உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    نوجوان لڑکی کو بدمعاشوں سے بچانے میں تو کامیاب ہوگئیں کولکاتہ کی بہادر خاتون نیلنجنا چٹرجی ، مگر خود ہوگئیں شدید زخمی

    نوجوان لڑکی کو بدمعاشوں سے بچانے میں تو کامیاب ہوگئیں کولکاتہ کی بہادر خاتون نیلنجنا چٹرجی ، مگر خود ہوگٸیں شدید زخمی

    آپریشن کے لئے جاتے ہوئے نیلنجنا نے مسکراتے ہوئے اپنے شوہر سے کہا کہ مت گھبراو میں صحتیاب ہو جاوں گی لیکن جب بھی غلط دیکھوں گی تو احتجاج کروں گی ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
    کولکاتہ کی مصروف ترین سڑک ای ایم باٸی پاس پر تیزی سے دوڑتی گاڑیوں میں نہ جانے کتنے لوگوں نے ایک معصوم کی چینخ پکار سنی ہوں گی ، لیکن کسی کو کہاں فرصت کے وہ رک سکے ،  ٹھہر سکے اور اپنی مصروف ترین زندگی میں سے کچھ وقت نکال سکے ۔ کوٸی مدد کیلئے آٸے ، اس امید پر ایک لڑکی چینخ رہی تھی ۔ لیکن شاید سب لوگ ایسے نہیں ہوتے ۔ کچھ نیلنجنا چٹرجی جیسے لوگ بھی ہوتے ہیں ، جو دوسروں کی مدد کے لٸے اپنا سب کچھ داٶ پر لگانے کو تیار ہوجاتے ہیں ۔ نیلنجنا کے ساتھ بھی ایسا ہی ہوا ، انہوں نے جان تو بچاٸی لیکن خود زخمی ہوگٸی ۔ آج وزیر اعلی ممتا بنرجی نے بھی نیلنجنا چٹرجی کی ہمت و حوصلے کو سلام کرتے ہوٸے ان کے علاج کا پورا خرچ حکومت کی جانب سے برداشت کئے جانے کا اعلان کیا ہے ۔

    ساوتھ کولکاتہ کی رہنے والی نیلنجنا چٹرجی اپنے شوہر کے ساتھ ایک دعوت سے واپس لوٹ رہی تھی ۔ ان کے شوہر دیپ ساتپاتی کے مطابق نیلنجنا کی والدہ کی برتھ ڈے پارٹی سے لوٹتے وقت راستے میں نیلنجنا کو احساس ہوا کے کنارے کھڑی گاڑی میں کوٸی لڑکی چیخ رہی ہے ۔ انہوں نے اپنے شوہر سے گاڑی روکنے کو کہا اور وہ اس گاڑی کی طرف ڈوڑ گٸی ۔ انہوں نے دیکھا کے ایک لڑکی جو ڈرایٸور کے ساتھ والی سیٹ پر بیٹھی ہے ، اس سے زبردستی کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ نیلنجنا نے گاڑی کو پیٹنا شروع کردیا ۔ گھبراہٹ میں نوجوان نے گاڑی سے متاثرہ لڑکی کو باہر پھینکا اور نیلنجنا پر گاڑی چڑھاتے ہوٸے فرار ہوگیا ۔

    ساوتھ کولکاتہ کی رہنے والی نیلنجنا چٹرجی اپنے شوہر کے ساتھ ایک دعوت سے واپس لوٹ رہی تھی ۔
    ساوتھ کولکاتہ کی رہنے والی نیلنجنا چٹرجی اپنے شوہر کے ساتھ دعوت سے واپس لوٹ رہی تھی ۔


    نیلجنا متاثرہ لڑکی کو بچانے میں کامیاب تو ہوگٸی ، لیکن وہ خود بری طرح زخمی ہوگٸی ۔ دونوں کو اسپتال میں داخل کرایا گیا ۔ تاہم متاثرہ لڑکی کو تو مرہم پٹی کے بعد واپس گھر بھیج دیا گیا ، لیکن نیلنجنا بری طرح زخمی ہیں ۔ ان کے سر میں گہری چوٹ لگی ہے اور پیر فریکچر ہوگیا ہے ۔ ان کا آپریشن کیا گیا ہے ۔

    ان کے شوہر کے مطابق متاثرہ لڑکی نے فون پر ان کا شکریہ ادا کیا ہے لیکن وہ نہیں چاہتے کے لڑکی کا نام سامنے آٸے ۔ کیونکہ اس طرح کے واقعات میں لڑکی کو پریشانی کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔ تاہم انہوں نے قصوروار نوجوان کی گرفتاری کا مطالبہ کیا ۔ ساتھ شہر میں لڑکیوں کی سیکورٹی کے انتظامات پر بھی سوال اٹھاٸے ۔ آج آپریشن کے لئے جاتے ہوئے نیلنجنا نے مسکراتے ہوئے اپنے شوہر سے کہا کہ مت گھبراو میں صحتیاب ہو جاوں گی لیکن جب بھی غلط دیکھوں گی تو احتجاج کروں گی ۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: