ہوم » نیوز » جنوبی ہندوستان

ماسک نہ پہننے اور سماجی فاصلہ برقرار نہ رکھنےکا شاخسانہ، ایک ماہ میں ایک کروڑ روپئےکا جرمانہ

بنگلورو میں ماسک نہ پہننے اور سوشل ڈسٹنسنگ کا لحاظ نہ رکھنے والے ہر شخص پر 200 روپئے کا جرمانہ بی بی ایم پی نے مقرر کیا ہے۔ پلکیشی نگر اسمبلی حلقہ میں بی بی ایم پی کے سینئرکارپوریٹر اے آر ذاکر نے کہا کہ ماسک اور سماجی فاصلہ برقرار رکھنے کے سلسلے میں عوام سے بار بارگزارش کی گئی ہے۔

  • Share this:
ماسک نہ پہننے اور سماجی فاصلہ برقرار نہ رکھنےکا شاخسانہ، ایک ماہ میں ایک کروڑ روپئےکا جرمانہ
ماسک نہ پہننے، سماجی فاصلہ برقرار نہ رکھنے کا شاخسانہ، ایک ماہ میں ایک کروڑ روپئے کا جرمانہ

بنگلورو: ملک کے آئی ٹی شہر بنگلورو میں کورونا کی جان لیوا بیماری تیزی سے پھیل رہی ہے، کورونا وائرس، روزانہ ایک ہزار سے زائد لوگوں کو اپنی گرفت میں لے رہا ہے، روزانہ 10 سے زائد اموات اس مرض سے ہو رہی ہیں، اس خطرناک صورتحال میں بھی کئی لوگ غفلت برت رہے ہیں۔ لوگوں کی اس لاپرواہی کا ثبوت بی بی ایم پی اور محکمہ پولیس کی مشترکہ کارروائی میں دیکھنے کو مل رہا ہے۔  بروہت بنگلورو مہانگر پالیکے (BBMP) کے مارشل اور محکمہ پولیس کے اہلکار عوامی مقامات میں ماسک نہ پہننے، سماجی فاصلے برقرار نہ رکھنے پر ہر دن جرمانہ عائد کر رہے ہیں۔9 جون سے 10 جولائی 2020 کے دوران بی بی ایم پی اور محکمہ پولیس نے ایک کروڑ ایک لاکھ 37 ہزار روپئے کی رقم بطور جرمانہ لاپرواہی برتنے والے افراد سے وصول کی ہے۔ ایک ماہ میں کل 50706 افراد پر جرمانہ عائد کیا گیا ہے۔ اتنا ہی نہیں سماجی فاصلے کے اصولوں کی خلاف ورزی کرنے کی بنیاد پر 149 دکانوں کو سیل کردیا گیا ہے۔


واضح رہے کہ بنگلورو میں ماسک نہ پہننے اور سوشل ڈسٹنسنگ کا لحاظ نہ رکھنے والے ہر شخص پر 200 روپئے کا جرمانہ بی بی ایم پی نے مقرر کیا ہے۔ پلکیشی نگر اسمبلی حلقہ میں بی بی ایم پی کے سینئر کارپوریٹر اے آر ذاکر نے کہا کہ ماسک اور سماجی فاصلہ برقرار رکھنے کے سلسلے میں عوام سے بار بارگزارش کی گئی ہے۔ اس سلسلے میں کئی مرتبہ بیداری مہم بھی چلائی گئی ہے، لیکن اس کے باوجود اب بھی کئی لوگ ماسک پہنے بغیرگھوم پھر رہے ہیں۔ سماجی فاصلے کو نظر انداز کررہے ہیں، ایسے لوگ اپنی اور دوسروں کی جان کو جوکھم میں ڈال رہے ہیں۔ اے آر ذاکر نے عوام سے ایک بار پھر اپیل کی کہ وہ حکومت کے گائڈ لائنس پر عمل کریں، نہ صرف جرمانے سے بچیں بلکہ اپنی قیمتی جانوں کو کورونا کی وبا سے بچائیں۔


بنگلورو میں ماسک نہ پہننے اور سوشل ڈسٹنسنگ کا لحاظ نہ رکھنے والے ہر شخص پر 200 روپئے کا جرمانہ بی بی ایم پی نے مقرر کیا ہے۔
بنگلورو میں ماسک نہ پہننے اور سوشل ڈسٹنسنگ کا لحاظ نہ رکھنے والے ہر شخص پر 200 روپئے کا جرمانہ بی بی ایم پی نے مقرر کیا ہے۔


نیوز 18 اردو کی ٹیم نے بنگلورو میں ایسے کئی لوگوں کو دیکھا جو اپنے جیب میں ماسک رکھتے ہیں لیکن چہروں پر ماسک کے   پہننے کو ضروری نہیں سمجھتے۔ جبکہ شہر کے ہر گلی کوچے میں ماسک فروخت ہورہے ہیں۔ کم سے کم 10 روپئے کی قیمت میں ماسک دستیاب ہیں۔ عام طور پر یہ بھی دیکھنے کو ملا ہے کہ کئی موقعوں پر لوگ سماجی فاصلے کو بھی بھول جاتے ہیں۔ اس مسئلہ پر بنگلورو کے شیواجی نگر کے ڈاکٹر شبیر علی کہتے ہیں کہ لاکھ کوششوں کے باوجود کورونا مرض کی کوئی دوا اب تک تیار نہیں ہوئی ہے ۔ فی الوقت اس بیماری کا علاج احتیاط برتنے میں ہے۔ لوگ جب بھی باہر نکلیں تو اپنے منہ ناک اور آنکھوں کی حفاظت کریں، ہاتھوں کو بار بار دھوئیں، سابن یا سنیٹائزر کا استعمال کرتے رہیں۔ ایک دوسرے سے فاصلہ رکھتے ہوئے اپنے روزمرہ کے کام کاج انجام دیں۔ چونکہ ان دنوں بنگلورو میں کورونا کی وبا تیزی سے پھیل رہی ہے لہذا ضرورت پڑنے پر ہی لوگ گھروں سے باہر نکلیں۔ ڈاکٹر شبیر علی کہتے ہیں کہ کورونا کے مرض سے گھبرانے کی ہر گز ضرورت نہیں ہے بلکہ اس مرض سے مقابلہ کرنے کی ضرورت ہے۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Jul 11, 2020 11:04 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading