உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    صاحب گنج سے کٹیہار جا رہا جہاز Ganga River میں پلٹا! پتھروں سے لدے کئی ٹرک ڈوبے، ڈرائیور اور ہیلپر لاپتہ

    Bihar Jharkhand News: حالانکہ کٹیہار ضلع انتظامیہ اس طرح کے واقعہ سے انکار کر رہی ہے۔ اگر کہا جائے تو یہ واقعہ سرحدی تنازعہ میں الجھ گیا ہے۔ دوسری جانب ڈی سی اور ایس پی کشتی کے ذریعے مکتیشور گنگا گھاٹ کے لیے روانہ ہو گئے ہیں۔ ساتھ ہی این ڈی آر ایف NDRF کی ٹیم بھی موقع پر پہنچ گئی ہے۔

    Bihar Jharkhand News: حالانکہ کٹیہار ضلع انتظامیہ اس طرح کے واقعہ سے انکار کر رہی ہے۔ اگر کہا جائے تو یہ واقعہ سرحدی تنازعہ میں الجھ گیا ہے۔ دوسری جانب ڈی سی اور ایس پی کشتی کے ذریعے مکتیشور گنگا گھاٹ کے لیے روانہ ہو گئے ہیں۔ ساتھ ہی این ڈی آر ایف NDRF کی ٹیم بھی موقع پر پہنچ گئی ہے۔

    Bihar Jharkhand News: حالانکہ کٹیہار ضلع انتظامیہ اس طرح کے واقعہ سے انکار کر رہی ہے۔ اگر کہا جائے تو یہ واقعہ سرحدی تنازعہ میں الجھ گیا ہے۔ دوسری جانب ڈی سی اور ایس پی کشتی کے ذریعے مکتیشور گنگا گھاٹ کے لیے روانہ ہو گئے ہیں۔ ساتھ ہی این ڈی آر ایف NDRF کی ٹیم بھی موقع پر پہنچ گئی ہے۔

    • Share this:
      جھارکھنڈ کے صاحب گنج سے بہار کے کٹیہار ضلع کے منیہاری گھاٹ جانے والا جہاز جمعرات کی دیر رات گنگا ندی میں بے قابو ہو گیا۔ جس کی وجہ سے جہاز پر لدے کئی ٹرک گنگا ندی میں ڈوب گئے۔ جہاز پر بہت سے سوار کئی لوگوں نے تیر کر تھ جان بچائی۔ ان کا دعویٰ ہے کہ جہاز پر 15 سے زیادہ ٹرک سوار تھے۔ اس کے ساتھ جہاز میں کئی مسافر بھی سوار تھے۔ بتایا جا رہا ہے کہ جہاز پر گنجائش سے زیادہ ٹرک لدے ہوئے تھے۔ رات میں جہاز صاحب گنج سے منیہار گھاٹ آ رہا تھا کہ تبھی یہ حادثہ پیش آیا۔

      حالانکہ کٹیہار ضلع انتظامیہ اس طرح کے واقعہ سے انکار کر رہی ہے۔ اگر کہا جائے تو یہ واقعہ سرحدی تنازعہ میں الجھ گیا ہے۔ دوسری جانب ڈی سی اور ایس پی کشتی کے ذریعے مکتیشور گنگا گھاٹ کے لیے روانہ ہو گئے ہیں۔ ساتھ ہی این ڈی آر ایف NDRF کی ٹیم بھی موقع پر پہنچ گئی ہے۔

      راحت و بچاؤ کے کام میں لگی NDRF کی ٹیم
      اس واقعہ پر صاحب گنج کے ڈی سی رام نواس یادو نے بتایا کہ تجارتی جہاز سمدا گھاٹ سے منیہاری گھاٹ کے درمیان چلتا ہے۔ یہ جہاز ٹرک لے جاتا ہے۔ جہاز کل دوپہر روانہ ہوا تھا لیکن دریا کے بیچوں بیچ جہاز میں کچھ خرابی آگئی تھی جسے ٹھیک کرنے کی کوشش کی گئی۔ لیکن اسی دوران جہاز کا توازن بگڑ گیا اور کچھ ٹرک دریا میں جا گرے۔ ڈی سی کے مطابق چار یا پانچ ٹرک دریا میں گرے ہیں۔ باقی جہاز پر گر ے ہوئے ہیں۔ اس جہاز پر کتنے ڈرائیور اور ہیلپر سوار تھے۔ یہ ابھی تک واضح نہیں کیا گیا ہے. ویسے کچھ لوگوں کے ڈوبنے کا معاملہ سامنے آرہا ہے۔ دیوگھر سے این ڈی آر ایف کی ٹیم کو بلایا گیا ہے اور جو بھی حادثے کا شکار ہوا ہے اسے باہر نکالا جائے گا۔ ڈی سی نے کہا کہ اس بات کی بھی جانچ کی جائے گی کہ اس میں کتنے اصولوں کو نظر انداز کیا گیا ہے۔

      پیسے کمانے کیلئے اس خاتون نے آن لائن انجان مردوں کے ساتھ شروع کیا یہ کام، جان کر دنگ رہ جائیں گے آپ

      جانئے گنگا ندی میں کشتیوں یا جہازوں کو چلانے کے کیا اصول ہیں؟
      1. صرف طلوع آفتاب سے غروب آفتاب تک کشتیوں کا آپریشن۔
      2. خصوصی حالات میں مجاز اتھارٹی سے اجازت درکار ہے۔
      3. صرف رجسٹرڈ کشتیاں، بحری جہاز چلانے کی اجازت۔
      4. رجسٹریشن نمبر، گنجائش، کشتی، جہاز کا راستہ بتانا ضروری ہے۔
      5. گنجائش سے زیادہ مسافر یا سامان لوڈ نہیں کیا جائے گا۔
      6. کشتی یا جہاز لوڈ لائن کو ڈوب کر نہیں چلیں گے۔
      7. کشتی اور جہاز میں آگ بجھانے والے آلات کا ہونا لازمی ہے۔
      8. کشتی یا جہاز میں جانوروں کی نقل و حمل کی اجازت نہیں ہے۔
      9. کشتی یا جہاز میں گاڑی یا موٹر سائیکل کی نقل و حمل نہیں۔
      10. کشتی یا جہاز میں کووڈ کے قوانین کی تعمیل۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: