உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    قتل کے معاملہ میں شہاب الدین کو پٹنہ ہائی کورٹ سے ملی ضمانت

    پٹنہ ہائی کورٹ نے تیزاب قتل کے گواہ راجیش روشن کے قتل کی سازش کے الزام میں دائر ضمانت کی درخواست پر سماعت کرتے ہوئے بدھ کو اس شہاب الدین کو ضمانت دے دی۔

    پٹنہ ہائی کورٹ نے تیزاب قتل کے گواہ راجیش روشن کے قتل کی سازش کے الزام میں دائر ضمانت کی درخواست پر سماعت کرتے ہوئے بدھ کو اس شہاب الدین کو ضمانت دے دی۔

    پٹنہ ہائی کورٹ نے تیزاب قتل کے گواہ راجیش روشن کے قتل کی سازش کے الزام میں دائر ضمانت کی درخواست پر سماعت کرتے ہوئے بدھ کو اس شہاب الدین کو ضمانت دے دی۔

    • ETV
    • Last Updated :
    • Share this:
      پٹنہ : جیل میں بند آر جے ڈی کے سابق رکن پارلیمنٹ محمد شہاب الدین کو عدالت سے بڑی راحت ملی ہے۔پٹنہ ہائی کورٹ نے تیزاب قتل کے گواہ راجیش روشن کے قتل کی سازش کے الزام میں دائر ضمانت کی درخواست پر سماعت کرتے ہوئے بدھ کو اس شہاب الدین کو ضمانت دے دی۔ شہاب الدین کی ضمانت کی درخواست پر جسٹس جے این شرما نے سماعت کی۔
      سبھی فریقوں کے دلائل سننے کے بعد شہاب الدین کو ضمانت دی گئی۔ غور طلب ہے کہ سیوان میں سال 2004 میں دو بھائیوں کا تیزاب ڈال کر قتل کر دیا گیا تھا۔ اس قتل کا گواہ مرنے والوں کا تیسرا بھائی راجیش روشن تھا ، جس کا بھی بعد میں قتل کر دیا گیا تھا۔
      قتل کیس میں سازش رچنے کا الزام شہاب الدین پر عائد کیا گیا تھا۔ شہاب الدین کی جانب سے بحث کرتے ہوئے سینئر وکیل بائی وی گری نے کہا کہ کورٹ میں یہی ایک کیس ہے ، جہاں ضمانت ملنی ہے ، جس کے بعد عدالت نے شہاب الدین کو ضمانت دے دی۔
      شہاب الدین کے وکیل نے شرط رکھی کہ راجیش روشن کی گواہی بہت پہلے ہی ہو چکی ہے اور جس وقت یہ واقعہ ہوا تھا شہاب الدین جیل میں تھے۔ شہاب الدین فی الحال مختلف مقدمات میں بھاگلپور میں واقع سینٹرل جیل میں بند ہیں۔
      First published: