ہوم » نیوز » No Category

مظفرپورکے محمد سرفراز بنے کھیل کوٹے سے آڈیٹر

مظفر پور۔ حوصلہ کچھ کرگزرنے کا ہوتوکامیابی ضرورقدم چومتی ہے۔

  • ETV
  • Last Updated: Mar 14, 2016 05:17 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
مظفرپورکے محمد سرفراز بنے کھیل کوٹے سے آڈیٹر
مظفر پور۔ حوصلہ کچھ کرگزرنے کا ہوتوکامیابی ضرورقدم چومتی ہے۔

مظفر پور۔ حوصلہ کچھ کرگزرنے کا ہوتوکامیابی ضرورقدم چومتی ہے۔ یہ قول بہارمیں مظفرپورکے سرفرازپرصادق آتا ہے۔ معاشی اعتبارسے اوسط درجہ کی فیملی سے تعلق رکھنے والے سرفراز نے بچپن سے ہی بیڈمنٹن کے کوٹ پراپنی قسمت آزمانی شروع کی اور کھیل کے میدان میں خوب نام روشن کیا۔ کھیل کوٹے پرسرفرازان دنوں پٹنہ میں آڈیٹرجنرل کے دفترمیں آڈیٹرکےعہدے پرفائزہیں اورمحکمے کی جانب سے بیڈ منٹن میں اچھی کارکردگی کامظاہرہ کررہے ہیں۔ سرفرازکی مانند ریاست بہارکے دوردرازعلاقوں میں مختلف کھیلوں کے ابھرتے ہوئے کئی ہونہارکھلاڑی موجودہیں ۔ ضرورت ہے ہرسطح پرانکا تعاون کرکے انکی صلاحیتوں کو پروان چڑھانے کی۔


 بہارمیں مظفرپورشہرکے رہنے والے محمد سرفرازکے سرسے والد کا سایہ بچپن میں ہی اٹھ گیاتھا۔ اس وقت بڑے بھائی بھی برسرروزگارنہیں تھے۔ زندگی کے نشیب وفرازکا سامنا کرتے ہوئے سرفراز25 سال کے ہوچکے ہیں۔ انہوں نے اپنے پرائمری تعلیمی دورمیں ہی پڑھائی کے ساتھ ساتھ بیڈمنٹن کھیلنا شروع کردیاتھا۔ اُن دنوں بڑے بھائی ریاستی سطح پربیڈمنٹن کے اچھے کھلاڑی تھے اس لیے سرفراز کو انکی گائڈلائن سے کافی تقویت ملی۔ سرفراز انڈر13، انڈر17اورانڈر19 سنگلزوڈبلزبیڈمنٹن مقابلوں میں اسٹیٹ چیمپین رہے ہیں۔سرفرازکی والدہ اپنے فرزند کواسپورٹس کی دنیامیں بلندی پردیکھناچاہتی تھیں۔ لیکن خود سرفرازکوجلدازجلد برسرروزگارہوجانے کی فکرلاحق تھی۔ والد کے انتقال کے سبب سرفرازنے سرکاری ملازمت کے لیے مقررلازمی عمرکی کم سے کم حد پرپہنچتے ہی اسپورٹس کوٹے کے تحت ملازمت اختیارکرلی۔ اکاؤنٹس گریجوئیٹ سرفرازان دنوں پٹنہ آڈیٹرجنرل کے دفترمیں آڈیٹرکے عہدے پرفائزہیں اورمحکمے کی جانب سے اپنی اسپورٹس کی سرگرمیاں بھی جاری رکھے ہوئے ہیں۔


First published: Mar 14, 2016 05:16 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading