آر ایس ایس کا ہندستان کو ہندو ملک بنانے کا خفیہ ایجنڈا تیار: اویسی

کشن گنج۔ آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین (اے آئی ایم آئی ایم) کے صدر اسد الدین اویسی نے راشٹریہ سوئم سیوک سنگھ ( آر ایس ایس) پر ہندوستان کو ہندو ملک بنانے کا خفیہ ایجنڈا تیار کرنے کا الزام لگاتے ہوئے کہاکہ اس سلسلے میں آر ایس ایس کے خلاف سخت قانونی کارروائی ہونی چاہئے۔

Oct 19, 2015 08:37 AM IST | Updated on: Oct 19, 2015 08:37 AM IST
آر ایس ایس کا ہندستان کو ہندو ملک بنانے کا خفیہ ایجنڈا تیار: اویسی

کشن گنج۔  آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین (اے آئی ایم آئی ایم) کے صدر اسد الدین اویسی نے راشٹریہ سوئم سیوک سنگھ ( آر ایس ایس) پر ہندوستان کو ہندو ملک بنانے کا خفیہ ایجنڈا تیار کرنے کا الزام لگاتے ہوئے کہاکہ اس سلسلے میں آر ایس ایس کے خلاف سخت قانونی کارروائی ہونی چاہئے۔

مسٹر اویسی نے آر ایس ایس کے ترجمان اخبار آرگنائزر میں شائع مضمون پر سخت رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اسکے پبلیشر یا مالک ملک کے قانون کو نہیں مانتے اس لئے اس کی اشاعت پر پابندی لگنی چاہئے یا ضابطہ کے مطابق کارروائی ہونی چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ اس مضمون سے صاف ظاہر ہوتا ہے کہ آر ایس ایس نے گہری سازش کے تحت ملک کو ہندو ملک بنانے کا خفیہ ایجنڈا تیار کر رکھا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کا ریموٹ آر ایس ایس کے ہاتھوں میں ہے۔ انہوں نے کہا کہ نریندر مودی حکومت آر ایس ایس کے اشارے پر چل رہی ہے۔

اے آئی اے ایم آئی ایم کے صدر نے کانگریس پر حملہ کرتے ہوئے کہا کہ 1992 میں ممبئی میں ہوئے بم دھماکے کے مجرم یعقوب میمن کی پھانسی پر یہ پارٹی حیرت انگیز طور پر خاموش رہی۔ انہوں نے کہا کہ 2004 سے 2012 تک کانگریس کا ساتھ دیتے رہے تو وہ سیکولر تھے اور جب ساتھ چھوڑ دیا تو فرقہ پرست ہو گئے۔ انہوں نے کہا ’موقع پرست کانگریس کے ساتھ رہو تو سیکولر اور ساتھ چھوڑ دو تو فرقہ پرست‘۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس کی پالیسیوں کی وجہ سے ہی مسٹر نریندر مودی وزیر اعظم کے عہدے پر فائز ہوئے۔

مسٹر اویسی نے کہا کہ کانگریس مسلمانوں کو بی جے پی کا خوف دکھا کر ان کے ووٹ لیتی رہی۔ کانگریس کی اسی پالیسی پر چل کر راشٹریہ جنتا دل کے صدر لالو پرساد یادو، سماج وادی پارٹی کے صدر ملائم سنگھ یادو اور جنتا دل متحدہ کے سینئر لیڈر اور وزیر اعلی نتیش کمار مسلمانوں کو ڈراكر ان کے ووٹ لیتے رہے ہیں۔

Loading...

Loading...