உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ہمنت بسوا سرما ہوں گے آسام کے نئے وزیر اعلی ، کل 12 بجے کابینہ کے ساتھ لیں گے حلف

    ہمنت بسوا سرما ہوں گے آسام کے نئے وزیر اعلی ، کل 12 بجے کابینہ کے ساتھ لیں گے حلف

    آسام کا مشاہد بنا کر بھیجے گئے مرکزی وزیر زراعت نریندر سنگھ تومر نے لیجسلیچر پارٹی کی میٹنگ کے بعد بتایا کہ بسوا سرما کل ینعی پیر کو وزیر اعلی کے عہدہ کا حلف لیں گے ۔

    • Share this:
      گوہاٹی : ہیمنت بسوا سرما آسام کے نئے وزیراعلیٰ ہوں گے ۔ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی تین رکنی مرکزی مشاہدوں کی موجودگی میں اتوار کے روز یہاں نو منتخب اراکین اسمبلی کی میٹنگ میں یہ فیصلہ کیا گیا ۔ اس دوران موجودہ وزیراعلیٰ سربانند سونووال نے آج اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے ۔ انہوں نے گورنر پروفیسر جگدیش مکھی سے راج بھون میں ملاقات کی اور انھیں اپنا استعفیٰ سونپ دیا ۔

      آسام کا مشاہد بنا کر بھیجے گئے مرکزی وزیر زراعت نریندر سنگھ تومر نے لیجسلیچر پارٹی کی میٹنگ کے بعد بتایا کہ بسوا سرما کل ینعی پیر کو وزیر اعلی کے عہدہ کا حلف لیں گے ۔ وہیں ہمنت بسوا سرما نے بھی لیجسلیچر پارٹی کا لیڈر منتخب ہوجانے کے بعد بتایا کہ وہ پیر کو دوپہر بارہ بجے کابینہ کے ساتھ حلف لیں گے ۔

      نریندر سنگھ تومر نے پریس کانفرنس میں بتایا کہ موجودہ وزیر اعلی سربانند سونووال نے سرما کے نام کی تجویز پیش کی اور بی جے پی کے ریاستی پارٹی صدر رنجیت کمار داس اور ہاف لانگ سے نومنتخب ممبر اسمبلی نندتا گارلوسا نے اس تجویز کی حمایت کی ۔ چونکہ اور کسی کے نام کی تجویز پیش نہیں کی گئی تو سرما کو بی جے پی لیجسلیچر پارٹی کا لیڈر اتفاق رائے سے منتخب کرلیا گیا

      آسام اسمبلی انتخابات میں بی جے پی کی قیادت والی اتحاد کے اقتدار میں آنے کے بعد مسٹر سونووال اور مسٹر سرما دونوں ہی وزیراعلیٰ کے عہدے کی دوڑ میں تھے۔ مسٹر سرما نے 1996 میں اپنا سیاسی کریئر شروع کیا تھا اور پہلی بار 2001 میں جالُکباڑی اسمبلی حلقے سے کانگریس کے امیدوار کے طور پر آسام گن پریشد کے رہنما بِھرگو پھوکن کو شکست دی تھی۔

      اس کے بعد 2006، 2011 اور 2016 کے اسمبلی انتخابات میں اسی سیٹ پر اپنی جیت کا سلسلہ قائم رکھا۔ اس بار 2021 کا الیکشن بھی یہیں سے لڑا اور چھٹویں بار جیت حاصل کی۔ انہوں نے وزیر کے طور پر آسام تعلیم ، صحت اور خاندانی بہبود، زراعت، منصوبہ بندی اور ترقی، پی ڈبلیوڈی اور خزانہ جیسے اہم محکموں کی ذمہ داری سنبھالی ہے۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: