உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ہندوستان کوملی ایک اورسفارتی چیت : پی او کے صدر مسعود خان فرانس میں ہوئے شرمسار

    پی او کے صدر مسعود خان فرانس میں ہوئے شرمسار۔(تصویر:مسعودخان، ٹویٹر)-

    پی او کے صدر مسعود خان فرانس میں ہوئے شرمسار۔(تصویر:مسعودخان، ٹویٹر)-

    جموں و کشمیرمیں آرٹیکل 370 کی منسوخی کے بعد پاکستان دنیا کے سامنے ہندوستان کے خلاف مسلسل مہم چلارہاہے۔ ہندوستان نے فرانسیسی پارلیمنٹ میں پاکستان کے مقبوضہ کشمیرپی او کے مبینہ صدرمسعود خان کے خطاب کوناکام بنادیا۔

    • Share this:
      جموں و کشمیرمیں آرٹیکل 370 کی منسوخی کے بعد پاکستان دنیا کے سامنے ہندوستان کے خلاف مسلسل مہم چلا رہا ہے۔ ہندوستان نے فرانسیسی پارلیمنٹ میں پاکستان کے مقبوضہ کشمیر پی او کے مبینہ صدرمسعود خان کے خطاب کوناکام بنادیا۔ ہندوستان نے اپنی سفارتی کوششوں سے مسعود خان کے پروگرام پر روک لگانے میں کامیابی حاصل کی ہے۔ پیرس میں پاکستانی سفارتخانہ فرانسیسی پارلیمنٹ کے ایوان زیریں میں پی او کے کے مبینہ صدر مسعود خان کا ایک پروگرام کرنا چاہتا تھا۔

      مسعود خان کو فرانسیسی پارلیمنٹ کے ایوان زیریں کی قومی اسمبلی میں ایک تقریب کے لئے بطور مہمان خصوصی بلایا گیا تھا۔ یہ اطلاع ملنے پر، ہندوستان نے پاکستان کی مذموم کوشش کو روکنے کے لئے اپنی سفارتی کوششیں شروع کیں۔ ہندوستانی سفارتخانے نے فرانسیسی وزارت خارجہ سے رابطہ کرکے انہیں بتایاکہ اس طرح کی دعوت ہندوستان کی خودمختاری کی خلاف ورزی ہے۔ہندوستان نے اپناموقف واضح کیا کہ مقبوضہ کشمیرسمیت پورا جموں وکشمیر ہندوستان کا اٹوٹ حصہ ہے۔ ہندوستانی سفارتخانےکے اقدامات کے ساتھ ساتھ فرانس میں موجود ہندوستانی نژاد شہریوں نے اس سلسلہ میں مہم چلائی ۔ہندوستانی نژاد شہریوں نے قومی اسمبلی کے اسپیکر اور تمام ممبران پارلیمنٹ کو بھی خطوط لکھے۔

      ہندوستان کی سفارتی کوششوں کا مثبیت اثرہوا اور پاکستان اپنے منصوبوں میں کامیاب نہیں ہوسکا۔ مسعود خان کوفرانس کے پارلیمنٹ کے پروگرام میں شرکت کی اجازت نہیں مل سکی۔ اس کے بعد، انہوں نے پاکستانی سفارت کار معین الحق کے پروگرام میں شرکت کی۔ کہا جاتا ہے کہ کسی نے بھی اس پروگرام میں حصہ نہیں لیا۔ بتایاجاتا ہے کہ اس پروگرام میں پاکستانی سفارتخانے کے ملازمین ہی موجود تھے۔
      First published: