائی گئی۔


ہیں موقع پر موجود سباس رائے، ونے کمار دیگر دونوں فریق کے لوگوں نے دولہا۔دلہن کو آشیرواد دیا۔ شادی سے لڑکی اور لڑکا کافی خوش نظر آئے۔
Published by: Sana Naeem
First published: Aug 05, 2020 04:16 PM IST