ہوم » نیوز » مشرقی ہندوستان

سی بی آئی دفتر میں دھرنے پر بیٹھیں ممتا بنرجی ، سینٹرل سیکورٹی فورسیز کا ٹی ایم سی حامیوں پر لاٹھی چارج

CBI vs Mamata Banerjee : ناردا گھوٹالہ میں سی بی آئی نے پیر کو ممتا بنرجی سرکار میں کابینہ وزیر فرحاد حکیم ، سبرت مکھرجی ، ممبر اسمبلی مدن مترا اور سابق میئر شوبھن چٹرجی کو گرفتار کرلیا ہے ۔

  • Share this:
سی بی آئی دفتر میں دھرنے پر بیٹھیں ممتا بنرجی ، سینٹرل سیکورٹی فورسیز کا ٹی ایم سی حامیوں پر لاٹھی چارج
سی بی آئی دفتر میں دھرنے پر بیٹھیں ممتا بنرجی ، سینٹرل سیکورٹی فورسیز کا ٹی ایم سی حامیوں پر لاٹھی چارج

کولکاتہ : مغربی بنگال میں ناردا گھوٹالہ کا معاملہ ایک مرتبہ پھر گرماتا نظر آرہا ہے ۔ یہاں اس گھوٹالے کی جانچ کررہی سی بی آئی ٹیم نے پیر کو ممتا بنرجی سرکار میں کابینہ وزیر فرہاد حکیم ، سبرت مکھرجی ، ممبر اسمبلی مدن مترا اور سابق میئر شوبھن چٹرجی کو گرفتار کرلیا ہے ۔ اپنے وزرا اور ممبران اسمبلی کی گرفتار سے بھڑکیں وزیر اعلی ممتا بنرجی سی بی آئی دفتر میں ہی دھرنے پر بیٹھ گئی ہیں ۔


ٹی ایم سی کے سینئر لیڈروں کی اس طرح گرفتاری کے بعد سے پارٹی کارکنان سی بی آئی دفتر کے باہر احتجاج کررہے ہیں ۔ سی بی آئی آفس کے باہر موجود بھیڑ نعرے بازی اور دھمکا مکی کرتی نظر آئی ، جس کے بعد وہاں دفتر کی سیکورٹی کیلئے مرکزی سیکورٹی فورسیز کو تعینات کیا گیا ہے ۔


اس درمیان بی جے پی ریاستی صدر دلیپ گھوش نے الزام لگایا ہے کہ ممتا بنرجی ریاست میں انارکی پھیلا رہی ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ سی بی آئی نے یہ گرفتاری عدالت کے کہنے پر کی ہے ۔ کیا ٹی ایم سی کو عدالت پر بھی بھروسہ نہیں ہے ۔



اس سے پہلے چاروں لیڈروں کو پیر کی صبح کولکاتہ کے نظام پیلیس میں سی بی آئی دفتر لے جایا گیا ۔ ان لیڈروں کی گرفتار کی خبریں آنے کے فورا بعد مغربی بنگال کی وزیر اعلی ممتا بنرجی اپنے لیڈروں کے ساتھ سی بی آئی دفتر پہنچ گئیں ۔ اس دوران انہیں سی بی آئی افسران سے یہ کہتے ہوئے سنا گیا کہ وہ انہیں بھی گرفتار کرلیں ۔

سی بی آئی کے افسران نے کہا کہ ایجنسی ناردا اسٹنگ معاملہ میں پیر کو گرفتار ترنمول کے تین لیڈروں سمیت پانچ ملزمین کے خلاف چارج شیٹ داخل کرے گی ۔ موصولہ جانکاری نظام پیلیس کے سامنے بھیڑ کو دیکھتے ہوئے سی بی آئی کوشش کررہی ہے کہ عدالت میں پیش نہ کرکے لیڈروں کو ورچوئلی یا پیپر پروڈکشن کیا جاسکے ۔

ناردا اسٹنگ معاملہ میں کچھ لیڈروں کے ذریعہ مبینہ طور پر پیسے لئے جانے کے معاملہ کا انکشاف ہوا تھا ۔ سی بی آئی افسران نے بتایا کہ یہ کارروائی اس لئے کی گئی کیونکہ مرکزی جانچ ایجنسی اسٹنگ ٹیپ معاملہ میں اپنی چارج شیٹ داخل کرنے والی ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: May 17, 2021 04:11 PM IST