ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

پٹنہ : رمضان کے آخری دنوں میں بھی بازاروں میں سناٹا، اس بار کروڑوں کا ہوگا نقصان

یوں تو پٹنہ مارکیٹ میں ہر وقت بھیڑ ہوتی ہے لیکن رمضان کے موقع پر پٹنہ مارکیٹ کی بھیڑ میں کئ گنا اضافہ ہوجاتا ہے۔ خواتین کے ملبوسات، زیورات، سنڈیل، چپل، ساڑی کی دکانوں کے ساتھ ہی یہاں کرتا پاجامہ کی بھی دکانیں ہیں اور درجنوں ٹیلرینگ کی دکانیں ہیں۔

  • Share this:
پٹنہ : رمضان کے آخری دنوں میں بھی بازاروں میں سناٹا، اس بار کروڑوں کا ہوگا نقصان
یوں تو پٹنہ مارکیٹ میں ہر وقت بھیڑ ہوتی ہے لیکن رمضان کے موقع پر پٹنہ مارکیٹ کی بھیڑ میں کئ گنا اضافہ ہوجاتا ہے۔ خواتین کے ملبوسات، زیورات، سنڈیل، چپل، ساڑی کی دکانوں کے ساتھ ہی یہاں کرتا پاجامہ کی بھی دکانیں ہیں اور درجنوں ٹیلرینگ کی دکانیں ہیں۔

لاک ڈاون نے پٹنہ کے کاروباریوں کی کمر توڑ دی ہے۔ رمضان کے ایک مہینہ میں سیکڑوں کروڑ کا کاروبار کرنے والا یہ شہر کسی طرح مشکل سے پانچ فیصدی کاروبار کر سکا ہے۔ وہ بھی کچھ چند علاقوں میں۔ پٹنہ کا پٹنہ مارکیٹ کسی تعارف کا محتاج نہیں ہے۔ یوں تو پٹنہ مارکیٹ میں ہر وقت بھیڑ ہوتی ہے لیکن رمضان کے موقع پر پٹنہ مارکیٹ کی بھیڑ میں کئ گنا اضافہ ہوجاتا ہے۔ خواتین کے ملبوسات، زیورات، سنڈیل، چپل، ساڑی کی دکانوں کے ساتھ ہی یہاں کرتا پاجامہ کی بھی دکانیں ہیں اور درجنوں ٹیلرینگ کی دکانیں ہیں۔


وہیں میکپ سے جڑے درجنوں دکان ہیں۔ ہر وقت مرد و خواتین کی بھیڑ اس مارکیٹ میں موجود ہوتی ہے لیکن اس بار کی تصویر بلکل الگ ہے۔پٹنہ مارکیٹ کے دروازہ پر دکاندار آتے ہیں اور شام ہوتے ہی اپنے گھروں کو چلے جاتے ہیں، انتظامیہ کی جانب سے دکان کھولنے کی اجازت کے انتظار میں اس بازار کے کاروباریوں کا ایسے ہی وقت کٹ رہا ہے وہیں اس مارکیٹ کے دکانوں میں کام کرنے والے مزدورروں کو تنخواہ نہیں ملا ہے جو اپنے اپنے آپ میں ایک بڑا سوال ہے۔


نیوز 18 سے بات کرتے ہوئے کئ مزدوروں نے کہا کی ان کی معاشی حالت بیحد خراب ہوگئ ہے۔ مالک تنخواہ نہیں دے رہا ہے اور مارکیٹ بند ہے ایسے میں اب ان کے سامنے کھانے پینے کا مسلہ کھڑا ہورہا ہے۔ دکانداروں کے مطابق رمضان کا پورا مہینہ گزر گیا جس کی کمائ سے دکاندار سال بھر اپنا کام چلاتے ہیں لیکن ان کے مسلہ پر اب بھی غور نہیں کیا جارہا ہے پٹنہ مارکیٹ کو پوری طرح سے کھولنے کی اجازت نہیں دی گئ ہے، ادھر حقیقت یہ بھی ہیکہ اس بار بازاروں میں عید کی خریداری کرنے والے لوگ نہیں کے برابر جارہے ہیں۔

First published: May 20, 2020 06:22 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading