جے ڈی یو کے لیڈر صابر علی ایک بار پھر بی جے پی کی گود میں

پٹنہ۔ جنتا دل یونائیٹڈ (جے ڈی یو) کے لیڈر اور راجیہ سبھا کے سابق رکن صابر علی ایک بار پھربی جے پی میں شامل ہو گئے ہیں۔

Jul 23, 2015 04:00 PM IST | Updated on: Jul 23, 2015 04:07 PM IST
جے ڈی یو کے لیڈر صابر علی ایک بار پھر بی جے پی کی گود میں

پٹنہ۔ جنتا دل یونائیٹڈ (جے ڈی یو) کے لیڈر اور راجیہ سبھا کے سابق رکن صابر علی ایک بار پھربی جے پی میں شامل ہو گئے ہیں۔

پٹنہ میں بھوپیندر یادو کی موجودگی میں انہیں بی جے پی میں شامل کیا گیا ۔ صابر علی اس سے پہلے بھی بی جے پی میں شامل ہوئے تھے، لیکن مختار عباس نقوی کی مخالفت کے بعد اگلے ہی دن ان کی رکنیت منسوخ کر دی گئی تھی۔

Loading...

صابر علی راجیہ سبھا ایم پی نہ بنائے جانے سے جے ڈی یو سے ناراض چل رہے تھے۔ صابر دہلی جے ڈی یو کے ریاستی صدر بھی رہ چکے ہیں۔ جے ڈی یو سے پہلے صابر علی رام ولاس پاسوان کی لوک جن شکتی پارٹی (ایل جے پی) کی ٹکٹ پر پہلی بار راجیہ سبھا پہنچے تھے۔

پہلے جب صابر علی بی جے پی میں شامل ہوئے تھے تو مختار عباس نقوی نے اس پر سخت اعتراض جتایا تھا۔ انہوں نے الزام لگایا تھا کہ صابر علی دہشت گردوں کے دوست ہیں۔ نقوی نے یاسین بھٹکل کا نام لیتے ہوئے کہا تھا کہ صابر علی کی دہشت گردوں کے ساتھ دوستی ہے۔

نقوی کے الزام پر صابر علی نے کہا تھا کہ اگر ان کے خلاف دہشت گرد یاسین بھٹکل سے متعلق الزام ثابت ہو جاتا ہے تو وہ ہمیشہ کے لئے سیاست چھوڑ دیں گے۔

مانا جا رہا ہے کہ صابر کو بی جے پی میں شامل کرنے سے پارٹی کو بہار انتخابات میں فائدہ ہوگا۔

Loading...