உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سدھو پر بھڑکے گوتم گمبھیر، بولے- بیٹا-بیٹی کو بھیجو بارڈر، تب بولنا دہشت گرد ملک کے وزیر اعظم کو بھائی

    نوجوت سنگھ سدھو پر بھڑک گئے گوتم گمبھیر

    نوجوت سنگھ سدھو پر بھڑک گئے گوتم گمبھیر

    Navjot Singh Sidhu v/s Gautam Gambhir: کرتار پور میں ہفتہ کے روز درشن کے لئے پہنچے نوجوت سنگھ سدھو کا یہاں پاکستانی وفد نے استقبال کیا۔ پھول برسائے گئے اور مالا پہنائی گئی۔ کرتار پور کے سی ای او نے سدھو کا استقبال کرتے ہوئے کہا، ’عمران خان کی طرف سے آپ کا استقبال کرتا ہوں‘۔ اس پر سدھو نے کہا، ’عمران خان میرا بڑا بھائی ہے۔ اس نے مجھے بہت پیار دیا ہے‘۔

    • Share this:
      نئی دہلی: پنجاب کانگریس یونٹ کے صدر نوجوت سنگھ سدھو (Navjot Singh Sidhu) ایک بار پھر تنازعہ میں گھرتے ہوئے نظر آ رہے ہیں۔ ہفتہ کے روز ایک پروگرام میں نوجوت سنگھ سدھو نے پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان کو اپنا ’بڑا بھائی‘ بتایا ہے۔ سدھو کے اس بیان کے بعد سیاسی گلیاروں میں ہلچل مچ گئی ہے۔ سابق کرکٹر اور بی جے پی رکن پارلیمنٹ گوتم گمبھیر (Gautam Gambhir) نے نوجوت سنگھ سدھو کے اس بیان پر نشانہ سادھا ہے۔ گوتم گمبھیر نے ٹوئٹ کیا، ’اپنے بیٹا یا بیٹی کو بارڈر پر بھیجو اور تب کسی دہشت گرد ملک کے سربراہ کو بڑا بھائی بولو‘۔ حالانکہ اپنے ٹوئٹ میں گوتم گمبھیر نے کسی مخصوص شخص کا نام نہیں لیا۔

      سدھو نے پہلے جنرل قمر باجوا کو لگایا تھا گلے

      دراصل، کرتار پورکاریڈور کے افتتاح کے موقع پر پاکستانی فوج کے سربراہ جنرل قمر باجوا کو گلے لگاکر اپوزیشن کے نشانے پر آئے نوجوت سنگھ سدھو نے اب پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان کو اپنا ’بڑا بھائی‘ بتایا ہے۔ کرتار پور میں ہفتہ کے روز درشن کے لئے پہنچے نوجوت سنگھ سدھو کا یہاں پاکستانی وفد نے استقبال کیا۔ پھول برسائے گئے اور مالا پہنائی گئی۔ کرتار پور کے سی ای او نے سدھو کا استقبال کرتے ہوئے کہا، ’عمران خان کی طرف سے آپ کا استقبال کرتا ہوں‘۔ اس پر سدھو نے کہا، ’عمران خان میرا بڑا بھائی ہے۔ اس نے مجھے بہت پیار دیا ہے‘۔

      پنجاب کانگریس یونٹ کے صدر نوجوت سنگھ سدھو ایک بار پھر تنازعہ میں گھرتے ہوئے نظر آ رہے ہیں۔
      پنجاب کانگریس یونٹ کے صدر نوجوت سنگھ سدھو ایک بار پھر تنازعہ میں گھرتے ہوئے نظر آ رہے ہیں۔


      دونوں ممالک کے درمیان نئی دوستی کی شروعات

      کرتار پور پہنچنے کے بعد نوجوت سنگھ سدھو نے صحافیوں سے کہا، ’بابا گرو نانک کے نام پر، دونوں ممالک کے درمیان دوستی کا نیا باب شروع ہونا چاہئے‘۔ انہوں نے سوال کیا، ’عالمی خانہ جنگی میں لاکھوں لوگوں کی اموات کے بعد ایک یوروپ ایک ویزا پر اپنی سرحدیں کھول سکتا ہے، ایک پاسپورٹ اور ایک کرنسی رکھ سکتا ہے، تو ہمارے علاقے میں ایسا کیوں نہیں ہوسکتا، جہاں بھگت سنگھ اور مہاراجہ رنجیت سنگھ جیسی شخصیات ہیں، جنہیں سبھی مانتے ہیں‘۔ نوجوت سنگھ سدھو نے کہا کہ وہ ہندوستان - پاکستان کے درمیان باہمی محبت چاہتے ہیں۔

      یہ بھی پڑھیں۔

      نوجوت سنگھ سدھو نے پاکستان جاکر عمران خان کو بتایا ’بڑا بھائی‘، بی جے پی نے کی تنقید


      انہوں نے کہا،’ہندوستان-پاکستان کے درمیان) 74 سال میں کھڑی کی گئی دیواروں میں کھڑکیاں کھولنے کی ضرورت ہے‘۔ انہوں نے دونوں ممالک کے درمیان تجارتی تعلقات پر بھی زور دیا۔ انہوں نے کہا، ’دونوں ممالک کے درمیان تجارت ہونی چاہئے‘۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: