ایس جے شنکر کا پاکستان کو سبق، بولے۔ ایک کو چھوڑ کر سبھی پڑوسی ملکوں سے رشتے اچھے

وزیر خارجہ ایس جے شنکر نے ورلڈ اکنامک فورم میں پاکستان پر چٹکی لیتے ہوئے کہا ’’ میں بتانا چاہوں گا کہ ایک کو چھوڑ کر ہندوستان کے سبھی پڑوسی ملکوں سے بہتر رشتے ہیں اور وہ علاقائی تعاون میں ہر دن ایک نئی تاریخ لکھ رہے ہیں‘‘۔

Oct 05, 2019 11:08 AM IST | Updated on: Oct 05, 2019 11:08 AM IST
ایس جے شنکر کا پاکستان کو سبق، بولے۔ ایک کو چھوڑ کر سبھی پڑوسی ملکوں سے رشتے اچھے

ایس جے شنکر: فائل فوٹو

جموں وکشمیر سے آرٹیکل 370 ہٹائے جانے سے بوکھلایا پاکستان دنیا بھر میں ہندوستان کے خلاف پروپیگنڈہ کرنے میں لگا ہوا ہے۔ حالانکہ پاکستان کو چین کا ساتھ چھوڑ کر کسی بھی ملک سے اسے اس مسئلہ میں تعاون نہیں ملا ہے۔ زیادہ تر ملکوں نے پاکستان کو ہدایت دی ہے کہ وہ اپنی سرزمین سے دہشت گردی کا خاتمہ کرے۔ تبھی ہندوستان کے ساتھ اس کے رشتے بہتر ہو سکتے ہیں۔ ان سب کے درمیان ہندوستان کے وزیر خارجہ ایس جے شنکر نے ورلڈ اکنامک فورم میں پاکستان پر چٹکی لیتے ہوئے کہا ’’ میں بتانا چاہوں گا کہ ایک کو چھوڑ کر ہندوستان کے سبھی پڑوسی ملکوں سے بہتر رشتے ہیں اور وہ علاقائی تعاون میں ہر دن ایک نئی تاریخ لکھ رہے ہیں‘‘۔

اس موقع پر وزیر خارجہ ایس جے شنکر نے پاکستان کے ساتھ مختلف مسئلوں، کشمیر، ٹریڈ وار کی بات کی۔ ورلڈ اکنامک فورم کے صدر بورگے برینڈے سے بات چیت کے دوران وزیر خارجہ نے کہا، آرٹیکل 370 نافذ ہونے کے سبب جموں وکشمیر میں کوئی قومی قانون نافذ نہیں ہوتا تھا۔ یہ سب ان کے لئے نئی باتیں تھیں۔

اپنے پڑوسیوں کے ساتھ بہتر رشتوں کے بارے میں بات کرتے ہوئے وزیر خارجہ نے کہا کہ ایک پڑوسی ملک کو چھوڑ کر سبھی ملکوں کی علاقائی تعاون کے معاملہ میں بہترین تاریخ رہی ہے۔ جب ان سے پوچھا گیا کہ کیا اس پڑوسی ملک کے ساتھ تعطل کی حالت ہمیشہ ایسی ہی بنی رہے گی تو انہوں نے کہا کہ امید ہے کہ ایک دن حالات بہتر ہوں گے اور وہ ملک بھی ہندوستان کے ساتھ علاقائی تعاون میں شامل ہو گا۔

Loading...

Loading...