ہوم » نیوز » No Category

پوچھ گچھ کے بعد حراست میں لئے گئے سرفراز عالم ، پارٹی نے کیا معطل

پٹنہ : جے ڈی یو نے اپنے رکن اسمبلی سرفراز عالم کو پارٹی سے معطل کر دیا ہے۔ ہفتہ کی صبح ہی وزیر اعلی نتیش نے سرفراز پر سخت کارروائی کا اشارہ دے دیا تھا، جس کے بعد پارٹی اعلی کمان نے سرفراز کی معطلی کا فیصلہ سنایا ۔

  • News18
  • Last Updated: Jan 23, 2016 09:37 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
پوچھ گچھ کے بعد حراست میں لئے گئے سرفراز عالم ، پارٹی نے کیا معطل
پٹنہ : جے ڈی یو نے اپنے رکن اسمبلی سرفراز عالم کو پارٹی سے معطل کر دیا ہے۔ ہفتہ کی صبح ہی وزیر اعلی نتیش نے سرفراز پر سخت کارروائی کا اشارہ دے دیا تھا، جس کے بعد پارٹی اعلی کمان نے سرفراز کی معطلی کا فیصلہ سنایا ۔

پٹنہ: راجدھانی ایکسپریس میں ایک خاتون کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کے الزام میں پھنسے ہوئے جنتا دل یونائیٹڈ سے معطل رکن اسمبلی سرفراز عالم سمن کے بعد پٹنہ جی آر پی تھانہ پہنچے۔ جی آر پی نے سرفراز عالم کو آج شام 5 بجے تک تھانے پہنچنے کا وقت دیا تھا۔ ریلوے پولیس نے پوچھ گچھ کے بعد عالم کو حراست میں لے لیا ہے۔ اس سے پہلے پارٹی نے کارروائی کرتے ہوئے انہیں معطل کر دیا تھا۔ پارٹی نے کہا کہ ان کا رویہ 'غیر مناسب تھا۔ 


جوكيهاٹ سے رکن اسمبلی سرفراز راشٹریہ جنتا دل کے قدآور لیڈر تسليم الدين کے بیٹے ہیں۔ اس سے پہلے سرفراز کے معاملہ پر وزیر اعلی نتیش کمار کے ساتھ پارٹی کے قومی صدر شرد یادو، ریاستی صدر وششٹھ نارائن سنگھ سمیت نتیش کے مشیر پرشانت کشور نے ایک میٹنگ کی۔


وزیر اعلی کی رہائش گاہ پر منعقدہ میٹنگ کے بعد سرفراز کو پارٹی سے معطل کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ سرفراز پر راجدھانی ایکسپریس میں خاتون ساتھی مسافر سے چھیڑ چھاڑ کرنے اور اس کے شوہر سے بدتمیزی سے پیش آنے کا الزام لگا تھا ، جس کے بعد ابتدائی تحقیقات میں وہ قصوروار ثابت ہوتے دکھائی دے رہے ہیں۔


اس معاملے میں سرفراز کو ریلوے پولیس کے سامنے بھی پیش ہونا ہے۔ اس ہائی پروفائل معاملہ میں سرفراز کے خلاف کارروائی کو جے ڈی یو کی طرف سے سخت فیصلہ کے طور پر دیکھا جا رہا ہے۔

First published: Jan 23, 2016 06:03 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading