ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

وزیر اعظم مودی کا کانگریس پر نشانہ ، محض ایک کنبہ ترقی میں رکاوٹ

گوہاٹی : گاندھی خاندان پر نشانہ لگاتے ہوئے وزیر اعظم مودی نے کہا کہ گزشتہ عام انتخابات میں شکست کا بدلہ لینے کی نیت سے محض ایک خاندان غریبوں کے مفاد میں شروع کئے گئے ترقیاتی منصوبوں میں رکاوٹ پہنچا رہا ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Feb 05, 2016 06:43 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
وزیر اعظم مودی کا کانگریس پر نشانہ ، محض ایک کنبہ ترقی میں رکاوٹ
گوہاٹی : گاندھی خاندان پر نشانہ لگاتے ہوئے وزیر اعظم مودی نے کہا کہ گزشتہ عام انتخابات میں شکست کا بدلہ لینے کی نیت سے محض ایک خاندان غریبوں کے مفاد میں شروع کئے گئے ترقیاتی منصوبوں میں رکاوٹ پہنچا رہا ہے۔

گوہاٹی : گاندھی خاندان پر نشانہ لگاتے ہوئے وزیر اعظم مودی نے کہا کہ گزشتہ عام انتخابات میں شکست کا بدلہ لینے کی نیت سے محض ایک خاندان غریبوں کے مفاد میں شروع کئے گئے ترقیاتی منصوبوں میں رکاوٹ پہنچا رہا ہے۔


مسٹر مودی نے کسی کا بھی نام لئے بغیر الزام لگایا کہ سیاسی طور پر مخالف ہونے کے باوجود زیادہ تر اپوزیشن جماعتیں اور ان کےلیڈران عوام کی فلاح و بہبود کے مفاد میں بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی زیر قیادت قومی جمہوری اتحاد (این ڈی اے) حکومت کے ساتھ مل کر کام کرنے کو تیار ہیں لیکن ایک خاندان ہر طریقے سے کام میں رکاوٹ پہنچانے کا کام کر رہا ہے۔


مشرقی آسام کے موران میں بی جے پی کی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا کہ ایک خاندان ایسا ہے جو پارلیمنٹ میں فلاحی پالیسیوں کو منظور ہونے سے روک کر لوگوں سے گزشتہ پارلیمانی انتخابات میں ہوئی اپنی شکست کا بدلہ لے رہا ہے۔


راجیہ سبھا کی کارروائی میں خلل ڈالنے کے لئے کانگریس پر تنقید کرتے ہوئے مسٹر مودی نے کہا کہ حکومت کے لئے تو راہ میں حائل رکاوٹیں کسی بھی اپوزیشن پارٹی نے نہیں کھڑی کی ہیں۔ انہوں نے کہا، ’’ہم لوک سبھا میں بل منظور کرانے میں کامیاب رہے لیکن راجیہ سبھا میں کانگریس نے کارروائی میں خلل ڈال دی۔ اس طرح کی منفی سیاست سے کسی کا فائدہ نہیں ہوگا اور اپوزیشن کو مثبت کردار ادا کرنا چاہئے۔


مسٹر مودی نے ساتھ ہی زور دیا کہ لوگوں کی فلاح و بہبود کے لئے مرکز اور ریاستی حکومتوں کوسیاسی اختلافات کو درکنار کرکے مل کر کام کرنا چاہئے۔ انہوں نے آسام کے چائے باغان کے مزدوروں کی حالت کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ انہیں رہائش، پینے کا صاف پانی اور بچوں کی تعلیم جیسی بنیادی سہولیات سے بھی محروم رکھا گیا ہے۔


انہوں نے کہا کہ ملک کے مختلف حصوں سے یہاں آئے یہ مزدور نسلوں سے یہاں آباد ہیں اور انہوں نے ہی آسام ٹی کو دنیا میں شناخت دلائی۔ انہوں نے اس موقع پر چائے فروخت کرنے کے اپنے دنوں کو بھی یاد کیا اور ان سے آئندہ اسمبلی انتخابات میں بی جے پی کو ووٹ دینے کی اپیل کی۔


مسٹر مودی نے کہا کہ آپ نے ریاست میں مختلف پارٹیوں کو ووٹ دے کر اقتدار میں آنے کا موقع دیا ہے۔ آپ اس بار بی جے پی کو موقع دے کر دیکھئے کہ کس طرح آپ کی زندگی تبدیل ہوتی ہے۔ کسی بھی حکومت نے اپنے وعدے کو پورا نہیں کیا لیکن بی جے پی اپنا وعدہ پورا کرے گی۔ اس موقع پر بی جے پی کے ریاستی صدر اور مرکزی وزیر سربانند سونووال اور پارٹی کے کئی رہنما اور رکن اسمبلی موجود تھے۔ ریلی میں 50 ہزار سے زائد پارٹی کارکنان اور حامی شامل ہوئے۔

First published: Feb 05, 2016 06:21 PM IST