ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

قبرستان پہنچتے ہی خاتون میں بدل گئی مرد کی لاش، اڑ گئے سب کے ہوش، جانئے کیا ہے معاملہ

فرض کیجئے کہ کیا ہو گا جب اپنے ساتھیوں کے ساتھ ایک مرد کی لاش لیکر قبرستان گئے ہیں اور اچانک وہاں پہنچنے کے بعد جب لاش پر نظر پڑے تو وہ خا

  • Share this:
قبرستان پہنچتے ہی خاتون میں بدل گئی مرد کی لاش، اڑ گئے سب کے ہوش، جانئے کیا ہے معاملہ
علامتی تصویر

فرض کیجئے کہ کیا ہو گا جب اپنے ساتھیوں کے ساتھ ایک مرد کی لاش لیکر قبرستان گئے ہیں اور اچانک وہاں پہنچنے کے بعد جب لاش پر نظر پڑے تو وہ خاتون کی لاش میں بدل گیا ہو۔ ایسا ہی ایک ماجرہ جھارکھنڈ کے جمشید پور میں سامنے آیا ہے۔ راجدھانی رانچی (Ranchi) میں کوروناوائرس بیماری کے علاج کے دوران جمشید پور کا مقامی کی موت ہو گئی۔ انتقال کے بعد اہل خانہ اس شخص کی نعش جمشید پور لے گئے اور آخری رسوم کے لئے قبرستان لے جایا گیا لیکن لاش دیکھتے ہی ہنگامہ برپا ہوگیا۔


در اصل پورے معاملے میں رانچی اور مانجھی کے ایسکلیپیس اسپتال کی بھاری چوک سامنے آئی ہے۔ اسپتال میں دو کوروناپازیٹو کی موت علاج کے دوران ہوئی۔ اسپتال کی لاپرواہی کی وجہ سے ایک خاتون کی لاش جمشید پور پہنچ گئی وہیں جس شخص کی لاش کو جمشید پور جانا تھا وہ اسپتال مییں ہی رہ گئی۔ اب ملیانی منج نام کی خاتون کے اہل خانہ گھنٹوں لاش کی واپسی کا انتظار کرتے رہے۔ وہیں اسپتال انتظامیہ جمشید پور کے مہلوک کورونا مریض کے اہل خانہ پر ہی زبردستی اور توڑ پھوڑ کرکے غلط لاش کو اپنے ساتھ لے جانے کا الزام لگاتے رہے، پر اسپتال انتظامیہ کی اس دلیل کو اور مانجھی تھانہ نے غلط قرار دیا۔ وہیں اعلی افسران نے بیچ کا راستہ نکالا ہے۔


لاش کو واپس لایا گیا

جمشید پور سے لاش کو واپس لایا جارہا ہے۔ اور ادھر رانچی سے لاش کو جمشید پور بھیجا جارہا ہے جہاں دونوں ملیں گے۔ وہیں اپنے۔اپنے اہل خانہ لاش کو رسیو کر لیں گے۔ رانچی کے اور مانجھی کے سی او شیو شنکر پانڈ؁ نے کہا کہ رانچی ایس ڈی او نے اس طرح کی بڑی لاپرواہی کیلئے اسپتال انتظامیہ کے خلاف سخت کارروائی کی ہدایات دی ہیں، پر ابھی ان ترجیح دونوں لاش کو ان کے کنبے کو سونپ کر آخری رسوم ادا کرانے کی ہے۔

اسپتال انتظامیہ کی جانب سے نیوز 18 سے بات چیت میں کہا گیا کہ جو لوگ لاش کو جمشید پور لے گئے ہیں وہ زبردستی اور ان پر حملہ کرکے غلط لاش لیکر چلے گئے۔ اس میں اسپتال کی کوئی کمی نہیں ہے۔ اورمانجھی پولیس کا کانسٹیبل جمادار منڈا لوگوں کے غصے کو پرسکون کرنے کے لئے اسپتال پہنچا اور کہا کہ زبردستی لاش لے جانا درست نہیں ہے۔ کیونکہ تھانے کو اس کی کوئی اطلاع نہیں دی گئی تھی۔ اسپتال میں صرف دو کورونا مثبت افراد کی موت کی اطلاع دی تھی۔ اگر کوئی لڑائی یا ہنگامہ برپا ہوتا تو اسپتال بھی اس کے بارے میں معلومات فراہم کرتا۔
Published by: sana Naeem
First published: Sep 06, 2020 03:11 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading