ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

بریکنگ نیوز: سپریم کورٹ کے ذریعہ تشکیل کردہ کمیٹی سے بھوپیندر سنگھ مان نے نام لیا واپس

سپریم کورٹ (Supreme Court) کے ذریعہ کسان آندولن (Kisan Andolan) کا حل نکالنے کے لئے تشکیل کی گئی چار رکنی کمیٹی میں شامل بھوپندر سنگھ مان صدر، بھارتیہ کسان یونین (بے کی یو) نے اس کمیٹی سے خود کا نام واپس لینے کا فیصلہ لیا ہے۔

  • Share this:
بریکنگ نیوز: سپریم کورٹ کے ذریعہ تشکیل کردہ کمیٹی سے بھوپیندر سنگھ مان نے نام لیا واپس
بریکنگ نیوز: سپریم کورٹ کے ذریعہ تشکیل کمیٹی سے بھوپیندر سنگھ مان نے نام لیا واپس

نئی دہلی: سپریم کورٹ (Supreme Court) کے ذریعہ کسان آندولن (Kisan Andolan) کا حل نکالنے کے لئے تشکیل کی گئی چار رکنی کمیٹی میں شامل بھوپندر سنگھ مان صدر، بھارتیہ کسان یونین (بے کی یو) نے اس کمیٹی سے خود کا نام واپس لینے کا فیصلہ لیا ہے۔


بھارتیہ کسان یونین کے ذریعہ جاری ایک میڈیا بیان میں بھوپیندر سنگھ مان کی طرف سے کہا گیا کہ ’مرکزی حکومت کے ذریعہ لائے گئے تین زرعی قوانین پر کسان یونین کے ساتھ بات چیت کرنے کے لئے مجھے 4 رکنی کمیٹی میں نامزد کرنے کو لے کر میں عدالت عظمیٰ کا شکر گزار ہوں۔ ایک کسان اور خود ایک یونین لیڈر کے طور پر، کسان یونین اور عام آدمی کے درمیان جذبات اور خدشات کو دیکھتے ہوئے میں پنجاب یا کسانوں کے مفاد سے سمجھوتہ نہیں کرنے کے لئے کسی بھی عہدے کو چھوڑنے کے لئے تیار ہوں۔ میں خود کو کمیٹی سے ہٹا رہا ہوں اور میں ہمیشہ اپنے کسانوں اور پنجاب کے ساتھ کھڑا رہوں گا۔




واضح رہے کہ سابق راجیہ سبھا رکن پارلیمنٹ سردار بھوپیندر سنگھ ما، بھارتیہ کسان یونین کے قومی صدر اور اکھل بھارتیہ کسان سمنوے کمیٹی کے صدر ہیں۔

دراصل، سپریم کورٹ نے اس معاملے میں تنازعہ کے حل کے لئے ایک چار رکنی کمیٹی بنائی ہے۔ اس کمیٹی میں بھوپیندر سنگھ مان کے علاوہ ڈاکٹر پرمود کمار جوشی (انٹرنیشنل فوڈ پالیسی ریسرچ انسٹی ٹیوٹ)، اشوک گلاٹی (زرعی ماہر معاشیات) اور انل دھنوٹ (شیوکیری سنگٹھن، مہاراشٹر) ہیں۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Jan 14, 2021 03:27 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading