ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

نتیش کمارکو سیاست نہیں آتی ہے، وہ کرتے ہیں خدمت خلق، جےڈی یولیڈرکا دعویٰ

سنّی وقف بورڈ کےچیئرمین نے منچ سےکہہ دیا کہ نتیش کمارکو سیاست نہیں آتی ہے، وہ تو خدمت خلق کا کام کرتے ہیں، جیسے مہاتما گاندھی نےکیا، مولانا محمد علی جوہر اورخان عبدالغفار خان نےکیا۔

  • Share this:
نتیش کمارکو سیاست نہیں آتی ہے، وہ کرتے ہیں خدمت خلق، جےڈی یولیڈرکا دعویٰ
جےڈی یولیڈرکا دعویٰ-نتیش کمارکو سیاست نہیں آتی ہے، وہ خدمت خلق کا کام کرتے ہیں۔

پٹنہ: اب تک آپ نے سنا ہوگا کی بہار کے وزیر اعلیٰ نتیش کمار سیاسی بساط پر اپنا مہرا چلنے میں بڑے ماہرہیں، لیکن یہ نہیں سنا ہوگا کی ان کو سیاست نہیں آتی ہے۔ تو سنئے سی اے اے، این پی آر اور این آر سی پر ہورہے احتجاج سے جےڈی یو کے مسلم لیڈران اتنے بےچین ہیں کہ انہوں نے کہہ دیا ہےکہ نتیش کمارکو سیاست نہیں آتی ہے، وہ تو خدمت خلق کا کام کرتے ہیں۔ سی اے اے، این پی آر اور این آر سی پر ہو رہے احتجاج سے بہار میں برسر اقتدار پارٹی خاص طور سے جےڈی یو خوف میں مبتلا ہوگئ ہے۔ نتیجہ کے طور پر پارٹی نے مسلم لیڈروں کو مسلمانوں کی غلط فہمی دور کرنےکا کام سونپا ہے۔


پٹنہ سےلےکرکشن گنج تک مسلم لیڈران دورہ کررہے ہیں۔ آج پٹنہ کے حج بھون میں سنّی وقف بورڈ کی جانب سے ایک پروگرام منعقد کیاگیا۔ حالانکہ پروگرام کا مقصد 20 اضلاع میں چل رہے وقف سروےکےکام کو سنجیدگی سےکرانےسمیت وزیر اعلیٰ نتیش کمارکی جل جیون ہریالی اسکیم کو لاگو کرانے سے متعلق تھا، لیکن جےڈی یو لیڈر اور سنّی وقف بورڈ کےچیئرمین نے منچ سےکہہ دیا کہ نتیش کمارکو سیاست نہیں آتی ہے، وہ تو خدمت خلق کا کام کرتے ہیں، جیسے مہاتما گاندھی نےکیا، مولانا محمد علی جوہر اورخان عبدالغفار خان نےکیا۔


بہار حج بھون میں سنّی وقف بورڈ کی جانب سے ایک پروگرام منعقد کیاگیا، جس میں سی اے اے، این آر سی اور این پی آر پر نتیش کمار کے موقف کی تائید کی گئی۔
بہار حج بھون میں سنّی وقف بورڈ کی جانب سے ایک پروگرام منعقد کیاگیا، جس میں سی اے اے، این آر سی اور این پی آر پر نتیش کمار کے موقف کی تائید کی گئی۔


نتیش کمار اپنےلیڈران کی یہ بات سنتےتو خوشی سے جھوم اٹھتے۔ کہتے ہیں کہ ایسے ہی نہیں ارشاد اللہ کو 15 سال سے وقف بورڈ کا چیئرمین بنایا ہے۔ ان میں بہت صلاحیت ہے، وہ کمال کی بات کرتے ہیں۔ ارشاد اللہ نے یہ بھی لوگوں سے پوچھا کہ بتائیے نتیش کمار کےبیٹےکا نام آپ جانتے ہیں؟ لیکن لالو پرساد یادو کےبیٹےاور بیٹی کا نام سب کو معلوم ہے۔ اس لئے اسمبلی انتخاب میں نتیش کمار کو ہی یاد رکھئےگا۔ سنّی وقف بورڈ کے چیئرمین نے یہ بھی کہا کی مسلمانوں کو صرف نتیش کمار ہی تحفظ فراہم کراسکتے ہیں۔ یہ سی اے اے، این پی آر اور این آر سی کا احتجاج تو اپوزیشن کی چال ہے، وزیر اعلیٰ تو مسلمانوں کے مسیحا ہیں۔ قابل ذکرہے کہ صوبہ کے تمام اضلاع کےضلع اوقاف کمیٹی کےصدراورسکریٹری نے پروگرام میں شرکت کیا۔

ضلع اوقاف کمیٹی کےذمہ داران عام لوگوں کے رابطہ میں رہتےہیں، اس لئے وقف بورڈ ان کے ذریعہ حکومت کی پالیسی کو عام لوگوں کےدرمیان رکھنا چاہتی ہے۔ پروگرام میں شرکت کر رہےگیا ضلع اوقاف کمیٹی کےسکریٹری اسد محسن نےکہا کہ پروگرام میں صرف سروے اورجل جیون ہریالی کی بات ہوئی ہے، ایسا لگتا ہےکہ چیئرمین جب اوقاف کمیٹی کے ذمہ داروں سے سی اے اے، این پی آر اور این آرسی کے معاملے پراپیل کررہے تھے، تو ضلع اوقاف کمیٹی کے لوگ کچھ اور سونچ میں ڈوبے تھے سنا ہی نہیں۔ لیکن جےڈی یو کے دوسرے لیڈروں نےکہا کی اس پروگرام سے شہریت قانون، این پی آر اور این آر سی کی غلط فہمی کو دور کرنے میں کامیابی ملی ہے۔ سیاسی داؤ کھیلنےکے ساتھ ساتھ جےڈی یو لیڈروں نے پروگرام کے ذریعہ نتیش کمار کی جل جیون ہریالی اسکیم کو زمین پر اتارنےکا بھی اعلان کیا۔ قبرستانوں پر درخت لگانےکا منصوبہ بنایاگیا۔ ایک سال میں وقف بورڈ کی جانب سے قبرستانوں پر5 لاکھ درخت لگانےکا منصوبہ بنایا گیا۔ خاص طور سے سی اے اے، این پی آر اور این آرسی کے تعلق سے عام لوگوں کو بیدارکرنےکی ذمہ داری ضلع اوقاف کمیٹی انتظامیہ کو سونپی گئ۔ سنی وقف بورڈ نے واضح طور پر کہا کی اس مسئلہ کو حل کرانےکی ذمہ داری اب آپ کی ہے۔
First published: Feb 05, 2020 11:10 PM IST