உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    بھوانی پور میں ڈر کا ماحول ، ہم اپنے ووٹر تک نہیں پہنچ پائے تو الیکشن کا کیا مطلب: دلیپ گھوش

    بھوانی پور میں ڈر کا ماحول ، ہم اپنے ووٹر تک نہیں پہنچ پائے تو الیکشن کا کیا مطلب: دلیپ گھوش ۔ تصویر : اے این آئی ۔

    بھوانی پور میں ڈر کا ماحول ، ہم اپنے ووٹر تک نہیں پہنچ پائے تو الیکشن کا کیا مطلب: دلیپ گھوش ۔ تصویر : اے این آئی ۔

    بی جے پی کے نائب قومی صدر دلیپ گھوش (Dilip Ghosh) نے الزام لگایا ہے کہ بھوانی پور سیٹ پر انتخابی تشہیر کے دوران ترنمول کارکنان نے ان کے ساتھ تشدد کرنے کی کوشش کی ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      کولکاتہ : بی جے پی کے نائب قومی صدر دلیپ گھوش نے الزام لگایا ہے کہ بھوانی پور اسمبلی میں ان کے ساتھ ترنمول کانگریس کارکنان نے تشدد اور گالی گلوچ کی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ میں آج بھوانی پور میں انتخابی تشہیر کررہا تھا ، اس درمیان ترنمول کارکنان آگئے اور گالی گلوچ شروع کردی ، میں ایک ویکسی نیشن سینٹر پر لوگوں سے مل رہا تھا ، تبھی کچھ لوگ آئے اور دھمکا مکی شروع کردی ۔ میرے ایک کارکن کو بری طرح پیٹا گیا ۔ اگر ہم اپنے ووٹر تک نہیں پہنچ سکتے تو الیکشن کرانے کا کوئی مطلب نہیں ہے ، لوگ مسلسل ایک خوف کے ماحول میں جی رہے ہیں ۔

      انہوں نے کہا کہ میرے اوپر بھی حملہ کیا گیا ۔ میرے سیکورٹی گارڈس نے اس کو روکنے کی کوشش کی اور حملہ آوروں کو ڈرانے کیلئے بندوقیں نکال لیں ۔ ارجن سنگھ کو بھی گھیرا گیا اور گو بیک کے نعرے لگا کر انہیں واپس لوٹنے پر مجبور کردیا گیا ۔ مقامی پولیس نے کوئی مدد نہیں کی ۔

      دلیپ گھوش نے مزید کہا کہ الیکشن کمیشن سبھی باتوں سے واقف ہے ، ہم نے دہلی اور کولکاتہ میں ان سے کئی مرتبہ شکایت کی ہے ۔ دلیپ گھوش کا الزام ہے کہ بھوانی پور اسبملی سیٹ حلقہ میں اس وقت ڈر کا ماحول ہے ، بی جے پی لیڈروں کو اپنے ووٹروں تک پہنچنے ہی نہیں دیا جارہا ہے ۔ گھوش نے کہا کہ اگر ہم اپنے ووٹرس تک رسائی نہیں بنا پائیں گے تو پھر الیکشن کرانے کا کیا مطلب ہے ۔

      وہیں دوسری طرف ترنمول کانگریس نے باڈی گارڈز پر فائرنگ کرنے کا الزام لگاتے ہوئے کہا ہے کہ کیا عوامی لیڈر کے خلاف احتجاج کرنے کا عوام کو حق نہیں ہے۔ اگر کسی لیڈر کے خلاف احتجاج ہوتا ہے تو کیا اس کے باڈی گارڈ فائرنگ کریں گے۔ ترنمول کانگریس کے ٹویٹر سے ایک پوسٹ کیا گیا ہے جس میں دلیپ گھوش کے باڈی گارڈ کو فائرنگ کرتے ہوئے دکھاتے ہوئے سوال کیا گیا ہے کہ کیا یہ بنگال بی جے پی کا نیا چہرہ ہے۔ دن کے اجالے میں گولی چلائی جارہی ہے۔ کیا عوام کو لیڈروں کے خلاف احتجاج کرنے کا حق ہے؟ انسانی حقوق کی خلاف ورزی کا یہ منظر شرمناک ہے! یہ بھوانی پور کے لوگوں کی حفاظت کے لیے خوفناک ہے۔

      میڈیا رپورٹس کے مطابق انتخابی مہم کے آخری دن جب دلیپ گھوش مہم چلانے کیلئے پہنچے تو ترنمول کانگریس کے کارکنان نے جے بنگلہ کا نعرہ لگانا شروع کردیا اور اس درمیان دلیپ گھوش سمیت بی جے پی کے کارکنان جے شری رام کے نعرے لگانے لگے اور پھر دھکا مکی اور مار پیٹ شروع ہوگئی ۔

      نیوز ایجنسی یو این آئی کے ان پٹ کے ساتھ ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: