உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بنگال میں اسمبلی الیکشن سے پہلے ممتا بنرجی کو لگا بڑا جھٹکا، شوبھیندو ادھیکاری نے دیا استعفیٰ

    ریاستی وزیر شوبھیندو ادھیکاری نے وزیر اعلی ممتا بنرجی کو آج دوپہر خط لکھ کر اپنا استعفی بھیجا ہے۔

    ریاستی وزیر شوبھیندو ادھیکاری نے وزیر اعلی ممتا بنرجی کو آج دوپہر خط لکھ کر اپنا استعفی بھیجا ہے۔

    بنگال میں ہونے والے اسمبلی الیکشن کے لیے جہاں سیاسی پارٹیوں کی تیاریاں زوروں پر ہے وہیں آج وزیر اعلی ممتا بنرجی کو ان کے ہی ایک وزیر نے بڑا جھٹکا دیتے ہوئے پارٹی کو الوداع کہا۔ ریاستی وزیر شوبھیندو ادھیکاری نے وزیر اعلی ممتا بنرجی کو آج دوپہر خط لکھ کر اپنا استعفی بھیجا ہے۔

    • Share this:
    بنگال میں ہونے والے اسمبلی الیکشن کے لیے جہاں سیاسی پارٹیوں کی تیاریاں زوروں پر ہے وہیں آج وزیر اعلی ممتا بنرجی کو ان کے ہی ایک وزیر نے بڑا جھٹکا دیتے ہوئے پارٹی کو الوداع کہا۔ ریاستی وزیر شوبھیندو ادھیکاری (Bengal Transport Minister Suvendu Adhikari Resigns) نے وزیر اعلی ممتا بنرجی کو آج دوپہر خط لکھ کر اپنا استعفی بھیجا ہے۔ ریاستی وزیر شوبھیندو ادھیکاری کے استعفی سے ترنمول کانگریس میں ہلچل مچ گئی ہے۔ شوبھیندو ادھیکاری پارٹی کے ایک مضبوط لیڈر تھے۔ بنگال میں ترنمول کانگریس کے لئے اقتدار کی راہ ہموار کرنے میں ریاست کے نندی گرام تحریک کو اہم مانا جاتا ہے۔ سابقہ لفٹ حکومت کی جانب سے کسانوں کی زمین لینے کے فیصلے کے خلاف شوبھیندو ادھیکاری نے گاؤں والوں کے ساتھ کھڑے ہوکر اس فیصلے کی مخالفت کی تھی اور یہی مدعا ترنمول کانگریس کے لئے اہم ثابت ہوا تھا جس کی سربراہی شوبھیندو ادھیکاری نے کی تھی۔ شوبھیندو ادھیکاری ممتا بنرجی کے قریبی رہے ہیں اور بنگال کے مضبوط لیڈر مانے جاتے ہیں۔

    گزشتہ کئی مہینوں سے وہ پارٹی سے ناراض تھے جنہیں منانے کی کوششیں کی جارہی تھیں لیکن آج ان تمام کوششوں کو درکنار کرتے ہوئے شوبھیندو ادھیکاری نے وزیر اعلی ممتا بنرجی کا ساتھ چھوڑنے کا اعلان کر دیا۔ بی جے پی نے دعویٰ کیا ہے کہ ترنمول کانگریس کے کئی بڑے لیڈران ان کے رابطے میں ہیں۔

    ممتا بنرجی کے قریبی رہے مکل رائے کے بی جے پی میں شامل ہونے کے بعد سے ہی یہ قیاس آرائیاں کی جا رہی تھی کہ ترنمول کانگریس کے کئی لیڈران پارٹی چھوڑ سکتے ہیں۔ بنگال اسمبلی الیکشن میں بی جے پی ترنمول کانگریس سے واپس آرہے لیڈران پر بھروسہ جتارہی ہے جبکہ ممتا بنرجی کے لئے اپنی ہی پارٹی کے لیڈران کو سنبھال کر رکھنا مشکل ہو رہا ہے۔گزشتہ دنوں ریاستی وزیر صدیق اللہ چودھری نے بھی پارٹی میں اپنی بےبسی و لاچاری کا اظہار کرتے ہوئے وزیر اعلی کو خط لکھا ہے۔
    Published by:sana Naeem
    First published: