உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    غازی آباد: گھر میں سلینڈر دھماکہ کے بعد افراتفری، واقعہ میں چار لوگوں کی موت

    غازی آباد: گھر میں سلینڈر دھماکہ کے بعد افراتفری، واقعہ میں چار لوگوں کی موت

    غازی آباد: گھر میں سلینڈر دھماکہ کے بعد افراتفری، واقعہ میں چار لوگوں کی موت

    قریب 30 منٹ بعد پولیس موقع پر پہنچی۔ تب تک لوگ چھ لوگوں کو ملبے سے نکال چکے تھے۔ کچھ اور لوگوں کے اندر ہونے کی اطلاع ملنے پر پولیس بھی ملبہ ہٹانے میں لگ گئی۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Ghaziabad, India
    • Share this:
      غازی آباد کے نٹھورا گاوں کی ببلو گارڈن کالونی میں سلینڈر پھٹنے کے بعد دو منزلہ مکان گرنے سے ملبے میں دبے لوگ بچاو بچاو کی آواز لگارہے تھے۔ مقامی لوگوں نے بتایا کہ دھماکے کی آواز سن کر وہ لوگ مقام واقعہ پر پہنچے تو خواتین کی آواز آرہی تھی۔ ملبہ ہٹانے کےد وران آواز آنی بند ہوگئی۔ لوگوں نے جب ملبے میں دبے لوگوں کو باہر نکالا تو وہ بے ہوش پڑے تھے۔ اسپتال لے جانے پر ڈاکٹروں نے چاروں کو مردہ قرار دیا۔

      کالونی کے رہائشی امانت اللہ اور منشید نے بتایا کہ دھماکے کے بعد مکان کا ایک حصہ اوپر جھول رہا تھا۔ لوگوں نے جان کی پرواہ کیے بغیر بچاو کام میں جٹ گئے۔ پولیس بھی آئی تو لوگوں نے ان کے ساتھ مل کر ملبہ ہٹایا۔ جب ملبے سے سبھی لوگوں کو باہر نکال لیا گیا، اس کے بعد جے سی بی کی مدد سے مکان کے جھول رہے حصے کو توڑا گیا۔ واقعہ کے بعد منیر کے سسرال کے ارکان پہنچے۔ یہاں پہنچ کر ان کا رو رو کر برا حال ہوگیا۔ اس دوران منیر کے رشتہ دار مظہرالدین اور نورجہاں بے ہوش ہوگئے۔ لوگ ان کے منہ پر پانی کی چھینٹیں ڈال کر ہوش میں لائے۔

      500 میٹر تک آئی دھماکے کی آواز، آس پاس کی عمارتیں دہل گئیں
      منیر کے مکان میں جب دھماکہ ہوا تو دھماکے کی آواز قریب 500 میٹر تک سنائی دی۔ مقام واقعہ کے قریب 200 میٹر دور تک دھول کا غبار پھیل گیا۔ ساتھ ہی آس پاس کے مکان ہل گئے۔ لوگوں کو ایک پل لگا جیسے زلزلہ آگیا ہو۔ کچھ دیر بعد پتہ چلا کہ مکان گر گیا ہے۔ اس کے بعد لوگوں نے پولیس کو اطلاع دی اور ملبے میں دبے لوگوں کو باہر نکالنے میں لگ گئے۔

      یہ بھی پڑھیں:
      کیرالہ میں سیاحوں کی بس KSRTC بس سے ٹکرا گئی، طلبہ سمیت 9 افراد ہلاک، 40 افراد زخمی

      یہ بھی پڑھیں:
      تلنگانہ بھر میں ہلکی تو حیدرآباد میں موسلادھار بارش، کئی اضلاع میں آج بھی تیز بارش کاامکان

      قریب 30 منٹ بعد پولیس موقع پر پہنچی۔ تب تک لوگ چھ لوگوں کو ملبے سے نکال چکے تھے۔ کچھ اور لوگوں کے اندر ہونے کی اطلاع ملنے پر پولیس بھی ملبہ ہٹانے میں لگ گئی۔ واقعہ کی اطلاع پر ایس ڈی ایم سنتوش کمار رائے، ایس پی دیہات ڈاکڑ ایرج راجا، سی او رجنیش کمار اُپادھیائے، تحصیلدار ٹیم کے ساتھ موقع پر پہنچے۔ اس دوران آس پاس کے لوگوں کی بھیڑ بھی وہاں جٹ گئی۔ بھیڑ کی وجہ سے پولیس انتظامیہ کو وہاں کام کرنے میں رکاوٹ ہورہی تھی۔ ایسے میں پولیس نے ڈانٹ پھٹکار کرکے لوگوں کو وہاں سے ہٹایا۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: