ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

پٹنہ سٹی میںNPR، CAA اور NRC کے خلاف منعقد ہوا بڑا پروگرام: دیکھیں تصویریں

خاص بات یہ ہے کہ پہلے سے ہی پٹنہ میں درجنوں مقامات پر سی اے اے، این آر پی اور این آر سی کے خلاف شاہین باغ کی طرح خواتین کا احتجاج ہورہا ہے۔ ایسے میں منگل تالاب میں منعقد اس پروگرام کو کافی اہم مانا جارہا ہے۔ اس لئے بھی کہ اس پروگرام میں خانقاہوں کے سجادہ نشین نے بھی شرکت کی اور قانون کے خلاف آر پار کی لڑائی لڑنے کا اعلان کیا۔

  • Share this:
پٹنہ سٹی میںNPR، CAA اور NRC کے خلاف منعقد ہوا بڑا پروگرام: دیکھیں تصویریں
خاص بات یہ ہے کہ پہلے سے ہی پٹنہ میں درجنوں مقامات پر سی اے اے، این آر پی اور این آر سی کے خلاف شاہین باغ کی طرح خواتین کا احتجاج ہورہا ہے۔ ایسے میں منگل تالاب میں منعقد اس پروگرام کو کافی اہم مانا جارہا ہے۔ اس لئے بھی کہ اس پروگرام میں خانقاہوں کے سجادہ نشین نے بھی شرکت کی اور قانون کے خلاف آر پار کی لڑائی لڑنے کا اعلان کیا۔

پٹنہ سٹی میں پٹنہ کی آواز کے زیر اہتمام منگل تالاب میں سی اے اے، این پی آر اور این آر سی کے خلاف پروگرام منعقد کیاگیا۔ اس پروگرام میں بڑی تعداد میں لوگوں نے شرکت کی۔ سی اے اے، این پی آر کو آئین کے خلاف قانون  بتاتے ہوئے مسلسل جدوجہد کرنے کا اعلان کیاگیا۔ خاص بات یہ ہے کہ پہلے سے ہی پٹنہ میں درجنوں مقامات پر سی اے اے، این آر پی اور این آر سی کے خلاف شاہین باغ کی طرح خواتین کا احتجاج ہورہا ہے۔ ایسے میں منگل تالاب میں منعقد اس پروگرام کو کافی اہم مانا  جارہا ہے۔ اس لئے بھی کہ اس پروگرام میں خانقاہوں کے سجادہ نشین نے بھی شرکت کی اور قانون کے خلاف آر پار کی لڑائی لڑنے کا اعلان کیا۔ سی اے اے اور این آر سی کے خلاف منعقد پروگرام میں سوراج انڈیا کے قومی کنوینر یوگیندر یادو نے شرکت کی۔

یوگیندر یادو نے کہا کہ پورے ملک میں نوجوان اور خواتین اس قانون کے خلاف سڑک پر اتر گئے ہیں۔ ان کے مطابق خواتین اور نوجوانوں کا احتجاج اس قانون کے راہ کی سب سے بڑی رکاوٹ بنےگا۔ یوگیندر یادو نے بہار کے وزیر اعلیٰ نتیش کمار کو بھی کٹگھرے میں کھڑا کیا۔ یوگیندر کے مطابق احتجاج کو دیکھ کر نتیش کمار کو اب تو کم سے کم کوئی فیصلہ کرنا چاہئے۔ یوگیندر نے کہا کہ اس موقع پر بھی نتیش کمار خاموش رہتے ہیں تو یہ ٹھیک نہیں ہے۔ وہیں سی پی آئی لیڈر دیپانکر بھٹا چاریہ نے کہا کی ملک کو نقصان پہنچانے والے اس قانون کے خلاف مسلسل جدوجہد چلےگا۔


واضح رہے کہ خانقاہ منگل تالاب کے سجادہ نشین سید شاہ مصباالحق عمادی اور خانقاہ منعمیہ میتن گھاٹ پٹنہ سٹی کے سجادہ نشین اور معروف عالم دین ڈاکٹر شمیم الدین احمد منعمی نے بھی پروگرام میں شرکت کی۔ خانقاہوں کے سجادہ نشین کے شرکت کے سبب پورانے شہر میں ہورہے سی اے اے اور این آر سی کے خلاف احتجاج میں مزید قوت آگئ ہے۔ خانقاہوں سے سبھی طبقہ کو عقیدت ہے۔ سجادہ نشین کی جانب سے اس قانون کے خلاف اترنے کا فائدہ یہ ہورہا ہیکہ خانقاہوں سے عقیدت رکھنے والے لوگ بھی اس قانون کے خلاف مورچہ سنبھالنے لگے ہیں۔

منگل تالاب پٹنہ سٹی میں واقع ہے۔ یہ شہر کا وہ حصہ ہے جسے عظیم آباد کے نام سے جانا جاتا ہے۔ مغل شہزادہ عظیم الشان جب بہار کا گورنر بن کر آیا تو پاٹلی پترا کو عظیم آباد کا نام دیاتھا۔ تب پٹنہ سٹی ہی شہری علاقہ تھا۔ اب پٹنہ بدل گیا ہے لیکن پٹنہ سٹی کی روایت، تہذیبی قدریں، ادب و ثقافت آج بھی برقرار ہے۔  منگل تالاب میں سی اے اے، این پی آر اور این آر سی کے خلاف منعقد اس پروگرام میں پٹنہ سٹی کے لوگ کثیر تعداد میں شرکت کررہے ہیں جس میں سبھی مذاہب کے لوگ شامل ہیں۔

First published: Jan 21, 2020 04:37 PM IST