دہشت گردی کا کھلےعام استعمال کررہا ہے پاکستان، بات چیت کی کوئی گنجائش نہیں: وزیرخارجہ

وزیرخارجہ ایس جے شنکر نےکہا ہےکہ پاکستان دہشت گردی کا کھلےعام استعمال کررہا ہے اورجب تک وہ اس کی مالی مدد اوردہشت گردانہ گروپوں کی بھرتی پرروک نہیں لگاتا تب تک اس کےساتھ بات چیت کی کوئی گنجائش نہیں ہے۔

Sep 02, 2019 09:54 PM IST | Updated on: Sep 02, 2019 09:59 PM IST
دہشت گردی کا کھلےعام استعمال کررہا ہے پاکستان، بات چیت کی کوئی گنجائش نہیں: وزیرخارجہ

وزیرخارجہ ایس جے شنکر نےکہا ہےکہ پاکستان دہشت گردی کا کھلےعام استعمال کررہا ہے۔

وزیرخارجہ ایس جےشنکرنےکہا ہے کہ پاکستان دہشت گردی کا کھلےعام استعمال کررہا ہے اورجب تک وہ اس کی مالی مدد اوردہشت گردانہ گروپوں کی بھرتی پرروک نہیں لگاتا تب تک اس کے ساتھ بات چیت کی کوئی گنجائش نہیں ہے۔ ایس جےشنکرپاکستان کے وزیر اعظم عمران خان کےذریعہ حال میں کشمیرموضوع پر'نیویارک ٹائمس' میں لکھے گئےایک کالم کا جواب دے رہے تھے۔ کالم میں عمران کان نے لکھا ہےکہ بات چیت فوراً کئےجانےکی ضرورت ہے کیونکہ جنوبی ایشیا پرنیوکلیئرحملے کا خطرہ منڈلا رہا ہے۔

بریسلیس میں'پولیٹیکو' کو دیئےایک انٹرویومیں جے شنکرنےکہا کہ 'پاکستان جب کھلےعام دہشت گردی کا استعمال کررہا ہےتوبات چیت کا خیال بےکارہے'۔ جے شنکرنےکہا کہ انہیں عمران خان کے ذریعہ جمعہ کولکھا گیا کالم پڑھنے کا وقت نہیں مل پایا ہے۔ انہوں نےکہا کہ جب تک پاکستان دہشت گردوں کی مالی مدد اوردہشت گردانہ گروپوں کی بھرتی پرروک نہیں لگاتا تب تک بات چیت کی کوئی امید نہیں ہے۔

Loading...

پاکستان میں دن دہاڑے پھیل رہی ہے دہشت گردی

ایس جے شنکرگزشتہ ہفتہ بریسلیس میں تھے۔ انہوں نےکہا 'دہشت گردی کوئی ایسی چیزنہیں ہے، جوپاکستان میں اندھیرے کونوں میں کی جارہی ہو۔ یہ دن دہاڑے کیا جاتا ہے'۔ پاکستان دہشت گردوں کےذریعہ جنوری 2016 میں پٹھان کوٹ ایئرفورس اسٹیشن پرحملہ کئےجانے کےبعد سے پاکستان سے ہندوستان بات نہیں کررہا ہے۔ ہندوستان کا کہنا ہےکہ بات چیت ساتھ ساتھ نہیں چل سکتے۔

ہندوستان کےذریعہ دفعہ 370 کے بیشترالتزام ختم کئےجانےکےبعد کشمیرمیں حالات کے بارے میں وزیرخارجہ نےکہا کہ پوری وادی میں 'آئندہ دنوں' میں سیکورٹی پرپابندی میں نرمی دی جائےگی۔ انہوں نے کہا کہ ٹیلی فون اورانٹرنیٹ پابندی دہشت گردی کی سر گرمی کوروکنےاورتشدد پھیلانے والوں کوایک دوسرے کے رابطہ میں آنے سےروکنے کے لئے ضروری تھا۔

Loading...