ہوم » نیوز » وطن نامہ

کرناٹک: خطرے میں کانگریس - جے ڈی ایس اتحاد؟ دیوے گوڑا نے کہا - کانگریس اعلیٰ کمان طے کرے گا مستقبل

  • Share this:
کرناٹک: خطرے میں کانگریس - جے ڈی ایس اتحاد؟ دیوے گوڑا نے کہا - کانگریس اعلیٰ کمان طے کرے گا مستقبل
کانگریس - جے ڈی ایس اتحاد خطرے میں۔

جنتا دل (سیکولر) کے سربراہ ایچ ڈی دیوے گوڑا نے اتوارکو کہا کہ کانگریس کے ساتھ ان کی پارٹی کے اتحاد کا مستقبل اس بات پرمنحصرکرے گا کہ سب سے پرانی پارٹی کانگریس کا اعلیٰ کمان اپنی پارٹی کے ریاستی قیادت کے مشورہ پرکیا فیصلہ لیتا ہے۔  سابق وزیراعظم نے یہ بھی واضح کیا کہ ان کے بیٹے اورسابق وزیراعلیٰ ایچ ڈی کماراسوامی نہیں بلکہ کانگریس قانون سازپارٹی کے لیڈرسدا رمیا اسمبلی میں باضابطہ طورپراپوزیشن کے لیڈرہوں گے۔


دیوے گوڑا نے نامہ نگاروں سے کہا 'اس اتحاد کا مستقبل اس بات پرمنحصرکرے گا کہ کانگریس اعلیٰ کمان اپنی پارٹی کے لیڈروں کے مشورہ پرکیا فیصلہ لیتا ہے'۔ انہوں نے کہا کہ میں اس پرابھی کوئی تبصرہ نہیں کرنا چاہتا۔


انہوں نے کہا کہ 'کمارا سوامی آفیشیل طورپراپوزیشن کے لیڈرنہیں ہیں۔ یدی یورپا حکومت کے تین سال 8 ماہ کے لئے سدارمیا آفیشیل طورپراپوزیشن کے لیڈرہوں گے۔ دیوے گوڑا نے کہا کمارسوامی ایک سیاسی جماعت کے اراکین اسمبلی کے لیڈرہیں۔


Bengaluru: JD(S) supremo H D Devegowda(R) speaks as Congress-JD(S) Co-ordination Committee Chairman & former Karnataka chief minister Siddaramaiah looks on during a joint press conference after a committee meeting for Lok Sabha Election strategy, in Bengaluru, Tuesday, March 19, 2019. (PTI Photo/Shailendra Bhojak)(PTI3_19_2019_000075B)
Bengaluru: JD(S) supremo H D Devegowda(R) speaks as Congress-JD(S) Co-ordination Committee Chairman & former Karnataka chief minister Siddaramaiah looks on during a joint press conference after a committee meeting for Lok Sabha Election strategy, in Bengaluru, Tuesday, March 19, 2019. (PTI Photo/Shailendra Bhojak)(PTI3_19_2019_000075B)


ریاستی کانگریس صدرنے کچھ بھی بولنے سے کیا انکار

کرناٹک میں کانگریس - جے ڈی ایس حکومت کے گرنے کے ایک دن بعد کمارا سوامی سمیت اتحاد کے کسی بھی لیڈرنے اس اتحاد کے مستقبل پرکچھ بھی کہنے سے انکارکردیا تھا۔ ریاستی کانگریس صدردنیش گنڈوراو نے بھی کہا تھا کہ اتحاد پراعلیٰ کمان فیصلہ لے گا، ریاستی یونٹ اس کے حکم پرعمل کرے گی۔ خاص طورپرمیسورحلقے میں ایک دوسرے کی حریف سمجھی جانے والی کانگریس اورجے ڈی ایس نے مئی 2018 میں معلق اسمبلی ہونے کے بعد اتحادی حکومت بنانے کے لئے ہاتھ ملایا تھا۔

 
First published: Jul 29, 2019 12:10 AM IST