உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Assembly Election Results: بنگال کے رجحانوں میں TMC کو زبردست اکثریت، 100 نمبر کے پھیر۔بدل میں الجھی بی جے پی

    Youtube Video

    بی جے پی لیڈر کیلاش وجے ورگی نے کہا، ابھی گڑبڑ نہیں ہوئی ہے شام تک کا انتطار کریں گے۔ اس بار گنتی کافی دھیمی ہوری ہے۔ بنگال میں کافی اونچ نیچ ہو رہی ہے ایسا نہیں ہے کہ ہم میدان چھوڑ چکے ہیں ابھی صرف دو تین راؤنڈ کی ہی گنتی ہوئی ہے۔ شام تک آتے آتے حالات بدل سکتے ہیں۔

    • Share this:
      West Bengal Assembly Election 2021: بنگال میں شروعاتی تین گھنٹوں میں ترنمول کانگریس 148  سیٹوں کے اعداد و شمار کو پار کرکے (292  سیٹوں کے حساب سے 147) 190  سے زیادہ سیٹوں پر پہنچ گئی ہے۔ شروعاتی رجحان میں ممتا بنرجی نندی گرام میں بی جے پی شوویندو ادھیکاری سے سات ہزار ووٹوں سے پیچھے چلتی نظر آرہی ہیں۔

      بی جے پی لیڈر کیلاش وجے ورگی نے کہا، ابھی گڑبڑ نہیں ہوئی ہے شام تک کا انتطار کریں گے۔ اس بار گنتی کافی دھیمی ہوری ہے۔ بنگال میں کافی اونچ نیچ ہو رہی ہے ایسا نہیں ہے کہ ہم میدان چھوڑ چکے ہیں ابھی صرف دو تین راؤنڈ کی ہی گنتی ہوئی ہے۔ شام تک آتے آتے حالات بدل سکتے ہیں۔ ابھی مایوس ہونے والی بات نہیں ہے۔ اگر ایسا نہیں ہوتا ہے تو ہم اپوزیشن میں بیٹھیں گے۔ سیاست میں ایسا چلتا ہے۔ بنگال میں تین سے سو تک پہنچ رہے ہیں۔ یہ ہماری بڑی کامیابی ہے۔ شام تک ہم جادوئی اعداد و شمار تک بھی پہنچ سکتے ہیں۔

         ملک کی 5 ریاستوں مغربی بنگال ، تمل ناڈو ،کیرالا ، آسام اور پڈوچیری کے اسمبلی انتخابات کے نتائج جاری ہیں۔ کورونا کے اس دور میں ہوئے الیکشن میں سب سے زیادہ چرچا مغربی بنگال انتخابات کی رہی۔ جہاں حکمراں ٹی ایم سی کو بی جے پی نے سخت مقابلہ دیا ہے۔ اس لڑائی میں داؤ پرممتا بنرجی کا سیاسی اقبال بھی  ہے۔ کیونکہ نندی گرام میں ممتا کے پرانے ساتھی رہے سوبھیندو ادھیکاری ان کے سامنے ایک چیلنج بنے کھڑے ہیں۔ ایسے میں چناوی کھیل کا گرینڈ فنالے نندی گرام کا مقابلہ ہی ہوگا۔ اب شوبھیندو ادھیکاری کا نندی گرام سیٹ جیتنا اور ممتا بنرجی کو ہارنا اتنا اہم کیوں ہے سوال پیدا ہو رہے ہیں۔؟



      بات کریں تازہ رجحان جو ابھی چل رہے ہیں ان میں ترنمول کانگریس کو اکثریت ملتی نظر آرہی ہے۔ ٹی ایم 165 سیٹوں پر آگے ہے اور بی جے پی 115 سیٹوں، کانگریس 6 سیٹوں پر سبقت بنائے ہوئے ۔ وہیں نندی گرام سیٹ پر ممتا بنرجی بی جے پی شوبھندو ادھیکاری سے 7,000 سے زائد ووٹوں سے پیچھے رہی ہیں۔ کیرالہ اقتداری لیفٹ کو اکثریت ملتی نظر آرہی ہے۔ وہیں آسام میں بھی بی جے نے لیڈ بنا رکھی ہے۔






      کیرالہ کے بارے میں بات کریں تو ، پنارائی وجین کی پارٹی ایل ڈی ایف دوبارہ حکومت تشکیل دے سکتی ہے ، تمام ایگزٹ پول اس کا دعویٰ کر رہے ہیں۔ تمل ناڈو میں ڈی ایم کے کو اقتدار ملنے کا امکان ہے
      Published by:Sana Naeem
      First published: