ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

معروف بنگالی اداکار سومترا چٹرجی کا انتقال، 85 سال کی عمر میں دنیا کو کہا الوداع 

گزشتہ ماہ کورونا سے متاثر ہونے کے بعد انہیں اسپتال میں داخل کرایا گیا تھا لیکن ایک ماہ سے زائد عرصہ اسپتال میں زیر علاج رہنے کے باوجود وہ صحتیاب نہیں ہو سکے۔ ان کی عمر 85 سال تھی۔

  • Share this:
معروف بنگالی اداکار سومترا چٹرجی کا انتقال، 85 سال کی عمر میں دنیا کو کہا الوداع 
معروف بنگالی اداکار سومترا چٹرجی کا انتقال

انڈین فلم انڈسٹری کی مشہور شخصیت سومترا چٹرجی نے دنیا کو الوداع کہہ دیا۔ آج دوپہر کولکاتا کے ایک غیر سرکاری نرسنگ ہوم میں سومترا چٹرجی نے آخری سانس لی۔ گزشتہ ماہ کورونا سے متاثر ہونے کے بعد انہیں اسپتال میں داخل کرایا گیا تھا لیکن ایک ماہ سے زائد عرصہ اسپتال میں زیر علاج رہنے کے باوجود وہ صحتیاب نہیں ہو سکے۔ ان کی عمر 85 سال تھی۔


ڈاکٹروں کے مطابق علاج کے بعد ان کی کورونا رپورٹ منفی آنے کے بعد بھی کورونا سے ہونے والی کچھ ایسی پیچیدگیاں تھیں جو ختم نہیں ہوسکیں۔ سومترا چٹرجی کی موت پر بنگال کے لوگوں نے دکھ کا اظہار کیا ہے۔ فلم انڈسٹری سے لیکر عام لوگ بھی اپنے اس عظیم لیڈر، ہیرو کی موت پر افسردہ ہیں۔ وزیر اعلی ممتا بنرجی نے بھی سومترا چٹرجی کی موت پر گہرے دکھ کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ان کی موت سے نہ صرف فلم انڈسٹری بلکہ ریاست کا ایک بڑا نقصان ہوا ہے۔ سومترا چٹرجی کی خاص بات یہ تھی کہ وہ بہت ملنسار طبیعت کے مالک تھے،  سماجی کاموں میں بھی پیش پیش رہتے تھے۔ سومترا چٹرجی نے ہمیشہ سماج کے ہر طبقے کو جوڑنے و متحد کرنے پر زور دیا تھا۔


سومترا چٹرجی نے آسکر ایوارڈ یافتہ فلم ڈائریکٹر ستیہ جیت رائے کے ساتھ بھی کم و بیش 14 فلموں میں کام کیا ہے۔


سومترا چٹرجی نے آسکر ایوارڈ یافتہ فلم ڈائریکٹر ستیہ جیت رائے کے ساتھ بھی کم و بیش 14 فلموں میں کام کیا ہے۔ وہ پہلے اداکار تھے جنہوں نے ستیہ جیت رائے کی فلم میں جاسوس Faluda کا کردار ادا کیا تھا۔ انہیں اس کردار کے لئے کافی سراہا گیا تھا۔ ان کی یادگار فلموں میں سونار قلعہ، گھرے بائیرے، اشانی سنکیت، بابا فیلوناتھ ، شاخاپروشکھا، شامل ہیں۔ انہیں ملک و بیرون ملکوں میں کئی ایوارڈ سے نوازا گیا ہے جن میں پدم بھوشن، سنگیت ناٹک اکیڈمی کے ٹیگور رتن اور دادا صاحب پھالکے ایوارڈ سے بھی نوازا گیا۔ انہیں فلم انتردھان، Dekha اور padokkhep کے لئے تین نیشنل ایوارڈ بھی سرفراز کیا گیا۔ انہیں سات فلم فیئر ایوارڈ جبکہ 2018 میں فرانس کا سویلین ایوارڈ بھی حاصل ہوا تھا۔

یہ ایوارڈ 1989 میں ستیہ جیت رائے کو بھی دیا گیا تھا۔ سمترا چٹرجی کے پسماندگان میں ان کی اہلیہ دیپا چٹرجی، بیٹا سوگتا اور بیٹی پولمی بوس ہیں۔
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Nov 15, 2020 04:08 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading