ہوم » نیوز » No Category

نتیش نے حلف برداری کی تقریب میں شرکت کیلئے اڈوانی اورشتروگھن کو بھیجا دعوت نامہ

پٹنہ: بہار کے وزیر اعلی نتیش کمار نے بی جے پی کے سینئر لیڈر لال کرشن اڈوانی اور بی جے پی کے ممبر پارلیمنٹ شتروگھن سنہا کو 20 نومبر کے اپنی حلف برداری کی تقریب میں مدعو کیا ہے۔

  • IANS
  • Last Updated: Nov 15, 2015 08:15 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
نتیش نے حلف برداری کی تقریب میں شرکت کیلئے اڈوانی اورشتروگھن کو بھیجا دعوت نامہ
پٹنہ: بہار کے وزیر اعلی نتیش کمار نے بی جے پی کے سینئر لیڈر لال کرشن اڈوانی اور بی جے پی کے ممبر پارلیمنٹ شتروگھن سنہا کو 20 نومبر کے اپنی حلف برداری کی تقریب میں مدعو کیا ہے۔

پٹنہ: بہار کے وزیر اعلی نتیش کمار نے بی جے پی کے سینئر لیڈر لال کرشن اڈوانی اور بی جے پی کے ممبر پارلیمنٹ شتروگھن سنہا کو 20 نومبر کے اپنی حلف برداری کی تقریب میں مدعو کیا ہے۔


نتیش کے قریبی جنتا دل یوکے ایک لیڈر نے کہا کہ اڈوانی اور شتروگھن سنہا کو گاندھی میدان میں منعقد ہونے والی حلف برداری کی تقریب میں مدعو کیا گیا ہے۔ ہم نے دونوں کو دعوت نامہ بھیج دیا ہے۔


خیال رہے کہ بہار اسمبلی انتخابات میں بی جے پی نتیش کمار کے مهاگٹھ بندھن سے بری طرح ہار گئی، پھر بھی شتروگھن سنہا نے وزیر اعلی نتیش کی بار بار تعریف کی۔ اڈوانی کے ذہن میں بھی نتیش کے تئیں ہمدردی کی بات کہی جاتی ہے۔ وزیر اعظم مودی اور پارٹی صدر امت شاہ سمیت بی جے پی کے کسی بھی دوسرے لیڈر کو دعوت نامہ نہیں بھیجا گیا ہے۔


حلف برداری کی تقریب میں کانگریس کی صدر سونیا گاندھی اور نائب صدر راہل گاندھی، دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال، مغربی بنگال کی وزیر اعلی ممتا بنرجی، اڑیسہ کے وزیر اعلی نوین پٹنائک اور اتر پردیش کے وزیر اعلی اکھلیش یادو کے شامل ہونے کا امکان ہے۔


جے ڈی یو لیڈروں کا کہنا ہے کہ اس حلف برداری کی تقریب سے ملک میں اپوزیشن کے ایک نئے اتحاد کا آغاز ہوگا ۔ تقریب کے مرکوز نظر راشٹریہ جنتا دل کے صدر لالو پرساد ہوں گے۔ سابق وزیر اعظم ایچ ڈی دیوگوڑا، جھارکھنڈ کے سابق وزیر اعلی بابو لال مرانڈی ، ہیمنت سورین اور ابھيا چوٹالہ بھی حلف برداری کی تقریب میں شریک ہو سکتے ہیں۔


لالو پرساد اور جے ڈی یو کے صدر شرد یادو اہم مہمانوں میں ہوں گے۔ جے ڈی یو لیڈروں کے مطابق نتیش کمار 20 نومبر کو 36 وزراء کے ساتھ وزیر اعلی کے طور پر حلف لیں گے۔


قابل ذکر ہے کہ 243 رکنی بہار اسمبلی میں 80 نشستوں کے ساتھ راشٹریہ جنتا دل سب سے بڑی پارٹی بن کر ابھری ہی۔ اس کے بعد 71 سیٹوں کے ساتھ جے ڈی یو دوسرے نمبر پر، 53 سیٹوں کے ساتھ بی جے پی تیسرے نمبر پر اور پھر کانگریس 27 سیٹوں کے ساتھ چوتھے نمبر پر ہے۔ نئی حکومت میں آر جے ڈی کے 16 ، جے ڈی یو کے 15 اور کانگریس کے پانچ وزراہوں گے۔

First published: Nov 15, 2015 08:15 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading