உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بنگال کی ایک طالبہ نے حاصل کیا ناسا کا اسکالر شپ

    کلکتہ : مغربی بنگال کی ایک طالبہ ستاپر نا مکھرجی جو بارہویں جماعت میں زیر تعلیم ہیں نے اپنے علمی صلاحیت و قابلیت کی بنیاد پر نا سا کا ٹاپ اسکالر شپ حاصل کرکے ایک تاریخ رقم کردی ہے ۔

    کلکتہ : مغربی بنگال کی ایک طالبہ ستاپر نا مکھرجی جو بارہویں جماعت میں زیر تعلیم ہیں نے اپنے علمی صلاحیت و قابلیت کی بنیاد پر نا سا کا ٹاپ اسکالر شپ حاصل کرکے ایک تاریخ رقم کردی ہے ۔

    کلکتہ : مغربی بنگال کی ایک طالبہ ستاپر نا مکھرجی جو بارہویں جماعت میں زیر تعلیم ہیں نے اپنے علمی صلاحیت و قابلیت کی بنیاد پر نا سا کا ٹاپ اسکالر شپ حاصل کرکے ایک تاریخ رقم کردی ہے ۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:

      کلکتہ : مغربی بنگال کی ایک طالبہ ستاپر نا مکھرجی جو بارہویں جماعت میں زیر تعلیم ہیں نے اپنے علمی صلاحیت و قابلیت کی بنیاد پر نا سا کا ٹاپ اسکالر شپ حاصل کرکے ایک تاریخ رقم کردی ہے ۔
      ناسا جی آئی پی پروگرام کے تحت پوری دنیا سے پانچ طالب علموں کا انتخاب کرتی ہے اور اسے اسکول کے بعد اعلیٰ تعلیم کیلئے اسکالر شپ دیتی ہے ۔مکھرجی اب ناسا کے اسکالر شپ سے گریجویشن، پوسٹ گریجویشن اور پی ایچ ڈی تک تعلیم حاصل کرے گی ۔مکھر جی نے کہا کہ میں بہت ہی زیاد ہ خوش ہوں ، مجھے بہت ہی قیمتی موقع ملا ہے اور لندن میں ناسا کے سنٹر کے تحت میں ریسرچ بھی کروں گی۔
      اٹھارہ سالہ طالبہ نے کہا کہ اس نے ایک سماجی ویب سائٹ پر ’’بلیک ہول تھیوری ‘‘ سے متعلق اپنا نظریہ پیش کیا تھا ۔اس ویب سائٹ کئی نامور سائنسداں وابستہ ہیں۔اس میں سے ایک نے مجھے ناسا کی ویب سائٹ کا لنک بھیج کر کہا کہ میں انہیں اپنی تھیوری بھیجوں ۔مکھرجی ناسا کے ساتھ جی آپی پی پروگرام کے تحت ’’ امپلائی اور ریسرچر کے طور پر کام کرے گی جو ارتھ سائنس اور تکنالوجی پروگرام کا حصہ ہوں گی۔
      مکھرجی کے والد نے کہا وہ اگست میں ناسا جائیں گی اورآمد و رفت کا روپیہ وہ ادا کریں گے۔اس کیلئے وہ لون لے کر اس رقم کا انتظام کریں گے کیوں کہ وہ نہیں چاہتے ہیں کہ ان کی بیٹی کو جو موقع ملا ہے اسے ضائع کیا جائے ۔
      مکھرجی کے استاذ پولک چکرورتی جو ہیرالال کالج میں انگلش کے پروفیسر ہیں نے کہا کہ مکھرجی ایک ہونہار طالبہ ہیں اور تعلیم کی طرف اس کی توجہ بہت ہی زیادہ ہے ۔.

      First published: