ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

مرکزی وزیر گری راج کا پھر متنازع بیان ، ہندو مسلمان سب کو ملے صرف 2 بچے پیدا کرنے کی اجازت

بگہا: اپنے متنازع بیانات کے لئے اکثر و بیشتر سرخیوں میں رہنے والے مرکزی وزیر گری راج سنگھ نے اب ملک میں آبادی کنٹرول کے لئے قانون بنانے کا راگ الاپا ہے ۔

  • ETV
  • Last Updated: Apr 20, 2016 07:21 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
مرکزی وزیر گری راج کا پھر متنازع بیان ، ہندو مسلمان سب کو ملے صرف 2 بچے پیدا کرنے کی اجازت
بگہا: اپنے متنازع بیانات کے لئے اکثر و بیشتر سرخیوں میں رہنے والے مرکزی وزیر گری راج سنگھ نے اب ملک میں آبادی کنٹرول کے لئے قانون بنانے کا راگ الاپا ہے ۔

بگہا: اپنے متنازع بیانات کے لئے اکثر و بیشتر سرخیوں میں رہنے والے مرکزی وزیر گری راج سنگھ نے اب ملک میں آبادی کنٹرول کے لئے قانون بنانے کا راگ الاپا ہے ۔مرکزی وزیر کا کہنا ہے کہ ہندوستان میں تمام لوگوں کو صرف دو بچے پیدا کرنے کی ہی اجازت ملنی چاہئے ۔

مرکزی وزیر کے مطابق ہندوؤں کی تعداد مسلسل کم ہورہی ہے اور اسے روکنے کے لئے نیا قانون بنانے کی ضرورت ہے اور اس نئے قانون میں تمام لوگوں کو صرف 2 بچے پیدا کرنے کی ہی اجازت ہو۔ اگر ایسا نہیں ہوا تو توازن بگڑ جائے گا۔ خواہ ہندو ہو یا مسلمان یا پھر عیسائی یا سکھ سب کو صرف 2 بچے پیدا کرنے کی اجازت ہونی چاہئے ۔

گری راج سنگھ کے مطابق آزادی کے وقت ملک میں ہندوؤں کی آبادی 90 فیصد تھی ، جو آج گھٹ کر 72-74 فیصد رہ گئی ہے۔ مودی کے وزیر نے مزید کہا کہ جس طرح ہم نے ارياورت اور جموديپ گنوا دیا ہے ، اسی طرح اب ہندوستان بھی کھو دیں گے، پھر پاکستان کی طرح ہماری بیٹیاں اسکول جانے سے ڈریں گي اور گھروں میں قید رہیں گي۔ انہوں نے کہا کہ ملک کی ترقی کے لئے آبادی پر کنٹرول ضروری ہے۔

بگہا میں هری هرناتھ-مكتی ناتھ ثقافتی یاترا میں شامل ہونے کے بعد اپنے خطاب میں گری راج نے ملک کے سنتوں سے ہندو مذہب کی حفاظت کے لئے آگے آنے کی اپیل کی ۔

First published: Apr 20, 2016 07:21 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading