ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

کیا اب بنگال اسمبلی الیکشن میں طول پکڑے گا ریا چکرورتی کا معاملہ؟ 

اداکار سشانت سنگھ راجپوت کی موت اور ڈرگس معاملے میں ریا چکرورتی کی گرفتاری کے بعد یہ معاملہ اب بھی سرخیوں میں ہے۔ وہیں اب ریاچکرورتی کا معاملہ بنگال کی سیاست میں بھی طول پکڑنے والا ہے۔ سیاسی لیڈران کے بیانات سے کچھ ایسے ہی آثار نظر آ رہے ہیں۔

  • Share this:
کیا اب بنگال اسمبلی الیکشن میں طول پکڑے گا ریا چکرورتی کا معاملہ؟ 
اداکار سشانت سنگھ راجپوت کی موت اور ڈرگس معاملے میں ریا چکرورتی کی گرفتاری کے بعد یہ معاملہ اب بھی سرخیوں میں ہے۔ وہیں اب ریاچکرورتی کا معاملہ بنگال کی سیاست میں بھی طول پکڑنے والا ہے۔ سیاسی لیڈران کے بیانات سے کچھ ایسے ہی آثار نظر آ رہے ہیں۔

اداکار سشانت سنگھ راجپوت کی موت اور ڈرگس معاملے میں ریا چکرورتی کی گرفتاری کے بعد یہ معاملہ اب بھی سرخیوں میں ہے۔ وہیں اب ریاچکرورتی کا معاملہ بنگال کی سیاست میں بھی طول پکڑنے والا ہے۔ سیاسی لیڈران کے بیانات سے کچھ ایسے ہی آثار نظر آ  رہے ہیں۔


بنگال میں کانگریس ۔لفٹ اور ترنمول کانگریس نے بہار اسمبلی الیکشن میں ریا چکرورتی کو "نرم چارہ" کے طور پر استعمال کرنے کا الزام لگاتے ہوٸے بی جے پی کو تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔ وہیں ترنمول کانگریس لیڈران نے بی جے پی پر بنگالیوں کی بے عزتی کا الزام لگاتے ہوٸے کہا کہ بنگالیوں کے تئیں بی جے پی کی ناپسندیدگی ریا چکرورتی معاملے میں کھل کر سامنے آٸی ہے۔ ترنمول ایم پی سوگتا راٸے نے کہا ہے کہ کیونکہ ریا بنگالی ہیں اس لئے عدالت میں قصوروار ثابت ہونے سے پہلے انہیں سیاسی شکار بنا لیا گیا ہے۔ ریا کے خلاف  مہم نے ایک بار پھر بنگالیوں کے تئیں بی جے پی کی نفرت کو اجاگر کیا ہے وہیں اب اس سر میں سر ملاتے ہوٸے بنگال کانگریس کے نو منتخب صدر ادھیر رنجن چودھری نے بھی منشیات معاملے میں ریا چکرورتی کی گرفتاری کو "مضحکہ خیز "بتاتے ہوٸے  کہا کہ ریا کے والد سابق فوجی ہیں جنہوں نے قوم کی خدمت کی ہے۔ ریا ایک بنگالی خاتون ہیں جنہیں نشانہ بنایا گیا۔


ادھیر رنجن چودھری نے کہا کہ سشانت سنگھ راجپوت ایک ہندوستانی اداکار تھے لیکن بہار الیکشن کے لئے انہیں بہاری اداکار بنا دیا گیا اور اب ان کے نام پر ووٹروں کو متوجہ کرنے کی کوشش کی جارہی یے۔ ایسے میں بنگال میں آئندہ سال ہونے والے اسمبلی الیکشن کے لئے ریا چکرورتی کے نام پر بی جے پی کو گھیرنے کی کوشش کی جاسکتی ہے۔جبکہ لوک سبھا الیکشن میں بی جے پی کو 18 سیٹوں پر ملی کامیابی کے بعد وزیر اعلی ممتا بنرجی بی جے پی کو بیرونی لوگوں کی جماعت بتاتے ہوٸے بنگال اور بنگالیوں کے احترام کا نعرہ لگاتی رہی ہیں۔ ایسے میں بنگال کی سیاست میں ریا چکرورتی کی گونج سناٸی دے گی۔

Published by: Nadeem Ahmad
First published: Sep 11, 2020 05:46 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading