ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

کانگریس لیڈر نریش چوہان نے کہا : ریلائنس نے دور کی کسانوں کی الجھن، جلد نظر آئے گا اثر

ریلائنس انڈسٹریز لیمیٹڈ کی سبسڈیئری ریلائنس جیو انفوکام لیمیٹڈ نے پنجاب اور ہریانہ ہائی کورٹ میں دائر ایک عرضی میں کہا ہے کہ تینوں زرعی قوانین سے اس کا کوئی لینا دینا نہیں ہے اور نہ ہی اس کا کوئی فائدہ ہے ۔

  • Share this:
کانگریس لیڈر نریش چوہان نے کہا : ریلائنس نے دور کی کسانوں کی الجھن، جلد نظر آئے گا اثر
کانگریس لیڈر نریش چوہان نے کہا : ریلائنس نے دور کی کسانوں کی الجھن، جلد نظر آئے گا اثر

زرعی قوانین کے خلاف احتجاج کررہے کسانوں کے تشدد کا سامنا کررہی ریلائنس جیو انفوکام لیمیٹڈ نے پنجاب اور ہریانہ ہائی کورٹ میں دائر ایک عرضی میں واضح کیا ہے کہ تینوں زرعی قوانین سے اس کا کوئی لینا دینا نہیں ہے ۔ ریلائنس نے نئے زرعی قوانین کے نام پر کئے جارہے جھوٹے دعووں پر ایک وضاحت نامہ بھی جاری کرتے ہوئے واضح کیا کہ کنٹریکٹ فارمنگ میں اترنے کا اس کا کوئی ارادہ نہیں ہے اور نہ ہی وہ کھیتی والی زمین خریدنے پر غور کررہی ہے ۔ کمپنی نے ساتھ ہی بتایا کہ وہ کسانوں کی بہتری کیلئے اپنی سطح پر کیا قدم اٹھا رہی ہے ۔


ریلائنس کے اس بیان کا کانگریس لیڈر نریش چوہان نے خیرمقدم کیا ہے اور کہا ہے کہ اس سے کسانوں کی الجھن دور ہوں گی ۔ ہماچل کانگریس کے لیڈر چوہان نے نیوز18 سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ریلائنس انڈسٹریز نے جو بات رکھی ہے ، یہ بہت ہی اہم ہے ۔ میڈیا کے ذریعہ ہمیں معلوم ہوا ہے کہ پنجاب میں ریلائنس کا جو نیٹ ورک تھا ، اس میں توڑپھوڑ ہوئی ہے ۔ کمپنی کو کافی نقصان ہوا ہے ۔ پنجاب کے وزیر اعلی کیپٹن امریندر سنگھ نے بھی اپیل کی تھی کہ اس طرح سے نہ کریں ، لیکن ایسا نہیں ہوا ۔


نریش چوہان نے کہا کہ امریندر سنگھ نے کہا تھا کہ آندولن پرامن چلنا چاہئے ۔ توڑپھوڑ سے عام لوگوں کو ہی نقصان ہوگا ، کیونکہ کورونا کے دور میں بچے آن لائن پڑھائی کررہے ہیں ۔ نیٹ ورک خراب ہونے سے ان کی تعلیم متاثر ہوگی ۔ ریلائنس نے اپنا موقف پیش کردیا ہے ۔ مجھے امید ہے کہ اس کا اثر ضرور نظر آئے گا ۔


ریلائنس نے کیا کہا ؟

ریلائنس نے کہا کہ اس کا زرعی قوانین سے کوئی لینا دینا نہیں ہے اور اسے جوڑ کر اس کے کاروبار اور اداروں کو نقصان پہنچایا جارہا ہے ۔ ریلائنس انڈسٹریز لیمیٹڈ کی سبسڈیئری ریلائنس جیو انفوکام لیمیٹڈ نے پنجاب اور ہریانہ ہائی کورٹ میں دائر ایک عرضی میں کہا ہے کہ تینوں زرعی قوانین سے اس کا کوئی لینا دینا نہیں ہے اور نہ ہی اس کا کوئی فائدہ ہے ۔ کمپنی نے کہا کہ ریلائنس ریٹیل ، جیو انفوکام یا ان سے وابستہ کوئی بھی کمپنی نے کبھی بھی کارپوریٹ یا کنٹریکٹ فارمنگ نہیں کی ہے اور مستقبل قریب میں بھی اس کا ایسا کوئی ارادہ نہیں ہے ۔

(ڈسکلیمر: نیوز 18 اردو ڈاٹ کام ریلائنس انڈسٹریز کی کمپنی نیٹ ورک 18 میڈیا اینڈ انویسٹمنٹ لمیٹڈ کا حصہ ہے۔ نیٹ ورک 18 میڈیا اینڈ انویسٹمنٹ لمیٹڈ ریلائنس انڈسٹریز کی ملکیت ہے۔)

Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Jan 04, 2021 04:37 PM IST