ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

Assembly Elections 2021: انتخابات کے نتائج کے اعلان کے بعد ہرطرح کے جشن اور ریلیوں پر پابندی

الیکشن کمیشن آف انڈیا کے بیان کے مطابق ’’دو مئی 2021 کو گنتی کے بعد فتح کا کوئی جلوس کی اجازت نہیں ہوگی۔ ای سی کے خط میں کہا گیا ہے کہ فاتح امیدوار یا اس کے نمائندے کے ساتھ دو سے زیادہ افراد کو کسی بھی طرح کے جلوس یا ریالی کی اجازت نہیں ہوگی۔

  • Share this:
Assembly Elections 2021: انتخابات کے نتائج کے اعلان کے بعد ہرطرح کے جشن اور ریلیوں پر پابندی
الیکشن کمیشن آف انڈیا کے بیان کے مطابق ’’دو مئی 2021 کو گنتی کے بعد فتح کا کوئی جلوس کی اجازت نہیں ہوگی۔

الیکشن کمیشن آف انڈیا (Election Commission of India ) نے ووٹوں کی گنتی کے دوران اور اس کے بعد جلوسوں پر پابندی عائد کردی ہے۔ پانچ ریاستوں کے انتخابی نتائج اتوار کو اعلان کیے جائیں گے۔الیکشن کمیشن آف انڈیا کے بیان کے مطابق ’’دو مئی 2021 کو گنتی کے بعد فتح کا کوئی جلوس کی اجازت  نہیں ہوگی۔ ای سی کے خط میں کہا گیا ہے کہ فاتح امیدوار یا اس کے نمائندے کے ساتھ دو سے زیادہ افراد کو کسی بھی طرح کے جلوس یا ریالی کی اجازت نہیں ہوگی۔


بی جے پی کے سربراہ جے پی نڈا نے اس اقدام کا خیرمقدم کرتے ہوئے ٹویٹ کیا کہ ’’میں نے بی جے پی کی تمام ریاستی اکائیوں کو اس فیصلے پر سختی سے عمل کرنے کی ہدایت دی ہے۔ بی جے پی کے تمام کاری کرتا اپنی اس توانائ کو بحران کی اس گھڑی میں ضرورتمندوں کی مدد کے لئے استعمال کررہے ہیں‘‘۔اس وبائی مرض کے وسط میں ایک ماہ سے جاری پولنگ مشق کے انعقاد پر پول واچ ڈاگ کو متعدد حلقوں سے خوفناک سامنا کرنا پڑا ہے۔



مغربی بنگال کی حکمران ترنمول کانگریس (ٹی ایم سی) نے ریاست میں آٹھ مرحلے کے انتخابات پر اعتراض کیا ہے اور الیکشن کمیشن پر الزام لگایا ہے کہ وہ مرکز کی حکمران بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی مدد کررہی ہے۔اس نے کہا ہے کہ ریاست نے آخری تین مراحل کو ریاست میں ضم کرنے کی اپنی درخواست پر بھی عمل نہیں کیا۔ بنگال کے علاوہ آسام میں تین مراحل میں انتخابات ہوئے اور تمل ناڈو، پڈوچیری اور کیرالہ میں ایک ہی مرحلے میں انتخابی عمل مکمل ہوا۔

پیر کے روز مدراس ہائی کورٹ نے کووڈ۔19 کی دوسری لہر کے لئے ای سی کو ہی واحد ذمہ دار قرار دیا اور کمیشن کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ملک میں روزانہ کورونا کے سنگین کیس سامنے آرہے ہیں اور اس نے ریمارکس دیئے کہ اس کے افسران کو شاید قتل کا مقدمہ درج کیا جانا چاہئے۔
Published by: Mohammad Rahman Pasha
First published: Apr 27, 2021 02:36 PM IST