உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    فلم اسٹار Roja سمیت 13افرادبن سکتےہیں آندھرا پردیش نئی کابنیہ کاحصہ، مزیدکون کون ہیں؟

    Youtube Video

    حکمراں وائی ایس آر کانگریس کے ترجمان امباتی رام بابو اور گوڈیواڈا امرناتھ ان دیگر قابل ذکر چہروں میں شامل ہیں جنہیں پہلی بار کابینہ میں جگہ ملے گی۔ آندھرا پردیش میں پیر سے 13 نئے اضلاع شروع ہوں گے۔

    • Share this:
      فلم اسٹار آر کے روجا (R K Roja) جو ناگری حلقہ سے ایم ایل اے ہیں، ان 13 نئے چہروں میں شامل ہوں گے جنہیں پیر کو امراوتی میں آندھرا پردیش کی وزراء کونسل میں شامل کیا جائے گا۔ ایک قانون ساز کے طور پر اپنی دوسری میعاد کی خدمت کرتے ہوئے فائر برینڈ روزا اب دو اضلاع چتور (پرانا) اور تروپتی (نئے) کی نمائندگی کرتی ہے کیونکہ اضلاع کی حالیہ تنظیم نو میں نگری کو تقسیم کیا گیا ہے۔

      حکمراں وائی ایس آر کانگریس کے ترجمان امباتی رام بابو اور گوڈیواڈا امرناتھ ان دیگر قابل ذکر چہروں میں شامل ہیں جنہیں پہلی بار کابینہ میں جگہ ملے گی۔ آندھرا پردیش میں پیر سے 13 نئے اضلاع شروع ہوں گے۔ پی راجنا ڈورا، متیالا نائیڈو، دڈی سیٹی راجہ، کے ناگیشور راؤ، کے ستیہ نارائنا، جے رمیش، وی راجانی، ایم ناگارجن، کے گووردھن ریڈی اور اوشا سری چرن کے پیر کو وزیر بننے کا امکان ہے۔

      وائی ​​ایس آر سی کے مطابق نئی کابینہ میں بی سی، ایس ٹی، ایس سی اور اقلیتی برادریوں کی 68 فیصد نمائندگی ہوگی۔ کابینہ میں خواتین کی تعداد ایک سے چار تک بڑھ جائے گی۔

      اس کے برعکس تلنگانہ کے سی ایم کے چندر شیکھر راؤ (Telangana CM K Chandrashekar Rao) آج یعنی 11 اپریل 2022 کو مرکز کی دھان کی خریداری کی پالیسی (paddy procurement policy) کے خلاف احتجاج کے لیے دہلی میں دھرنے کی قیادت کریں گے۔ تلنگانہ حکومت مرکزی حکومت کی 'امتیازی' دھان کی خریداری کی پالیسی کے خلاف احتجاج کرنے کے لیے ایک دن کے دھرنے پر بیٹھے گی، جس سے 61 لاکھ کسانوں اور ان کے خاندان متاثر ہوئے ہیں۔

      احتجاج کی جگہ دہلی میں بڑے پیمانے پر احتجاج کے لیے تلنگانہ بھون قائم کیا جا رہا ہے۔ ریاستی حکومت کے کئی وزرا، حکمراں تلنگانہ راشٹرا سمیتی (TRS) پارٹی کے ارکان پارلیمنٹ، ایم ایل سی، ایم ایل ایز اور شہری اور دیہی بلدیاتی اداروں کے دیگر منتخب نمائندے مرکزی حکومت کے خلاف احتجاج میں شامل ہوں گے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: