உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سوامی اسیما نند کے سہارے بنگال میں آگے بڑھنا چاہتی ہے بی جے پی

    سوامی اسیمانند اجمیردرگاہ اورمکہ مسجد بم دھماکہ کے اہم ملزمین میں سے ایک تھا: فائل فوٹو۔

    سوامی اسیمانند اجمیردرگاہ اورمکہ مسجد بم دھماکہ کے اہم ملزمین میں سے ایک تھا: فائل فوٹو۔

    کولکاتا: مغربی بنگال میں سیاسی زمین مضبوط کرنے کےلئے بی جے پی کی ریاستی یونٹ نے سرگرم شدت پسند ہندو کارکن سوامی اسیما نند کو اپنے ساتھ جوڑ نے کا منصوبہ بنارہی ہے۔

    • Share this:
      کولکاتا: مغربی بنگال میں سیاسی زمین مضبوط کرنے کےلئے بی جے پی کی ریاستی یونٹ نے سرگرم شدت پسند ہندو کارکن سوامی اسیما نند کو اپنے ساتھ جوڑ نے کا منصوبہ بنارہی ہے۔ انہیں اسی ہفتہ مکہ مسجد بم دھماکہ معاملے میں بری کیا گیا تھا۔

      بی جے پی کے ریاستی صدر دلیپ گھوش نے کہاکہ میں سوامی اسیما نند کو ذاتی طور پر طویل وقت سے جانتا ہوں۔ میں ان سے بات کروں گا اور انہیں مغربی بنگال لانے کی کوشش کروں گا تاکہ وہ یہاں کام کرسکیں۔ انہوں نے طویل وقت تک بنگال میں آدیواسیوں کے درمیان کام کیا ہے۔ وہ کئی طریقوں سے ہماری مدد کرسکتے ہیں۔

      پیر کو ایک اسپیشل انکائونٹر ٹیررازم کورٹ نے 2007کے مکہ مسجد بم دھماکہ معاملے میں 66سالہ اسیما نند اور چار دیگر کو بری کردیا تھا۔ اسیما نند کے چھوٹے بھائی سشانت سرکار فی الحال بی جے کی ہگلی یونٹ کے سکریٹری ہیں۔

      سرکار نے کہا کہ اگر ان کے بھائی کاروبار کے لئے ریاست میں لوٹتے ہیں تو انہیں خوشی ہوگی۔ انہوں نے کہاکہ ہمارا پورا خاندان سنگھ پریوار کو وقف ہے، اگر میرے بھائی بنگال آتے ہیں اور یہاں کام کرنا چاہتے ہیں تو ہم بہت خوش ہوں گے۔ مغربی بنگال میں ہگلی ضلع کے کامارپکار میں نبھ کمار سرکار کی شکل میں پیدا ہوئے اسیما نند نے 1971میں سائنس میں گریجویشن تک تعلیم حاصل کی تھی۔
      First published: