ہوم » نیوز » وطن نامہ

بیف کے نام پرمسلم باپ بیٹے کوکیاگیا زدوکوب ۔ بی ایس ایف کے خلاف مقدمہ درج کرنے کی مانگ

بی ایس ایف 171 بٹالین کے خلاف گوالپوکھر تھانہ میں ایف آئی آر درج کر کے قانونی طور بی ایس ایف کے ان جوانوں کے خلاف کارروائی کا مطالبہ

  • Share this:
بیف کے نام پرمسلم باپ بیٹے کوکیاگیا زدوکوب ۔ بی ایس ایف  کے خلاف مقدمہ درج کرنے کی مانگ
بی ایس ایف 171 بٹالین کے خلاف گوالپوکھر تھانہ میں ایف آئی آر درج کر کے قانونی طور بی ایس ایف کے ان جوانوں کے خلاف کارروائی کا مطالبہ

بیف کے نام پر ملک کے مختلف مقامات سے ایک مذہب کے ماننے والوں پر دوسرے مذہب کے ماننے والوں کے ذریعے زدوکوب و مارنے پیٹنے کی خبروں کے دوران بیف کے نام پر بی ایس ایف کے ذریعہ زدوکوب کئے جانے کا معاملہ ہند بنگلہ دیش سرحد ی علاقہ کے سری پور بازار میں پر پیش آیا ہے۔ ہند بنگلہ دیش سرحد پر تعینات بی ایس ایف 171 بٹالیئن کے خلاف مقامی تھانہ میں کی گئی ایک تحریری شکایت کے مطابق ریاست مغربی بنگال کے سلی گوڑی شہر سے تقریباً100 کیلومیٹر دوراسلام پورمحکمہ کے تحت گوال پوکھر علاقہ سے گزرنے والی ہند بنگلہ دیش سرحدی علاقہ کے سری پوربازار میں بیف کے نام پر ایک خاص مذہب کے ماننے والوں کو زدوکوب ومارنے پیٹنے کامعاملہ سامنے آیاہے- لیکن اس مرتبہ ایک خاص مذہب کے ماننے والوں کے بجائے بی ایس ایف کے جوانوں کے ذریعے بیف کے نام پر ایک خاص مذہب کے ماننے والوں کو زدوکوب و مارنے پیٹنے کی خبر سامنے آئی ہے۔

شکایت میں کہا گیا ہے کہ تمیزالدین نامی ایک شخص،اپنے 62 سالہ بھائی غیاث الدین اور اپنے 26 سالہ بھتیجے انوارل کے ساتھ اپنے گھر واپس لوٹ رہے تھے۔ کہ انہیں سری پور بی او پی میں تعینات بی ایس ایف 171 بٹالین کے جوانوں نے بیف کے نام پرزبردستی پکڑ کر بری طرح مارا پیٹا۔ مقامی ذرائع سے ملی اطلاع کے مطابق 5 مئی کے دن، دوپہرتقریباً 12 بجے محمد غیاث الدین اور بیٹے محمد انوارل کے ہمراہ تمیزالدین نامی شخص اپنے گھر میں دلہن کی رخصتی کے پروگرام کیلئے علاقہ کے دیبی گنج نامی بازار سے گوشت خرید کرواپس لوٹ رہے تھے۔ اسی دوران سری پور میں واقع بی ایس ایف 171 بٹالین کمیپ کے جوانوں نے ان تینوں افراد کو روک کر تلاشی لی اور تلاشی کے دوران جب ان کے تھیلے سے گوشت برآمد ہوا تو بی ایس ایف کے جوانوں نے انہیں پکڑ کر اپنے ساتھ کیمپ لے گئے اور وہاں محمد غیاث الدین و بیٹے انوارول کی زبردست پٹائی کی۔جبکہ تمیزالدین نامی شخص بی ایس ایف کی گرفت سے فرار ہوگیا۔

غیاث الدین و انوارل دونوں بی ایس ایف جوانوں کے ذریعے زدوکوب کیے پربری طرح زخمی ہوگئے۔ جہاں انہیں علاج کیلئے فوراًمقامی اسپتال میں داخل کرایا گیا۔ حالانکہ بی ایس ایف 171 بٹالین کے خلاف گوالپوکھر تھانہ میں ایف آئی آر درج کر کے قانونی طور بی ایس ایف کے ان جوانوں کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ وہیں اس واقعہ کے بعد پورے علاقہ کے عام لوگ میں بے حد ناراضگی کا ماحول ہے اور اب عام لوگ بی ایس ایف کے اس ظالمانہ رویہ کے خلاف احتجاج کرنے پرمجبورہیں۔

اطلاع کے مطابق علاقہ کے دانشوروں و سماجی کارکنان نے اس واقعہ کے خلاف 8 مئی کو دیبی گنج بازارمیں بی ایس ایف کے خلاف غیر سیاسی طرز پر احتجاج کرنے کا فیصلہ کیا ہے جس میں تمام سیاسی جماعتوں کے رہنماؤں کے شرکت ہونے کی بات کہی جارہی ہے۔ اس احتجاجی پروگرام کے متعلق پوچھنے پر سماجی کارکن قاری جمال الدین نے بتایا کہ بی ایس ایف 171 بٹالین سری پور کیمپ کے جوانوں کے خلاف یہ احتجاجی پروگرام ہونے جا رہا ہے جس میں گوالپوکھر کے سبھی سیاسی وسماجی لیڈران سیاست سے بالاتر ہوکراس احتجاج میں شرکت کریں گے۔ جن میں مقامی رکن اسمبلی و ریاستی وزیر غلام ربانی، رخصت پزیر مقامی رکن پارلیمنٹ محمد سلیم،سینئر سیاسی لیڈر مسعود محمد نسیم احسن،غلام رسول عرف مونی کے علاوہ متعدد لیڈروں کو مدعو کیا جائے گا تاکہ اتحاد کا مظاہرہ پیش کرتے ہوئے ان بی ایس ایف جوانوں کے خلاف مزید قانونی کاروائی کا مطالبہ کیا جاسکے اور بی ایس ایف کے ظلم کے شکار ہوئے ان افراد کو انصاف مل سکے

First published: May 07, 2019 11:47 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading