ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

سی پی ایم لیڈر برندا کرات کا اکھلیش یادو کو خط ، اخلاق کے اہل خانہ کیلئے مناسب تحفظ کا مطالبہ

برنداکرات نے وزیر اعلی اکھلیش یادو سے کہا ہے کہ اخلاق کے قتل کے ملزم اور مرکزی حکومت میں بیٹھے ان کے کچھ سرپرست گوكشي کے جھوٹے الزام لگا کر اخلاق کی پیٹ پیٹ کر کیاگیا قتل کو صحیح ٹھہرانے کی کوشش کر رہے ہیں

  • UNI
  • Last Updated: Jul 17, 2016 12:24 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
سی پی ایم لیڈر برندا کرات کا اکھلیش یادو کو خط ، اخلاق کے اہل خانہ کیلئے مناسب تحفظ کا مطالبہ
برنداکرات نے وزیر اعلی اکھلیش یادو سے کہا ہے کہ اخلاق کے قتل کے ملزم اور مرکزی حکومت میں بیٹھے ان کے کچھ سرپرست گوكشي کے جھوٹے الزام لگا کر اخلاق کی پیٹ پیٹ کر کیاگیا قتل کو صحیح ٹھہرانے کی کوشش کر رہے ہیں

کولکاتہ : مارکسی کمیونسٹ پارٹی (سی پی ایم) کی سینئر لیڈر برندا کرات نے اتر پردیش کے دادری میں واقع بساهڑا گاؤں میں فرقہ وارانہ اشتعال کے شکار محمد اخلاق کے اہل خانہ کو تحفظ فراہم کرنے کی حکومت سے درخواست کی ہے۔ برنداکرات نے عدالت کے حالیہ حکم پر اخلاق کے اہل خانہ کے خلاف گوكشي کے الزامات سے متعلق ایف آئی آر درج کئے جانے کا حوالہ دیتے ہوئے وزیر اعلی اکھلیش یادو سے کہا ہے کہ اخلاق کے قتل کے ملزم اور مرکزی حکومت میں بیٹھے ان کے کچھ سرپرست گوكشي کے جھوٹے الزام لگا کر اخلاق کی پیٹ پیٹ کر کیاگیا قتل کو صحیح ٹھہرانے کی کوشش کر رہے ہیں۔

پارٹی کی پولٹ بیورو رکن کرات نے مسٹر یادو کو بھیجے اپنے خط میں کہا ہے کہ یہ لوگ ایف آئی آر درج کراکر معاملے کو فرقہ وارانہ رنگ دینے اور سیاسی فائدہ اٹھانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ انہوں نے لکھا ہے کہ یہ پورے ملک کے لئے شرم کی بات ہے کہ جو خاندان اپنے پیاروں کے اچانک قتل ہونے پر قابو پانے کی کوشش کر رہا ہے، اس کے دوسرے ارکان کے خلاف گوكشي کے الزام میں ایف آئی آر درج کی جا رہی ہے۔

برندا کرات نے خاندان کے اراکین کو مناسب سیکورٹی فراہم کرنے کا ریاستی حکومت پر زور دیا ہے تاکہ اخلاق کے اہل خانہ کے ساتھ کوئی انہونی نہ ہو جائے۔ انہوں نے اس خاندان کو قانونی مشورہ دینے والے وکیل یوسف سیفی کو بھی تحفظ فراہم کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔

First published: Jul 17, 2016 12:24 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading