உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    شیعہ پرسنل لا بورڈ (قدیم) کے دائرہ کار میں توسیع، صرف شرعی مسائل تک محدود نہیں رہےگا بورڈ

    شیعہ پرسنل لا بورڈ (قدیم) کے دائرہ کار میں توسیع، صرف شرعی مسائل تک محدود نہیں رہےگا بورڈ

    شیعہ پرسنل لا بورڈ (قدیم) کے دائرہ کار میں توسیع، صرف شرعی مسائل تک محدود نہیں رہےگا بورڈ

    آل انڈیا شیعہ پرسنل لا بورڈ (قدیم) بورڈ کے بانی اور جنرل سکریٹری مولانا علی حسین قمی نے واضح کیا ہےکہ نواب میر جعفر عبداللہ ایک نہایت مفتخر اور سلجھی ہوئی شخصیت ہیں اور تمام مسالک و مکاتب سے واقف ہیں، لہٰذا بورڈ کی صدارت کے لئے ایسا ہی شخص ہونا چاہئے۔

    • Share this:
    لکھنئو: آل انڈیا شیعہ پرسنل لا بورڈ (قدیم) نے اپنے دائرہ کارکو وسیع کرتے ہوئے فیصلہ کیا ہے کہ اب شیعہ پرسنل لا بورڈ صرف اہل تشیع حضرات کے شرعی مسائل تک محدود نہیں رہے گا بلکہ نہ صرف شیعوں کے بلکہ سبھی مسالک و مکاتب کے مسلمانوں کے ہمہ جہت مسائل حل کرنے کے باب میں پیش رفت کرے گا۔ ایک اہم پیش رفت یہ بھی ہےکہ عنقریب ہی شیعہ پرسنل لا بورڈ کی صدارت کے منصب پر رائل فیملی آف اودھ کی معروف شخصیت جعفر میر عبداللہ کے فائز ہونے کے امکانات روشن ہو گئے ہیں۔

    آل انڈیا شیعہ پرسنل لا بورڈ (قدیم) بورڈ کے بانی اور جنرل سکرٹری مولانا علی حسین قمی نے واضح کیا ہےکہ نواب میر جعفر عبداللہ ایک نہایت مفتخر اور سلجھی ہوئی شخصیت ہیں اور تمام مسالک و مکاتب سے واقف ہیں، لہٰذا بورڈ کی صدارت کے لئے ایسا ہی شخص ہونا چاہئے۔ مولانا حسین قمی نےکہا کہ حالات سازگار ہونے کے بعد باضابطہ طور پر اس کا اعلان بھی کردیا جائے گا۔ یہاں یہ بات بھی قابل غور ہےکہ اس سلسلے میں ابھی نواب جعفر میر عبد اللہ کی جانب سے کسی طرح کی منفی یا مثبت کوئی وضاحت نہیں کی گئی ہے۔ اس موقع پر بورڈ کے ذمہ داران کی ایک آن لائن میٹنگ بورڈ کے لکھنئو واقع دفتر میں منعقد کی گئی، جس میں آئندہ کی حکمت عملی وضع کرنے کے ساتھ ساتھ بورڈ کے اہم عہدیداروں اور ممبران کے انتخاب سے متعلقہ موضوع پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا۔ اس موقع پر مولانا رفسنجانی نے کہا کہ اہم بات یہ ہےکہ بورڈ اپنے دائرہ کارکو وسیع کرتے ہوئے تمام مسالک کے لوگوں کو شریک کرنےکی بات کر رہا ہے، جو وقت کی اہم ضرورت ہے۔

    آل انڈیا شیعہ پرسنل لا بورڈ (قدیم) بورڈ کے بانی اور جنرل سکرٹری مولانا علی حسین قمی نے واضح کیا ہےکہ نواب میر جعفر عبداللہ ایک نہایت مفتخر اور سلجھی ہوئی شخصیت ہیں اور تمام مسالک و مکاتب سے واقف ہیں۔
    آل انڈیا شیعہ پرسنل لا بورڈ (قدیم) بورڈ کے بانی اور جنرل سکرٹری مولانا علی حسین قمی نے واضح کیا ہےکہ نواب میر جعفر عبداللہ ایک نہایت مفتخر اور سلجھی ہوئی شخصیت ہیں اور تمام مسالک و مکاتب سے واقف ہیں۔


    آل انڈیا شیعہ پرسنل لابورڈ (قدیم) سے منسلک علماء اور دانشور مانتے ہیں کہ موجودہ وقت میں مسلکی خانوں میں تقسیم ہونے سے بہتر ہے کہ امت مسلمہ کے سبھی لوگ ایک پلیٹ فارم پر آکر قوم وملت اور ملک کی بہتری کےلئے مشترکہ کوششیں کریں۔ مولانا علی حسین قمی نے سبھی مسالک ومکاتب کے لوگوں سے اپیل کی ہے کہ وہ داخلی انتشار چھوڑکرکسی مخصوص طبقے ذات اور برادری کے لئےکام نہ کریں بلکہ متحد ہوکر سماج کے سبھی دبےکچلے پریشان حال اور دبے کچلے لوگوں کی فلاح و بہبود کےلئے راستے ہموار کریں۔ بورڈ کی جانب سے یہ وضاحت بھی کی گئی کہ حالات بہتر ہوتے ہی بورڈ کا ایک وفد مرکزی وزیر داخلہ، مرکزی وزیر دفاع اور اتر پردیش کے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ سے ملاقات کرکے اپنی تجاویز اور مطالبات پیش کرے گا۔
    Published by:Nisar Ahmad
    First published: