உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    این سی پی یوایل کی منظم کاوشوں کے نتیجے میں اردوزبان تابناک مستقبل کی طرف گامزن

    مظفرپور : مرکزی وزارت برائے فروغ انسانی وسائل کے تحت کام کرنے والاادارہ قومی کونسل برائے فروغ اردوزبان این سی پی یوایل یکم اپریل 1996 سے فروغ اردوکے لیے سرگرم ہے۔

    مظفرپور : مرکزی وزارت برائے فروغ انسانی وسائل کے تحت کام کرنے والاادارہ قومی کونسل برائے فروغ اردوزبان این سی پی یوایل یکم اپریل 1996 سے فروغ اردوکے لیے سرگرم ہے۔

    مظفرپور : مرکزی وزارت برائے فروغ انسانی وسائل کے تحت کام کرنے والاادارہ قومی کونسل برائے فروغ اردوزبان این سی پی یوایل یکم اپریل 1996 سے فروغ اردوکے لیے سرگرم ہے۔

    • ETV
    • Last Updated :
    • Share this:

      مظفرپور : مرکزی وزارت برائے فروغ انسانی وسائل کے تحت کام کرنے والاادارہ قومی کونسل برائے فروغ اردوزبان این سی پی یوایل یکم اپریل 1996 سے فروغ اردوکے لیے سرگرم ہے۔ ملک بھرمیں این سی پی یوایل کے چھوٹے بڑے 478 مراکزہیں۔انہیں میں سے ایک ہے بہارکے مظفر پور کا این سی پی یوایل سنٹر ، جہاں غیر مسلم بھی بڑے شوق سے اردو سیکھ رہے ہیں۔ اس مرکز نے خاتون ٹیچرکابھی نظم کررکھاہے ۔ تاکہ لڑکیوں کو سنٹر پر داخلہ لینے اوراردوزبان سیکھنے میں کوئی رکاوٹ پیش نہ آئے۔


      این سی پی یوایل کا بہارکے مظفرپور شہر میں مرکز اکتوبر 2008 میں قائم کیا گیا تھا ۔ اس وقت سے اب تک یہ مرکزپانچ سوسے زیادہ افراد کو اردو زبان کے علم سے آراستہ کر چکا ہے ، جن میں سے 100 افرادکاتعلق ملک کے اکثریتی طبقہ سے ہے۔ مظفرپور مرکز پر فی الوقت چالیس چالیس طلباپرمشتمل دو کلاسیں چل رہی ہیں۔ یہ سنٹرطلبہ کو کمپیوٹر ایجوکیشن اور اردو زبان کی بنیادی تعلیم سے آراستہ کررہاہے۔


      سینٹرایک طرف اردو سے نابلد افراد کو اردو زبان لکھنا پڑھنا اور بولنا سکھا رہا ہے تو دوسری جانب اردو جاننے والوں کو اردو میڈیم میں کمپیوٹر ایجوکیشن فراہم کر رہا ہے۔ ان دنوں بھی سنٹر پر اردو سیکھنے والے کئی طلبہ اکثریتی طبقہ سے ہیں۔ سنٹر پر بچوں کوکمپیوٹرکی تعلیم دینے والے استاداویناش کماربھی بڑے ذوق شوق سے اردوزبان سیکھ رہے ہیں۔ مرکزکے منتظمین بھی سنٹرکو طلبہ کے لیے مزید فعال بنانا چاہتے ہیں۔

      First published: